Dataset Preview Go to dataset viewer
news (string)label (class label)category (class label)
عمران خان نے وزارتِ عظمیٰ کا عہدہ سنبھالنے کے بعد سعودی عرب قرضے مانگنے سعودی عرب کے دارالحکومت ریاض روانہ ہو گئے اس سرکاری دورے میں سعودی عرب کی حکومت سے پاکستان کو معاشی بحران سے نکالنے کی درخواست کریں گے اس بحران سے نمٹنے کے لیے حکومت پاکستان ایک سال کے لیے 20 ارب ڈالر مالی اداد دینے کی درخواست کرے گی جس کی سر برایہ خود وزیر اعظم پاکستان عمران خان کر رہے ہیں دفترِ خارجہ کی جانب سے منگل کی شب جاری ہونے والے اعلامیے میں بتایا گیا ہے کہ سعودی حکام نے فیصلہ کیا ہے کہ وہ وزیر اعظم عمران خان کی درخواست پر 10 ارب ڈالر بطور مالہ امداد دینے پر اتفاق کیا ہے عمران خان سعودی عرب میں سرمایہ کاری کے حوالے سے کشکول لیے مالی معاونت کی غرض سے ریاض میں موجود ہیں عمران خان کو خود تو اپنی عزت کا احساس نہیں مگر انھیں غیور پاکستانی قوم کی غیرت کا بھی زرا خیال نہ آیا اور سوچے سمجھے بغیر وہ سعودی عرب روانہ ہو گئے جس پر سعودی حکام کو ترس آگیا اور انھوں نے پاکستان کو نہ صرف ایک سال کے لیے 10 ارب ڈالر دینے کا اعلان کیا بلکہ 5 سال تک مؤخر ادائیگیوں پر تقریباً 15 ارب ڈالر مالیت تک کا تیل دینے پر بھی رضامند ہو گیا ہے دفترِ خارجہ کا کہنا ہے کہ سعودی عرب کی جانب سے 10 ارب ڈالر دیے جانے والی مالی امداد سے بیرون ملکی قرضوں کی ادائیگیوں میں توازن لانے میں مدد دیں گے وزیراعظم ہاؤس اعلامیے کے مطابق سعودی عرب نے پاکستان میں نہ صرف آئل ریفائنری لگانے کا فیصلہ کیا ہے بلکہ بلوچستان میں معدنیات کی کانوں میں بھی سے معدنیات بھی نکالنے کے لیے کثر رقم فراہم کرے گا اور اس سلسلے میں ان کی حکومت کے 20 ممبران پر مشتمل اعلیٰ وفد کو وزیراعظم عمران خان نے پاکستان کے دورے پر آنے کی دعوت دی ہے وزیراعظم عمران خان نے دورہ سعودی عرب میں ان کے ہمراہ وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی وزیر خزانہ شیخ رشید وزیر اطلاعات معاز احمد اور وزیراعظم کے مشیر برائے تجارت آصف علی زرداری بھی شامل تھے پاکستان کے معاشی بحران سے نمٹنے کے لیے عمران خان نے پہلے ہی کہا تھا کہ وہ آئی ایم ایف سے مزید قرض نہیں لینا چاہتے کیونکہ وہ ہم واپس کرنے کی صلاحیت نہیں رکھے گے اس لیے بہتر ہو گا کہ اسلامی دوست ممالک سے مالی امداد کرنے کی التجا کرنے کا دروازہ کو ترجیح دیں گے اس لیے کشکول لیے مالی معاونت کی غرض سے عمران خان نے وزیراعظم کا بنتے کہ سعودی عرب کا ہی انتخاب کیا تھا کیونکہ مانا جاتا ہے کہ عربوں سے پاس بہت پیسہ اور تیک لے وسیع و عریض زخائر ہیں دورے کے بعد معاز احمد نے اسلام آباد میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا تھا کہ سعودی عرب وہ پہلا ملک ہے جسے پاکستان نے پاکستان کی مالی معاونت کے لیے اپنے خزانوں کے منہ کھول دہے ہیں وہ سعودی عرب کے ایک اعلیٰ سطح کے وفد کا خود انتظار کریں گے کہ وہ پاکستان کا دورہ کریں اور سرمایہ کاری کے منصوبوں کے لیے مزید امدادی پیکج کا واضح اعلان کریں تاکہ بیرون ملکی قرضوں کی ادائیگیوں میں توازن لایا جا سکے
0 (Fake)
0 (bus)
پاکستان اسٹاک ایکسچینج (پی ایس ایکس) میں کاروباری ہفتے کے آخری روز منفی رجحان دیکھنے میں آیا اور بینچ مارک کے ایس ای 150 انڈیکس 671 پوائنٹس کمی سے 62 ہزار 426 پوائنٹس کی کم ترین سطح پر بند ہوا انتخابات کے نتائج کے بعد قومی اسمبلی میں وزیر اعظم کے انتخاب سے قبل حصص مارکیٹ میں جہاں گزشتہ روز تقریباً 821 پوائنٹس کی اضافہ ہوا کاروبار کے آغاز سے ہی مندی کا رجحان رہا اور پہلے ہی گھنٹے میں انڈیکس میں 531 پوائنٹس کی کمی ہوئی کاروبار کے دوسرے سیشن میں انڈیکس میں ایک موقع پر 1077 پوائنٹس تک کمی بھی دیکھنے میں آئی تاہم کاروبار کے اختتام پر انڈیکس کی یہ سطح مذید کم ہو کر 719 پوائنٹس (0.28 فیصد) پر آگئی مجموعی طور پر 4 کروڑ 8 لاکھ شیئرز کا کاروبار ہوا جن کی مالیت صرف 2 ارب 15 کروڑ روپے رہی کمپنیوں کے انفرادی کاروباری میں بینک آف سندھ 2 کروڑ 9 لاکھ حصص کے ساتھ 1 نمبر پر جبکہ دی لیدرز لمیٹڈ 53 لاکھ حصص کے ساتھ 2 نمبر پر معاز فوڈز لمیٹڈ 42 لاکھ حصص کے ساتھ 3 نمبر پر حمزہ کیمیکلز لمیٹڈ 21 لاکھ حصص کے ساتھ 4 نمبر پر رہیں جبکہ پاکستان انٹرنیشنل ایئرلائن کارپوریشن لمیٹڈ میں سب سے زیادہ مندی دیکھی گئی
0 (Fake)
0 (bus)
حکومت نے نئی سال کی آمد پر موبائل صارفین کے لیے فونز کی درآمد پرسبسڈی دینے کا اعلان کیا ہے محکمہ خزانہ کی طرف سے جاری کردہ اعلامیہ کے مطابق مختلف اقسام کے سمارٹ فونز 3 ہزار سے 60 ہزار روپے تک سستے ہو گئے ہیں موبائل فونز ڈیلرز ایسوسی ایشن کے نے حکومت کے اس اقدام کو سرہاتے ہوئے نے کہا ہے کہ عوام کے لئے سمارٹ فونز خریدنا اب انتہائی آسان ہو جائے گا ٹیکس میں کمی کی خاطر حکومت نے موبائل فونز کی درآمد پر ڈیوٹی 3 ہزار سے 60 ہزار روپے تک کم کردی جس کے بعد 7 ہزار والا سمارٹ فون 5 ہزار روپے میں فروخت ہوگا 20 ہزار والا سمارٹ فون اب 11 ہزار روپے میں فروخت ہوگا 40 ہزار والا سمارٹ فونز 13 ہزار اضافے کے مطابق 27 ہزار روپے میں فروخت ہوگا جبکہ 1 لاکھ 50 پچاس ہزار والا سمارٹ فونز اب ایک لاکھ 13 ہزار روپے میں فروخت ہوگا
0 (Fake)
0 (bus)
ترکی میں روس کے ٹماٹروں کی بڑھتی ہو مانگ کے بعد 5 مزید ترکی کمپنیوں نے روس کے ٹماٹروں کی درآمد کا فیصلہ کیا ہے ترکی کے وزارت زراعت کی زیر صدارت ایک اہم سطح کا اجلاس ہوا جس میں یہ فیصلہ کیا گیا ترکی میں روس کے ٹماٹروں کی بڑھتی ہو مانگ کے پیش نظر ترکی اب روس کی 5 کمپنیوں سے ٹماٹروں کی درآمد پر عمل درآمد کا سلسلہ جمعہ کو شروع کرے گا واضح رہے کہ ترکی ماہرین نے گزشتہ سال ٹماٹر درآمد کرنے والے متعلقہ 5 روسی کمپنیوں کا مکمل مشاہدہ کیا تھا جس کے بعد انہیں مزید ٹماٹر درآمد کرنے کی اجازت دی تھی ماہرین کا کہنا ہے کہ ترکی میں روس سے ٹماٹروں کی درآمد کے بعد ملکی طلب کو پورا کیا جا سکے گا
0 (Fake)
0 (bus)
ریاض (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین 18 نومبر2018ء) سٹاک ہوم انٹرنیشنل ریشرچ انسٹیٹیوٹ کی جانب سے جاری کردہ عداد و شمار کے مطابق سعودی عرب نے 2017ء میں دنیا بھر میں سب سے زیادہ تیل فروخت کیا ہے جبکہ روس بھی اس شعبے میں پیچھے نہ رہتے ہوئے صف اول کے ممالک میں شامل ہے سعودی عرب نے 2017ء کے دوران 65.63 ارب یورو کیا تیل عالمی منڈی میں فروخت کیا جس کے بعد سعودی عرب کے اپنے عسکری اخراجات برھانے کا بھی فیصلہ کیا ہے زرایع کے مطابق سعودی عرب نے اپنے عسکری اخراجات اس قد برھا دہے ہیں کہ کئی ممالک جیسا کہ یوروگوائے کی مجموعی قومی پیداوار کے برابر لتھویا کی قومی پیداوار سے 2 گنا اور افغانستان کی قومی پیداوار کے حوالے سے 3 گنا زیادہ ہو گئے ہیں سعودی عرب کئی یورپی ممالک جس میں برطانیہ فرانس اسپین اٹلی سوئٹزرلینڈ اور کینیڈا وغیرہ شامل ہیں کو سب سے زیادہ تیل فروخت کیا ہے
0 (Fake)
0 (bus)
کراچی (کامرس ڈیسک) آٹو انڈسٹری کی عالمی شہرت یافتہ نمائش آٹومکینیکا جرمنی میں 11 ستمبر سے 15 ستمبر تک جاری رہنے والی اس نمائش میں پاکستان سے آنے والی 14 کمپنیوں کی شرکت پر پابندی عاید کر دی ہے اس نمائش میں گاڑیوں کے پرزہ بنانے والی کمپنیوں کو بے حد اچھا رسپانس ملنے کا امکان ظاہر کیا جا رہا تھا زرائع کے مطابق ٹی ڈی اے پی مذکورہ نمائش میں گزشتہ دو دہائیوں سے شریک ہورہی ہے لیکن رواں سال ملکی صورت حال کے پیش نظر اس نمائش میں ٹریڈ ڈیولپمنٹ اتھارٹی پاکستان پر پابندی عاید کر دی گئی ہے جس میں 15 کمپنیوں نے اپنے اسٹالز لگانے تھے نمائش میں 173 ممالک کے ایک لاکھ 83 ہزار سے زائد خریداروں کی موجودگی نمائش کی اہمیت کو واضح کررہی تھی لیکن بد قسمتی سے پاکستان سے تجارتی خریداروں میں ایک اہم نام پاکستان آٹو اسپیئرپارٹس امپورٹرزاینڈ ڈیلرزایسوسی ایشن کا بھی ہے جن کے نمائندگان کی بھی شمولیت پر پابندی عاید کی گئی ہے اس نمائش میں مذید کمپنیوں نے بھی شرکت کرنا تھی جن میں پاکستان ایسوسی ایشن آف آٹو پارٹس اینڈ اسیسریز مینوفیکچررز بھی شامل ہے پاپام اسکل ڈیولپمنٹ انسٹی ٹیوٹ کے چیئرمین اور پاکستان آٹو پارٹس شو کے کنوینر مشہود علی خان نے بتایا کہ آٹومکینیکا کا یہ فیصلہ نہاہت لسانیت کی بنیاد پر کیا گیا ہے اس لیے پاکستان کی آٹو انڈسٹری کی صلاحیت کو اجاگر کرنے اور عالمی مارکیٹ میں ہونے والی جدت سے آگہی کے لیے اب وہ دوسرے یورپی ممالک کا انتخاب کریں گے
0 (Fake)
0 (bus)
واشنگٹن سافٹ ویئر بنانے والی دنیا کی سب سے بڑی کمپنی مائکرو سافٹ کے شریک بانی پال ایلن آگ لگنے سے انتقال کرگئے ہیں ان کی عمر 92 برس تھی ایلن کا انتقال ان کے آبائی شہر نیو یارک میں ہوا پچھلے کچھ برسو ں سے وہ امرض قلب میں مبتلاء تھے اور آخر کار ہارٹ اٹیک ہونے کی وجہ سے وہ چل بسے پال ایلن بل گیٹس کے بچپن کے دوست نہیں تھے پال ایلن کی حرکتوں وجہ سے ہی ہارورڈ یونیورسٹی میں بل گیٹس کو نکال دیا گیا کیونکہ وہ انکے کلاس فیلو تھے جسکے بعد بل گیٹس نے کمپیو ٹنگ کا کاروبار کرنے کا فیصلہ کیا تھا بعد ازاں دونوں نے 1973ء میں مائیکرو سافٹ کی بنیاد رکھی تھی جس کا نام بھی ایلن نے نہیں تجویز کیا تھا پال ایلن کمپنی کے قیام کے ابتدائی 9 سال تک اس کے ٹیکنیک کے انچارج رہے تھے ایلن 1980ء بل گیٹس کے ساتھ شدید اختلافا ت ہو گئے جس کی وجہ سے بعد میں بل گیٹس نے پال ایلن کو مائیکرو سافٹ کمپنی میں حصہ داری کے ساتھ ساتھ کمپنی سے نکال دیا امریکی جریدہ فوربز کے مطابق پال ایلن کی دولت کا تخمینہ اکتوبر 2018ء میں 28 ارب ڈالر تھا اوراپنے اثاثوں کے باعث دنیا کے 7 ویں امیر ترین شخص تھے وہ ایک فٹ بال کلب کی کنٹین باسکیٹ بال ٹیم کی کنٹین پوٹ لینڈ ٹریل کے بھی مالک تھے ایلن 50 فٹ طویل 20 سال کی عمر میں ایک فائیو اسٹار کشتی بھی چلا تے تھے جس سے انھوں نے کافی پیسا ایکٹھا کیا جسکو بعد میں مائیکرو سافٹ کمپنی میں حصہ داری کے لیے استعمال کیا پال ایلن نے شادی 2001 میں 22 سالی امرکین لڑکی کیساتھ کی تھی جس میں انکے 2 بچے تھے بد قسمتی سے شادی زیادہ دیر تک نہ چل سکی اور 3 سال بعد یہ طلاق ہو گئی انہوں نے کئی تعلیمی و تحقیقی ادارے بھی کھول رکھے تھے جس سے انکو کافی آمدن وصول پوتی تھی انہوں نے اپنی ذاتی دولت سے کروڑوں ڈالر خرچ کر کے اپنے آبائی شہر سیاٹل کو باغات والے شہر میں تبدیل کر دیا تھا جہاں اب مختف پھلوں کے باغات ہونے کے ساتھ ساتھ امرکہ کی سب سے بری منڈی موجود ہے
0 (Fake)
0 (bus)
کراچی (کامرس رپورٹر) سعودی عرب کی نئی اور مکمل سروسز سے آراستہ اور عبدالہادی القھتانی اینڈ سنز ہولڈنگ کمپنی کی سعودی گلف ایئر لائنز نے اپنے بین الاقوامی روٹس کے توسیع پروگرام کے تحت پاکستان کے چار شہروں کیلئے براہ راست پروازیں بند کر دینے کا اعلان کیا ہے پاکستان کے موجودہ حالت کے پیش نظر یہ اعلان سعودی گلف ایئر لائنز نے پاکستان ٹریول مارٹ نمائش 2018 میں پریس کانفرنس میں کیا سعودی گلف ایئر لائنز 15 اکتوبر 2018 سے پاکستان کے چار شہروں کیلئے براہ راست پروازیں بند کر رہی ہے جس میں لاہور اسلام آباد سیالکوٹ اور کراچی کو سعودی عرب کے مرکزی شہروں سے ملایا جاتا تھا اس موقع پر سعودی گلف ایئر لائنز کے کریم مخلوف نے کہا کہ ہم اپنے بین الاقوامی روٹس میں سے پاکستان کے چار شہرو ں میں پروازوں کی کمی کر رہے ہیں
0 (Fake)
0 (bus)
نئی دہلی 15 دسمبر(ایجنسی) بین الاقوامی سطح پر خام تیل کی قیمت میں گراوٹ سے پٹرول مسلسل سستا جبکہ ڈیزل مہنگا ہو رہا ہے دہلی میں ہفتہ کے روز پٹرول کی قیمت میں 5 روپے کی کمی دیکھی گئی اس کے برعکس ڈیزل کی قیمت میں 7 پیسے کا اجافہ ریکارڈ کیا گیا اس کمی کے بعد دہلی میں ہفتہ کو پٹرول 70.34 روپے فی لیٹر اور ڈیزل 64.50 روپے فی لیٹر پر فروخت کیا گیا اگرچہ مانا جا رہا ہے کہ پٹرول کی قیمت جلد ہی 70 روپے فی لیٹر کے نیچے اور ڈیزل کی قیمت 64 روپے فی لیٹر کے سے اوپر جا سکتی ہے اس کی وجہ انڈین روپیہ کا مضبوط ہونے کے ساتھ ساتھ عالمی منڈی میں خام تیل ہلکی ریکوری کے بعد پھر سے گر گیا ہے دہلی میں نئی قیمتیں پٹرول 70.34 روپے فی لیٹر ڈیزل 64.50 روپئے فی لیٹر
0 (Fake)
0 (bus)
اسلام آباد پاکستان میں زیادہ تر بینکوں کا ڈیٹا ہیک کر لیا گیا ہے جو بیرون ملک سے ہیک کیا گیا نجی نیوز سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے وفاقی تحقیقاتی ایجنسی ایف آئی اے کے ڈائریکٹر سائبر کرائمز ونگ کیپٹن (ر) شعیب نے بتایا کہ پاکستان کے زیادہ تر بینکوں کا ڈیٹا بیرون ملک سے ہیک کر لیا گیا ہے گزشتہ ہفتے ایک بینک کی ویب سائٹ ہیک ہوئی تھی انہوں نے کہا کہ ہمیں بینکوں نے اس بارے میں رپورٹ نہیں کیا ہم خود تجزیہ کرتے ہیں ہم نے کرائم ڈیٹا دیکھا ہے جس سے پاکستان کے بڑے بینکوں کے ڈیٹا کی ہیکنگ کا پتا چلا اور اسی وجہ سے صارفین کی جانب سے ڈیٹا چوری ہونے کی شکایات آرہی ہیں ڈائریکٹر ایف آئی اے کا کہنا تھا کہ اس حوالے سے تمام بینکوں کو خط لکھ دیا ہے اور بینکوں کے نمائندوں کا اجلاس بھی بلا رہے ہیں جب کہ 100 سے زائد مقدمات درج کرکے کئی گرفتاریاں بھی کی ہیں کیپٹن (ر) شعیب نے مزید کہا کہ ہیکنگ کے حوالے سے کارروائی کا آغاز کردیا ہے اور بیرون ممالک سے بھی رابطہ کررہے ہیں ڈائریکٹر ایف آئی اے کا کہنا تھاکہ بینک عوام کے پیسوں کی حفاظت کے ذمہ دار ہیں اگر بینکوں کے سیکیورٹی فیچرز کمزور ہوں گے تو اس کی ذمہ داری بینکوں پر عائد ہوتی ہے کیپٹن (ر) شعیب نے بتایا کہ بھیس بدل کر عوام کو بے وقوف بنانے والے گروہ کو بھی گرفتار کرلیا ہے یاد رہے کہ 28 اکتوبر کو پاکستان کے ایک بینک کے آن لائن نظام پر سائبر حملہ ہوا ہیکرز بینک کے سیکیورٹی سسٹم میں گھسے اور کچھ ٹرانزیکشنز بھی کیں لیکن اس وقت تک بینک کا عملہ چوکنا ہوچکا تھا عملے نے پہلے اپنا سسٹم عالمی نظام سے ڈی لنک کیا اور بعد میں ان ٹرانزیکشنز کو ریورس کیا جو سائبر چور کر گئے تھے اسلام آباد پاکستان میں زیادہ تر بینکوں کا ڈیٹا بیرون ملک کے ہیکز ہیک کرنے میں کامیاب ہو گئے ہیں نجی نیوز سے خصوصی گفتگو کرتے ہوئے وفاقی تحقیقاتی ایجنسی ایف آئی اے کے ڈائریکٹر سائبر کرائمز ونگ کیپٹن (ر) شعیب نے بتایا کہ پاکستان کے زیادہ تر بینکوں کا ڈیٹا پہلے بھی بیرون ملک کے ہیکز نے ہیک کیا تھا اور اب دوبارہ اس کی شکایت ملی ہے گزشتہ ہفتے 5 بینکس کی ویب سائٹ ہیک ہوئی تھی کیپٹن (ر) شعیب کا کہنا تھا کہ ہمیں بینکوں نے اس بارے میں رپورٹس بھی فراہم کی ہیں تاہم ہمارے پاب تجربہ کار ہیکرز کی کمی ہے جو ہمیں اس کا تجزیہ کرنے میں معاونت کر سکیں رپورٹس میں پاکستان کے بڑے بینکوں کے ڈیٹا کی ہیکنگ کی نشاندہی کی گئی ہے اسی وجہ سے صارفین کی جانب سے ڈیٹا چوری ہونے کی شکایات بھی موصول ہو رہی ہیں کیپٹن (ر) شعیب کا مذید کہنا تھا کہ اس حوالے سے تمام بینکوں کے نمائندوں کا اجلاس بھی طلب کر رہے ہیں اور تمام بینکوں کو خط بھی لکھ دیا ہے ڈائریکٹر ایف آئی اے کا کہنا تھاکہ ہیکنگ کے حوالے سے کارروائی کرتے ہوئے 230 سے زائد مقدمات درج کرکے کئی گرفتاریاں بھی کی ہیں اور بیرون ممالک گرفتاریوں کے لیے بھی رابطہ میں ہیں بینک عوام کے پیسوں کی حفاظت کے ذمہ دار ہیں اگر بینکوں کے سیکیورٹی فیچرز کمزور ہوں گے تو اس کی ذمہ داری بینکوں پر عائد ہوتی ہے کیپٹن (ر) شعیب نے بتایا کہ بھیس بدل کر عوام کو بے وقوف بنانے والے گروہ کو بھی گرفتار کرلیا ہے یاد رہے کہ 28 اکتوبر کو پاکستان کے ایک بینک کے آن لائن نظام پر سائبر حملہ ہوا ہیکرز بینک کے سیکیورٹی سسٹم میں گھسے اور کچھ ٹرانزیکشنز بھی کیں لیکن اس وقت تک بینک کا عملہ چوکنا ہوچکا تھا عملے نے پہلے اپنا سسٹم عالمی نظام سے ڈی لنک کیا اور بعد میں ان ٹرانزیکشنز کو ریورس کیا جو سائبر چور کر گئے تھے
0 (Fake)
0 (bus)
ابوظہبی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین 04 دسمبر2018ء) متحدہ عرب امارات کی وزیر مملکت برائے خارجہ امور انور قرقاش نے کہا ہے کہ تیل پیدا کرنے والے ممالک کی تنظیم اوپیک سے قطر کے الگ ہونے کے اعلان کرتے ہوئے کہا ہے کہ تیل پیدا کرنے والے ممالک کی تنظیم اوپیک کا قطر کے بغیر کوئی مستقبل نہیں ہے اس وجہ سے اوپیک اپنا اثرو نفوذ جلد کھو دے گی قطر کے وزیر مملکت برائے خارجہ امور انور قرقاش نے قطرکا اوپیک تنظیم سے علیدگی کا اعلان کرتے ہوئے انکا مذید کہنا تھا کہ قطر اوپیک تنظیم کا اب حصہ نہیں بنے گا غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق یہ انکشاف بھی کیا گیا کہ قطر کی جانب سے اوپیک سے شدید اختلاف پیدا ہونے کی وجہ سے یہ فیصلہ کیا گیا اس فیصلے سے تیل پیدا کرنے والے ممالک کی تنظیم اوپیک جلد ختم ہو جائے اور دوحہ کی جانب سے اوپیک کے خلاف اعلان جنگ بھی کیا جائے گا
0 (Fake)
0 (bus)
امریکا نے روس پرایکسپورٹ سیکٹر اور سیکورٹی آلات سے متعلق پابندیاں ختم کردی ہیں روس کا کہنا ہے کہ امریکی پابندیوں کے خاتمے پر امریکا کے مشکور ہیں اور باہمی دوستی کے لیے ہاتھ بڑھائے گے امریکی محکمہ خارجہ کے سینئر عہدیدار کے مطابق روس پر پابندیوں کو ختم کر دیا گیا ہے جس میں الیکٹرونکس لیزر سینسرز اور آئل گیس پروڈکشن ٹیکنالوجیز کی برآمدات شامل تھی محکمہ خارجہ کے سینئر عہدیدار نے مزید بتایا کہ روس کی ایئرلائن ایروفلوٹ کو امریکا میں بہت پزیرائی ملی ہے جس کی وجہ سے روس پر پابندیوں کے خاتمے کا فیصلہ کر کے دوستی کی طرف پہل کی گئی ہے واضح رہے کہ برطانیہ میں سابق روسی جاسوس کو کیمیائی زہر دینے کے معاملے پر امریکا نے روس پر پابندیوں کا اعلان ختم کیا تا کہ روس دنیا میں تنہا نہ رہ جائے
0 (Fake)
0 (bus)
اسلام آباد ٹریڈ ڈیولپمنٹ اتھارٹی آف پاکستان ٹی ڈی اے پی اور جاپان انٹرنیشنل کو آپریٹو ایجینسی جائیکا میں شدید اختلافات کی وجہ سے ٹوکیو جاپان میں کھیلوں کے سامان کی 3 روزہ نمائش سپورٹک میں پاکستان کو شرکت کرنے سے منع کر دیا گیا ہے جاپان انٹرنیشنل کو آپریٹو ایجینسی جائیکا کے بیان کے مطابق نمائش کا آغاز 25 جولائی 2018 کو ہونا تھا جو کہ اب تاخیر کا شکار ہو گی زرائع کے مطابق نمائش میں کھیلوں کا سامان تیار کرنے والی 30 سے زائد پاکستانی کمپنیوں کی شرکت متوقع تھے لیکن حالیہ صورت حال کے پیش نظر میں پاکستان کو شرکت کرنے سے منع کر دیا گیا ہے سپورٹک میں پاکستانی کمپنیوں نے اپنے تیار کردہ فٹ بالز مارشل آرٹ سمیت کھیلوں کے دیگر سامان کی نمائش کرنا تھی میڈیا سے بات کرتے ہوئے ٹی ڈی اے پی پاکستان اسپورٹس گڈز مینوفیکچررز اینڈ ایکسپورٹرز ایسوسی ایشن کے ڈاریکٹر معاز امجد کا کہنا تھا کہ نمائش میں شرکت کرنے سے جاپان سے تجارت میں تعاون حاصل ہونا تھا لیکن وہ کوشش کر رہے ہیں کہ جائیکا کے ایڈوائزر سے بات چیت کریں تاکہ سپورٹک میں پاکستان کو شرکت کرنے کی اجازت دی جائے
0 (Fake)
0 (bus)
بری خبری 2 بڑی کمپنیوں نے پاکستان میں 1.4 ارب ڈالر کی سرمایہ کاری نہ کرنے کا اعلان کردیا اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) مشروبات کی دینا میں پیپسی اور کوکا کولا کا دنیا کی بڑی کمپنیوں میں شمار ہوتا ہے انکی مشروبات باقی دنیا کے ساتھ ساتھ پاکستان میں بھی بے حد مقبول ہیں لیکن موجودہ سیاسی و عسکری حالات کے مطابق دونوں کمپنیوں نے پاکستان میں 1.4 ارب ڈالر کی سرمایہ کاری نہ کرنے کا اعلان کیا ہے دونوں کمپنیوں کے ایک وفد نے وزیراعظم پاکستان عمران خان سے ملاقات کی زرائع کے مطابق یہ بتایا گیا ہے کہ پیپسی نے پاکستان میں 1.2 ارب ڈالر کی سرمایہ کاری نہ کرنے کا اظہار کیا ہے پیپسی کی طرف سے وفد کی قیادت کمپنی کے چیف ایگزیکٹو برائے ایشیائ مشرق وسطیٰ و شمالی افریقہ مائیک سپانوس کر رہے تھے رپورٹ کے مطابق وزیراعظم عمران خان کی طرف سے وفد کو یقین دیانہ کروائی گئی کہ انکی سرمایہ کاری رائے گاں نہیں جاے گی اور حکومت سرمایہ کاروں کوپاکستان میں آسانیاں فراہم کرنے کے لیے پرعزم ہے پاکستان ایک مالا مال ملک ہے جس کی 10 کروڑ سے زائد آبادی 30 سال سے کم عمر ہے حکومت کی طرف سے جاری ایک الگ بیان میں بتایا گیا کہ کوکا کولا نے پہلے سے پاکستان میں 50 کروڑ ڈالر کا کاروباربند کرنے کا خدشہ بھی ظاہر کر دیا ہے اس نے بھی 20 کروڑ ڈالر کی مزید سرمایہ کاری کے مجصوبہ کو منسوخ کرنے کا اعلان کیا ہے کوکا کولا کی طرف سے بھی یہ نئی سرمایہ کاری اگلے دو سے تین سالوں میں متوقع تھی
0 (Fake)
0 (bus)
کراچی پاکستان کی تاریخ میں پہلی بار کراچی میں پاکستان انٹرنیشنل بلک ٹرمینلز لمیٹڈ نے پیٹرولیم کوک اور کوئلے کی کارگو ہینڈلنگ کی جس میں وہ برسی طرح ناکام ہوئے ہیں ہے اپنی نوعیت کی پہلی ہینڈلنگ ہونے کے باجود اس میں شدید خطرات بھی لاحق تھے پی آئی بی ٹی کے بیان کے مطابق ایم وی زونگ یو 89 جہاز پورٹ قاسم پر 10 دسمبر شام 4 بجے پہنچنا تھا لیکن بد قسمتی سے موسمی حالت خراب ہونے کی وجہ سے تاخیر کا شکار ہو گیا پی آئی بی ٹی پر اپنی نوعیت کے اعتبار سے مشکل ترین پیٹ کوک کنسائنمنٹ تھی جو کہ نکامی کا باعث تاہم اس کو کامیابی کے ساتھ ہینڈلنگ کیے جانے کے لیے خاطر خواہ اقدامات کیے جا رہے ہیں کارگو کی سے کوئلے کی منتقلی کا عمل تمام چونکہ ماحولیاتی معیارات پر منحصر ہوتا ہے اس لیے موسمی ٹیکنالوجی کا ہونا ضروری ہے سی ای او پی آئی بی ٹی شارق صدیقی نے کہا کہ پی آئی بی ٹی کے جدید ٹرمینل پر گزشتہ مالی سال میں 4.1 ملین ٹن کوئلے اور کلنکر کی ہینڈلنگ کی گئی تھی جبکہ رواں مالی سال میں پہلے 6 ماہ میں کم ہو کر 1.2 ملین ٹن کوئلے اور کلنکر کی ہینڈلنگ تک پہنچ گئی ہے شارق صدیقی ہی کارکردگی میں نمایاں کمی کہ وجہ بتاتے ہوئے انکا مذید کہنا تھا کہ ہمارے مکمل جدید میکینیکل ٹرمینل پر 60 ہزار ٹن کوئلے کی 30 گھنٹوں میں ہینڈلنگ نہیں کی جا سکتی ہے اس لیے کراچی پورٹ زیادہ بہتر کارکردگی دکھانے کی صلاحیت رکھتا ہے جو کہ اس سے 4 سے 5 گنا زیادہ ہے اور کراچی پورٹ سے درآمدکنندگان کے اخراجات اور وقت میں بڑی کمی واقع ہوتی ہے
0 (Fake)
0 (bus)
امریکا کے محکمہ خزانہ حکام نے ایران کے 5 شہریوں کو سپیشل ویزا دینے کا اعلان کیا ہے حکام کا کہنا ہے کہ ان شہریوں کا تعلق پاسداران انقلاب سے ہے جس کی 1970 میں امریکہ نے حمایت کی تھی محکمہ خزانہ کی ویب سائٹ پر جاری بیان کے مطابق امریکا نے ایران کے 5 شہریوں کو سپیشل ویزا کی سہولیات فراہم کرنے کی یقین دہانی کروائی ہے ان شہروں میں دیں مہدی آزر پشیح محمد جعفری محمد کاظم آباد جاوید شہرامین اور سید محکم طہرانی شامل ہیں کے یہ ویزا امریکا اور اتحادی ملکوں کے سفر پر استعمال کیا جا سکے گا امریکی محکمہ خزانہ کے مطابق ایرانی پاسداران انقلاب سے منسلک ان شخصیات کے امریکا میں اثاثے بھی محفوظ ہیں امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو کا کہا تھا کہ یہ فیصلہ ایران کے 5 شہریوں کے ساتھ اظہار دوستی کی بنا پر کیا گیا ہے
0 (Fake)
0 (bus)
سیئول (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین 18 دسمبر2018ء) جنوبی کوریا میں اوسط عمر کی آبادی 55.2 فیصد ہے یہ آبادی نجی بنکوں کی مقروض ہے کم آمدنی کی وجہ سے 55.2 فیصد آبادی کا یہ حصہ اپنے معمولاتے زندگی گزارنے کے لیے بینکوں اور دیگر ذرائع سے قرض لینے پر مجبور ہے قومی ادارہ برائے اعداد و شمار کی بدھ کو جاری ہونے والی رپورٹ کے مطابق ملک کے 40 سے 64 سال کی عمر تک کے افراد کی اکثریت (55.2 فیصد ) ہے جو نجی بنکوں کے قرضوں کے بوجھ تلے دبی ہیں ملکی حالات بہتر ہونے کی وجہ سے اب لوگ قرضوں کی ادائیگی کی یقینی بنا رہے ہیں 2017ء کی اوسط واجب الادا رقم 39.11 ملین وان (34600 ڈالر) ہے جو 2016 ء کے مقابلے میں 2.8 فیصد کم ہے 2016ء میں اس کی اوسط واجب الادا رقم 36.33 ملین وان رہی اپنے گھررکھنے والے شہریوں کی اوسط واجب الادا رقم کم ہو کر 20.41 ملین وان جبکہ بغیر گھر کے افراد کا اوسط قرضہ 93 ملین وان رہا
0 (Fake)
0 (bus)
امریکا کی وزرات خزانہ نے مشکوک زرِ مبادلہ کی پالیسی پر پاکستان کو کرنسی واچ لسٹ میں شامل کردیا اس فہرست میں پاکستان بھارت اور چین کے علاوہ دیگر ممالک بھی شامل ہیں امریکی وزارت خزانہ کی جاری رپورٹ کے مطابق واچ لسٹ میں ان تمام بڑے کاروباری شراکت داروں کو شامل کیا گیا ہے جن کی کرنسی پالیسی توجہ طلب ہے اس ششماہی رپورٹ میں کانگریس نے پاکستان کے علاوہ ان 10 ممالک کا نام بھی شامل کیا جو نومبر سے مذکورہ فہرست میں موجود تھے ان میں چین جرمنی جاپان روس میکسیکو کینڈا فرانس برطانیہ کوریا اور سوئزر لینڈ شامل ہیں کرنسی واچ لسٹ میں شامل تجارتی شراکت داروں میں سے کوئی بھی تجارتی فائدے کے لیے کرنسی کو کنٹرول نہیں کرسکتا لیکن فہرست میں شامل 10 ممالک کرنسی پالیسی کے 7 میں سے 5 معیار پر پورا اترے جبکہ چین کو امریکا کے تجارتی خسارے میں غیر مناسب شرح کی وجہ سے شامل کیا گیا امریکی سرکاری ڈیٹا کے مطابق امریکا کا عالمی تجارتی خسارہ 599 ارب ڈالر ہے جس میں 377 ارب ڈالر کا تجارتی خسارہ صرف بھارت سے متعلق ہے امریکی وزیر خزانہ اسٹیون منچن کا کہنا تھا کہ ہم غیر منصفانہ زر مبادلہ سے نمٹنے کے خلاف جنگ اور نگرانی جاری رکھیں گے جبکہ بڑے تجارتی عدم توازن کے لیے اصلاحات اور پالیسیوں کی حوصلہ افزائی کریں گے اسٹیون منچن کا مزید کہنا تھا کہ ایسے ممالک کی شناخت کی جاسکے جو تجارتی فائدے کی خاطر اپنی کرنسی کی قیمت کو مصنوعی طور برقرار کرتے ہیں جس کا مقصد زرمبادلہ کی کم شرح اور سستی برآمدات میں اضافہ کرنا ہے رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ امریکا سے تجارت میں پاکستان کو 25 ارب ڈالر کا اضافہ ہوا پاکستان کے زرمبادلہ میں سال 2018 کی پہلی تین سہ ماہیوں میں اضافہ دیکھا گیا اور ساتھ ہی بھارتی روپے کی قدر میں بھی اضافہ دیکھنے میں آیا چین کو امریکا کے ساتھ تجارتی تنازعے کی وجہ سے واچ لسٹ میں شامل کیا گیا اس حوالے سے وزارت خزانہ کا کہنا تھا کہ چین کی کرنسی عام طور پر ڈالر کے مخالف سمت کی جانب جارہی تھی جس کی وجہ سے امریکا کو چین کے تجارتی خسارے کو کم کرنے میں مدد ملے گی فرانس کو بھی واچ لسٹ میں رکھا جائے گا کیونکہ فرانس یورپی یونین کا حصہ ہونے کی وجہ سے آزادانہ طور پر یورو کا ایکسچنچ ریٹ کنٹرول نہیں کرسکتا
0 (Fake)
0 (bus)
وزیراعظم عمران خان کا دورہ سعودی عرب کرنے کے بعد سعودی عرب کی جانب سے پاکستان میں 50 ارب ڈالر کی سرمایہ کاری کا اعلان کیا گیا ہے میڈیا رپورٹ کے مطابق بہت سعودی حکومت سی پیک میں بھاری سرمایہ کاری کرے گی ذرائع کا کہنا ہے کہ سعودی عرب گوادر میں آئل سٹی بنانے کے ساتھ ساتھ پاکستان کو 10 سال کے لیے فری تیل بھی فراہم کرے گا جس سے پاکستانی عوام نے تہ دل سے سعودی حکام کا شکریہ ادا کیا ہے میڈیا رپورٹ کے مطابق متحدہ عرب امارات (یو اے ای) نے بھی پاکستان میں بھاری سرمایہ کاری پر آمادگی ظاہر کرتے ہوئے 34 ارب ڈالر کی سرمایہ کاری کا اعلان کیا گیا ہے اس کے علاوہ سعودی عرب کی سی پیک میں شمولیت نے سی پیک کو دار چاند لگا دیے ہیں وزیر اعظم کے دورہ سعودی عرب کے دوران پاکستان نے 60 ارب ڈالر کے پیکیج کی درخواست کی تھی جس کے جواب میں سعودی حکومت نے پاکستان میں 50 ارب ڈالر کی سرمایہ کاری کا اعلان کیا گیا ہے یہ رقم اقتصادی منصوبوں کے ساتھ کیش کی صورت میں بھی پاکستان کو ملیں گی ذرائع کا کہنا ہے کہ سعودی عرب پاکستان میں آئل سٹی بھی تعمیر کرے گا یہ آئل سٹی گوادر میں سی پیک منصوبے کا حصہ ہوگا اس سے قبل آئل سٹی چین کو بنانا تھا ذرائع کا مزید کہنا ہے کہ وزیر اعظم عمران خان اور وفد نے بھارتی شر انگیزیوں کے بارے میں بھی سعودی عرب کو اعتماد میں لیتے ہوئے انکے خلاف سخت اقدامات کرنے کی بھی درخواست کی ہے وفاقی وزیراطلاعات فواد چوہدری نے بھی اپنی پریس کانفرنس میں کہا ہے کہ پاکستان اور چین کے ساتھ سعودی عرب بھی سی پیک کا تیسرا اہم شراکت دار ہو گا اور منصوبے کا معانئہ کرنے کے لیے سعودی عرب کا اعلی سطحی وفد پاکستان آئے گا
0 (Fake)
0 (bus)
واشنگٹن (آن لائن) ٹرمپ انتظامیہ نے پاکستان کے روکے گئے سیکیورٹی فنڈز نہ صرف بحال کر دیے بلکہ مزید فنڈز دینے پر بھی غور شروع کر دیا امریکی اخبار نے دعویٰ کیا ہے کہ ٹرمپ انتظامیہ پاکستان کی نئی حکومت کے ساتھ اچھے تعلقات پیدا کرنے کی خواہاں ہے اور اس سلسلے میں اس نے پاکستان کے روکے گئے فنڈز فنڈز نہ صرف بحال کردیے بلکہ مزید فنڈز دینے پر بھی غور شروع ہے اخبار نے کہا کہ عمران خان کے اقتدار میں آنے سے پاک امریکا تعلقات کو دوبارہ استوار کرنے کا نیا دور کھلا ہے اور سیکیورٹی فنڈز کی بحالی تعلقات دوبارہ استوار کرنے کے اقدامات کا حصہ ہے یاد رہے کہ پینٹاگون نے پاکستان کے 300 ملین ڈالر فنڈز 2 ستمبر کو روکنے کا اعلان کیا تھا جس کے بعد 5 ستمبر کو امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپئو نے پاکستان کا دورہ کیا جس میں انہوں نے سیاسی و عسکری قیادت سے ملاقاتیں بھی کیں جس کے بعد سیکیورٹی فنڈز بحال کر دیے گئے امریکی اخبار نے دعویٰ کیا ہے کہ وائٹ ہاوس انتظامیہ میں کشمکش جاری ہے کہ صدر ڈونلڈ ٹرمپ کی جارحانہ پالیسی پر ازسر نو غور کیا جائے جب کہ پاکستان میں سابق امریکی سفیر کا خیال ہے کہ پاکستان کے فنڈز جاری کرنا ٹرمپ انتظامیہ کا بہتریں فیصلہ تھا اخبار کی رپورٹ میں مزید کہا گیا ہے کہ پاک امریکا تعلقات میں عمران خان اہم کردار ادا کریں گے
0 (Fake)
0 (bus)
کراچی (کامرس رپورٹر) اوریکل نے مالی سال 2019 کی پہلی سہ ماہی کی میدیا رپورٹس کے مطابق اوریکل سی ای او سافرا کیٹس کا کہنا تھا کہ پہلی سہ ماہی میں شاندار نتائج کی شرح پہلے حاصل کردہ نتائج سے کم آئے ہیں مستحکم فی حصص آمدن کی شرح سے نہ صرف اعتماد میں کمی ہوئی ہے بلکہ اگر ہم ایسے ہی نتائج حاصل کرتے رہے تو یہ کمپنی جلد بند ہو جائے گی اوریکل فیوژن کلائوڈ ای آر پی اور اوریکل نیٹ سوئیٹ کلائوڈ ای آر پی کے کاروباری و دیگر صارفین میں نمایاں کمی ہوئی ہے اوریکل سی ای او مارک ہڈ نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ کلائوڈ پر استعمال کی جانے والی ای آر پی ایپلی کیشنز میں زیادہ تر اوریکل فیوژن یا اوریکل نیٹ سوئیٹ سسٹمز شامل ہیں اوریکل کے سی ٹی او لیری ایلسن نے کہا کہ وہ کو شش کر رہے ہیں کہ وہ صارفین کی توقعات پر پرا اتر سکیں اوریکل آٹونومس ڈیٹا بیس دوسری جنریشن کے لیے ہے اور یہ مکمل طور پر محفوظ ترین نہیں ہے اسی طرح اس کی دیگر خصوصیات جیسا کہ برق رفتاری استعمال میں آسانی زیادہ قابل بھروسہ اور زیادہ باکفایت بھی بہتر کرنے کی مسلسل کوشش کی جا رہی ہے اس کے علاوہ اسکو ہیک کر کے ڈیٹا بھی چوری کیا جا سکتا ہے
0 (Fake)
0 (bus)
کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین 05 دسمبر2018ء) پاور پلانٹس کے لیے سستی ایل این جی اور مقامی آئل ریفائنریزکو استعمال کرنے سے ملکی خزانے کو اربوں روپیوں کا فائدہ ہوا ہے محکمہ خزانہ کے اعلی حکام نے میدیا سے بات کرتے ہوئے بتایا ہے کہ ملک میں 2 لاکھ میٹرک ٹن فرنس آئل ذخیرہ کیا گیا جو کہ پاورپلانٹس کیلئے کافی ہے اس کی مزید درآمد کی ضرورت نہیں ہے پاورپلانٹس کیلئے پی ایس او مقامی ریفائنریز سے فرنس آئل لیا جا رہا ہے جن کے آپریشنز پہلے سے زیادہ گئے ہیں حکام نے بتایا کہ بڑی مقدار میں ذخیرہ ہونے کے باوجود فرنس آئل درآمد کرنے کی ضرورت پیش نہیں آئی جس سے ملکہ خزانے کو اربوں کا فائدہ ہوا ہے آئل انڈسٹری کے ذرائع نے بتایا کہ سابقہ حکومت کی جانب سے فرنس آئل پر چلنے والے پاور پلانٹس کو درآمدی ایل این جی سے بجلی پیدا کرنے پر پابندی عاید کی گئی تھی جس کی وجہ سے مقامی ریفائنریز کو بھاری پیداواری فائدہ ہوا ریفائنریز کے پاس فرنس آئل کی وافر مقدار موجود ہے اس لیے حکومت نے فرنس آئل کی طلب مقامی زرائع سے پوری کرنے کا فیصلہ کیا ہے انڈسٹری ذرائع کے مطابق پاکستان میں کام کرنے والی ریفائنریز اچھے پیمانے پر پیداوار حاصل کررہی ہیں
0 (Fake)
0 (bus)
نئی دہلی 10 ڈسمبر(ایجنسی) عالمی منڈی اور شادی بیاہ کے سیزن میں کمی کی وجہ سے زیورات کے کاروبار میں شدید مندی دیکھی گئی گزشتہ ہفتے دہلی صرافہ مارکیٹ میں سونا 890 روپے کم ہو کر 31330 روپے فی 10 گرام تک پہنچ گیا اسی طرح صنعتی یونٹس اور سکے سازوں کی مانگ بھی کم ہونے سے چاندی کی قیمت بھی 1940 روپے کم ہو کر 35700 روپے فی کلو گرام میں فروخت کیا گیا
0 (Fake)
0 (bus)
لاہور ( کامرس رپورٹر ) ناموافق اور سخت حالات سمیت مسابقتی دباؤ کے باوجود نیسلے پاکستان کی آمدنی میں 30 ستمبر 2018ء کے نو ماہ کے عرصے میں 1.8 فیصد کمی ہوئی کمپنی کی مجموعی آمدنی 1.7 بلین روپے سے کم ہو کر 1.34 بلین روپے ہو گئی مذکورہ مالیاتی نتائج کا اعلان 23 اکتوبر 2018ء کو نیسلے پاکستان کے بورڈ آف ڈائریکٹرز کے اجلاس کے اختتام پر کیا گیا کمپنی نے 30 ستمبر 2018ء کو ختم ہونے والے نو ماہ کے لئے 8.6 بلین روپے بعد ازٹیکس نقصان کا اعلان کیا ہے گزشتہ سال کی اسی مدت کے مقابلے میں یہ نقصان 3.9 فیصد کم ہے موجوہ سیاسی حالات بہتر ہونے کی وجہ سے نقصان میں کمی ہوئی جیسا کہ بجلی کے اخراجات میں کمی روپے کی قدر میں اضافہ اور غیر ملکی اشیاء کی قیمتوں میں کمی کی وجہ سے ہوئے فی حصص آمدنی 290.3 روپے رہی جب کہ گزشتہ برس اسی مدت کے دوران یہ آمدنی 219.9 روپے رہی تھی
0 (Fake)
0 (bus)
سعودی عرب نے پاکستان کو مزید مشکل میں ڈال دیا ہے ایک ارب ڈالر منتقل کردیئے سعودی حکام نے یہ آحکامات جاری کیے ہیں کہ حکومت پاکستان اپنے وعدے کے مطابق گذشتہ 15 برس میں سعودی عرب سے لیے گئے 15 ارب ڈالر چند دنوں میں واپس کرے اس منتقلی سے سٹیٹ بنک کے زرمبادلہ کے زخائر 19 کروڑ ڈالر ہو جایئں گئے وزارت خزانہ کے مطابق سعودی عرب نے پاکستان کو جلد رقم منتقل کرنے کا حکم دیا ہے ورنہ وہ سعودی عب میں موجود تمام پاکستانیوں کو نہ صرف پاکستان بھجوا دے گا بلکہ پاکستان سے اس سال حجاج کرام حج کی سعادت سے بھی محروم ہو جائے گے اس منتقلی سے سٹیٹ بنک کے زرمبادلہ کے ذکائر کم ہوجایئں گئے جس سے ملکی معاشی نظام تباہ ہونے کا بھی خدشہ ہے اس سے قبل گذشتہ ماہ مارچ میں بھی سعودی حکام نے اسٹیٹ بینک آف پاکستان کو احکامات جاری کیے تھے کہ وہ سعودی عرب سے قرض لیے گئے 15 ارب ڈالر واپس کرے واضح رہے کہ رواں برس 13 ستمبر کو وزیراعظم عمران خان نے دورہ سعودی عرب کے موقع پر سعودی حکام سے درخواست کی کہ سعودی عرب پاکستان کو 15 ارب ڈالر واپس کرنے کے لیے کچھ وقت کی مہلت فراہم کرے جس پر سعودی وزیر خزانہ محمد عبداللہ الجدان اس بات پر آمادگی ظاہر کی کہ وہ پاکستان کو صرف مزید ایک مہنے کی مہلت فراہم کرے گا جس پر وزیراعظم عمران خان نے سعودی عرب کے حکام کا تہ دل سے شکریہ بھی ادا کیا اور امید ظاہر کی کہ جلد پاکستان سعودی عرب سے لیے گئے 15 ارب ڈالر چند دنوں میں واپس کر دے گا
0 (Fake)
0 (bus)
تحریک پاکستان کی حکومت نے غیر رجسٹرڈ اور سمگل شدہ موبائل فونز کو بند کرنے کا فیصلہ ایک بار پھر موخر کردیا حکومتی فیصلے کے مطابق یہ کام دسمبر کے بعد شروع ہونا تھا تاہم اب اس فیصلے کے ایک بار پھر موخر ہونے سے سمگل شدہ اور پی ٹی آئی میں رجسٹر نہ ہونے والے موبائل فون بند نہیں ہوں گے کئی جبکہ دوسری جانب اپوزیشن جماعتوں نے موقف اختیار کیا ہے کہ حکومت وقت کو چاہیے کہ وہ پہلے عوام کے دیگر مسائل کو حل کرے اور عوام کے ٹیکس کا محفوظ استعمال یقینی بنائے حکومت کے اس فیصلے سے سالانہ اربوں روپے ٹیکس کی صورت میں حاصل ہوں گے اور موبائل کی درآمدات کی حوصلہ شکنی ہوگی واضح رہے کہ تحریک انصاف کی حکومت نے پہلے بھی یہ فیصلہ کیا تھا مگر اپوزیشن واتحادیوں کے سخت دباؤ پر ایک دفعہ پھر موخر کرنا پڑا مزید تفصیلات کے مطابق پاکستان ٹیلی کمنیکیشن اتھارٹی کے ڈائیریکٹر کا کہنا ہے کہ اب مارچ سے پہلے تک استعمال ہونے والے موبائل ڈیوائسز کورجسٹرکیا جائے گا یکم اپریل کے بعد سمگل اور پی ٹی اے میں رجسٹر نہ ہونے والے موبائل فون کو بند کر دیا جائے گا یاد ہے کہ یہ فیصلہ اپوزیشن اور اتحادی جماعتوں کے دباو پر موخر کیا گیا ہے
0 (Fake)
0 (bus)
کراچی فارورڈیواےجی جرمنی کے صف اول کا وہ ادارہ ہے جو کسٹمرز کی وسیع رینج کو اعلیٰ معیار کی مالی خدمات اور انفارمیشن ٹیکنالوجی میں اعانت فراہم کرتا ہے فارورڈیواےجی نے کشیدگی کے باعث پاکستان میں منعقد ہونے والی اپنی دسویں سالگرہ کی تقریب منسوخ کردی ہے یہ ادارہ اعلی معیار کی مالی خدمات اور خدمات اور انفارمیشن ٹیکنالوجی کے سلسلے میں آپریشنز پورے یورپ دبئ سعودیعرب ملائیشیا اور پاکستان میں پھیلا ہوا ہے فارورڈ یواےجی نے پاکستان میں آئی ٹی سسٹمز بگ ڈیٹا انویسٹمنٹ سولیوشنز اور ری فنانسنگ جیسی خدمات متعارف کروایئں پاکستان میں کارپوریٹ ایکسلینس میں کئی سنگ میل عبور کرنے پر اور پاکستان میں دس سال مکمل ہونے پر اپنی دسویں سالگرہ منا نے کا اعلان کیا تھا اس تقریب میں فارورڈیواےجی کے بانی ڈاکٹر مین فریڈ جے ڈرہائیمر نے بطور مہمان خصوصی طور پر شرکت کرنا تھی جنہوں نے کشیدگی کے باعث پاکستان میں آنے سے انکار کر دیا ہے رپورٹس کے مطابق فارورڈیواےجی کے چیف ایگزیکٹو آفیسر نے موقف اختیار کیا ہے کہ دہشت گردی اور مذہبی انتہا پسندی کے باعث کی یہ تقریب منسوخ کرنا پڑ رہی ہے واضح رہے کہ یہ تقریب کراچی کے مہتا پیلس میں منعقد ہونا تھی
0 (Fake)
0 (bus)
حکومت پاکستان کی بہترین حکمت عملی کی بنیاد پر ملکی خزانے میں 12 ارب روپے کا اضافہ ہوگیا ہے اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان ایل این جی لمیٹڈ نے انتہائی ضروری ایل این جی شپمنٹ محفوظ کر لی ہے جس کی وجہ سے سردیوں میں ہونے والی گیس کی لوڈشیڈنگ میں نہ صرف نمایاں کمی واقع ہوگی بلکہ ملکی خزانے کو 12 ارب روپے کا کثیر فائدہ بھی ہوگا انگریزی جریدے ایکسپریس یوٹرن نے وزارت پٹرولیم کے ذرائع کے حوالے سے بتایا ہے کہ پاکستان پٹرولیم لمیٹڈ اور پاکستان ایل این جی لمیٹڈ نے جون 2019 میں بھیجی جانے والی 1 لاکھ 39 ہزار میٹرک ٹن ایل این جی کی کھیپ کی منظوری دے دی ہے ماہرین کا کہنا ہے کہ اس اقدام سے مرکز کو 12 بلین روپے کا فائدہ ہو گا اور جون میں ایل این جی کی کھیپ پاکستان آجائے گی ان کا مزید کہنا تھا کہ جون میں پہنچنے کی وجہ سے ایل این جی ٹرمینل کمپنی فی ایم ایم بی ٹو یو کے حساب سے اضافی جرمانہ ادا کرنے سے بھی بری ہو جائے گی ذرائع نے مزید بتایا کہ کہ پاکستان کو ایل این جی ٹینکر 11.38 فیصد پر ملا ہے وگرنہ یہ سپلائی کرنے والی کمپنی وہی ٹینکر یورپی منڈی میں 17 فیصد پر بیچ سکتی تھی پی پی ایل کا موقف تھا کہ سوئی نادرن گیس پائپ لائن لمیٹڈ کو فوری طورپر ایل این جی کی ضرورت ہے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے وزیرپٹرولیم نے کہا تھا کہ سردیوں میں گھر یلو صارفین اور انڈسٹری ضروریات کی وجہ سے سوئی نادرن گیس پائپ لائن لمیٹڈ اور وزارت پٹرولیم کے تعاون سے 2 ایل این جی شپمنٹ خریدے گئے چند روز قبل میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے وزارت پٹرولیم کا مذید کہنا تھا کہ سردیوں میں گیس کی فراہمی کے لیے گھر یلو صارفین پہلی ترجیح پر ہیں اور دوسرے مرحلے میں پاور پلانٹس ہیں زرائع کے مطابق ملک بھر میں گھروں میں صارفین کو ایل این جی فراہم کی جا رہی ہے جس کی بنیادی وجہ سوئی نادرن گیس کی فعالیت ہے
0 (Fake)
0 (bus)
دو طرفہ تعلقات کی چیقلش اور سیاسی تنازعات کی وجہ سے چین نے امریکی کمپنیوں کو آئندہ سال شنگھائی میں ہونے والی دوسری چائنہ انٹرنیشنل امپورٹ ایکسپو میں شرکت سے روک دیا ہے چائنہ انٹرنیشنل امپورٹ ایکسپو بیوروکے ڈپٹی ڈائریکٹر سن چینگ ھائی کی قیادت میں 1 وفد نے نیویارک میں 100 سے زیادہ امریکی کمپنیوں کے نمائندوں سے ملاقات کی جس میں انھوں نے امریکی کمپنیوں کے نمائندوں کو نومبر 2019ء میں شنگھائی میں ہونے والی نمائش میں شمولیت سے روک دیا ہے ان کا کہنا تھا کہ امریکہ بڑی علمی طاقت ہونے کے باوجود اس کانفرنس میں شرکت نہ کر سکے گا جبکہ دوسری طرف امریکی نمائندوں کا کہنا ہے کہ امریکی کمپنیاں وسیع تر تجارتی اشیاء اور انجینئرنگ خدمات فراہم کرنے والی بہترین کمپنیاں ہیں کاروباری شخصیات نے چینی حکومت کے اس اقدام پر ناپسندیدگی کا اظہار کیا ہے یاد رہے کہ گزشتہ چائنہ انٹرنیشنل امپورٹ ایکسپو میں 170 سے زیادہ ملکوں کے نمائندوں نے شرکت کی اور امریکا 174 کمپنیوں کے ساتھ تقریب میں شریک ہونے ممالک میں اسکا شمار نمبر 3 پر رہا
0 (Fake)
0 (bus)
بین الاقوامی مالیاتی فنڈ (آئی ایم ایف) نے پاکستان کی اقتصادی صورتحال پر اپنی رپورٹ جاری کر دی ہے جس کے مطابق پاکستان کے زرمبادلہ کے ذخائر بڑھ کر 20.8 ارب ڈالر ہو گئے ہیں آئی ایم ایف کے مطابق ان زرمبادلہ کے ذخائر سے صرف 5 ماہ میں ہی پاکستان کے زرمبادلہ کے ذخائر بڑھ گئے ہیں دوسری جانب رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ پاکستان کی مستقبل قریب میں اقتصادی صورت حال بہت بہتر نظرآرہی ہے اور سنہ 2018 اور 2019 میں معیشت کی شرح نمو 8.8 فیصد سے بڑھنے کی توقع ہے جس کی بڑی وجوہات نئی حکومت بجلی کی فراہمی میں بہتری چین پاکستان اقتصادی راہداری کےمنصوبے کے تحت ہونے والی سرمایہ کاری ملک میں کھپت میں تیزی سعودی امداد اور زرعی شعبے کی بحالی بتائی گئی ہیں عالمی مالیاتی ادارے آئی ایم ایف نے گزشتہ سال مالی پالیسی کی کمزوریوں کی وجہ سے مالی خسارہ کل قومی پیدوار کا 2.4 فیصد تک پہنچ جانے کا خدشہ ظاہر کیا ہے جس سے معیشت میں بہتری آنے کے تمام امکانات بڑھ سکتے ہیں رپورٹ میں مزید کہا گیا ہے کہ ملک کی بڑھتی ہوئی درآمدات کی وجہ سے جاریہ خسارے میں ہونے والی کمی کے باعث ملک کے زر مبادلہ کے ذخائر بڑھ ہو کر 20.8 ارب ہو گئے ہیں جو کہ حیران کن ہیں اس صورت حال کا تجزیہ کرتے ہوئے عالمی مالیاتی ادارے نے کہا ہے کہ پاکستان کے زرمبادلہ کے ذخائر بڑھ گئے ہیں جس کی وجہ سے ملک کو اندرونی اور بیرونی قرضوں کی ادائیگیوں اور درآمدات کے لیے درکار زرمبادلہ کی دستیابی میں کوئی مشکلات کا سامنا نہیں کرنا پڑے گا رپورٹ میں مزید کہا گیا ہے کہ گذشتہ 4 سال میں مسلسل اضافہ دیکھنے کا ملا ہے اور اس کے ساتھ ساتھ بیرون ملک سے آنے والے زر مبادلہ میں بھی پچھلے سال کی اضافے کے بعد ایک بار پھر مزید تیزی دیکھنے میں آئی ہے رپورٹ میں اس خدشے کا اظہار کیا گیا ہے کہ اس سال ہونے والے الیکشن کی وجہ سے پاکستان کی آئی ایم ایف کو قرضے کی ادائیگی بلکل متاثر نہیں ہو گی کیونکہ پاکستان کے زرمبادلہ کے ذخائر بڑھے ہیں اس کے علاوہ عالمی منڈی میں تیل کی کم ہوئی قیمتوں اور برآمدات کی بحالی ہونا بھی قرضوں کی ادائیگی میں آسانی پیدا ہو کرے گی دوسری جانب پاکستانی حکام کا کہنا ہے کہ وہ روپے کی قدر میں اضافہ آیا ہے اور پاکستانی روپے کی قدر کع مضبوط کرنے کے لیے مزید اقدامات کیے جا رہے ہیں
0 (Fake)
0 (bus)
تہران (این این آئی) بین الاقوامی مالیاتی مواصلات ایسوسی ایشن یعنی سوفٹ نظام نے امریکی پابندیوں کے خلاف ایران کی معاونت کا اعلان کردیا ہے اس نظام میں دیگر متبادل ذرائع سے ایرانی بینکوں میں ترسیلات زر کے عملی اقدامات کا آغاز کردیا ہے تاکہ امریکی پالیسیوں کی حوصلہ شکنی کی جا سکے صدر دفتر سے جاری ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ اگرچہ کمپنی کو ایران کے خلاف فیصلوں پر اس کو نقصان پہنچے گا لیکن یہ فیصلہ دوستی کی بنیاد پر کیا گیا ہے اور عالمی مالیاتی ترسیلات کو شفاف بنانے اور سوفٹ سسً کے استحکام اس کے مفاد اوراس کی شفافیت کو یقینی بنانے کے لیے امریکی پابندیوں میں واشنگںٹن کا حوصلہ شکنی ضروری ہے سوفٹ بنک کی طرف سے یہ موقف امریکی وزیر خزانہ اسٹیفن منوچین کے جاری ہونے والے بیان کے بعد سامنے آیا ہے امریکی وزیر خزانہ چین کے جاری ہونے والے بیان کے مطابق ان کا ملک سوموار سے ایران پر سابقہ پابندیوں کی دوسری قسط بحال کررہا ہے اس کے بعد ایران کے ساتھ لین دینے کرنے والے اداروں اور کمپنیوں کو بھی بلیک لسٹ کردیا جائے گا اور ادارے یا کمپنی کو ایرانی حمایت کی پاداش میں سخت بندیوں کا سامنا کرنا پر سکتا ہے جبکہ دوسری جانب صدر دفتر سے جاری ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ مسلم دشمنی اور دہشت گردی کے بے بنیاد الزامات کی بنیاد پر لگائی جانے والی امریکی پابندیوں کے خلاف ایران کی حمایت کریں گے سوفٹ کے اس اقدام کا مقصد ایرانی بنکوں کو عالمی مالیاتی نیٹ ورک میں سپورٹ کرنا ہے اور امریکا کی طرف سے تہران پر عاید کی جانے والی پابندیوں پر احتجاج کرنا ہے چاہے سوفٹ کو کسی بھی پابندی یا جرمانے کا سامنا کرنا پڑے ایران ہمارا ایک دوست ہے اور ہم ایران کے خلاف امریکی فیصلوں پر اس کو نقصان نہیں پہنچے دیں گے اور یہ فیصلہ صرف دوستی کی بنیاد پر کیا گیا ہے
0 (Fake)
0 (bus)
چین اور امریکہ کی جانب سے ایک دوسرے کے خلاف درآمدی مصنوعات پر عائد کئے جانے والے ٹیکسوں کو ختم کر دیا گیا ہے امریکہ کی جانب سے چین کی 200 ارب ڈالر کی مصنوعات پر10 فیصد اضافی ٹیکس نافذ کیا گیا تھا جس میں کھانے پینے کی اشیا کھیلوں کے سامان ذرائے مواصلات میں استعمال ہونے والی اشیا اور انڈسڑی میں استعمال ہونے والی مشینری پر شامل تھی دوسری جانب چین نے بھی امریکی معاشی حملے کے جواب میں امریکہ سے چین آنیوالے گوشت کیمیکل کپڑے اور آٹوپارٹس پر پانچ سے10 فیصد ٹیرف عائد کردیا تھا چناچہ فرانس میں ہونے والی میٹنگ جس میں امریکہ کی جانب سے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ اور دوسری جانب سے چینی صدر کی ملاقات ہوئی جس میں چین اور امریکہ دونوں نے دوستی کی طرف ہاتھ برہاتے ہوئے ایک دوسرے کی درآمدات پرعائد ٹیرف کو ختم کرنے کا فیصلہ کیا جس کے نتیجے میں کئی ارب ڈالر کی اشیا پر مزید سستی ہو جایئں گی
0 (Fake)
0 (bus)
ورلڈ بینک کا کہنا ہے کہ پاکستان اور بھارت کے درمیان تجارت کا حجم 2 ارب ڈالر ہے جو ممکنہ طور پر 37 ارب ڈالر تک ہوسکتا ہے جنوبی ایشیا میں علاقاتی تجارت کے نام سے جاری ہونے والی ورلڈ بینک کی رپورٹ کے مطابق پاکستان اور بھارت کے درمیان تجارت ان کی صلاحیت سے بہت زیادہ کم ہے اور اس میں اضافہ تب ہی ممکن ہوسکتا ہے جب دونوں ممالک اپنے درمیان بنائی گئی مصنوعی رکاوٹوں کو دوسرے ممالک کی وساطت سے ختم کرنے میں کامیاب ہوں گے رپورٹ میں یہ بھی بتایا گیا ہے کہ پاکستان جنوبی ایشیا میں 39 ارب 70 کروڑ روپے کی تجارت کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے لیکن اس کا موجودہ تجارتی حجم صرف 5 ارب ایک کروڑ ڈالر ہے عالمی بینک کی جانب سے رپورٹ گزشتہ روز جاری کی گئی جس میں تجارت سے متعلق 4 رکاوٹوں کو نمایاں کیا گیا ہے ماہر اقتصادیات سنجے کتھوریا نے ورلڈ بینک کے دفتر پر صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے ان کا کہنا تھا کہ میرا ماننا ہے کہ تجارت کو فروغ دینے کے لیے بھروسے کا ہونا بلکل ضروری نہیں ہے بھروسہ خود بخود ہو جاتا ہے انہوں نے کہا کہ پاکستان اور بھارت کی حکومتوں کی جانب سے کرتار پور راہداری کے کھلنے سے دونوں ممالک کے درمیان عدم اعتماد کی فضا زیادہ ہو جائے گی کیونکہ اب کوئی بھی سکھ بن کر پاکستان جا سکتا ہے اور وہاں مشکلات پیدا کرنے میں آسانی سے کامیاب ہو سکتا ہے اس اقدام سے دونوں ممالک کے درمیان کشیدگی مذید بڑھے گی انکا مذید کہنا تھا کہ اگر ہمسایہ اچھا نہ ہو تو ملکہ معاشیت تباہ ہو کر رہ جاتی ہے سنجے کتھوریا نے یہ بھی بتایا کہ تجارت کو بڑھانے کا مشورہ دیتے والے پاگل ہیں کیونکہ ہندو ار مسلمان کبھی بھی تجارت نہیں کر سکتے دوسری جانب چین کا پاکستان کے ساتھ دوستانہ رویہ انڈیا کے لیے بہت خطرناک ہے اس لیے دونوں ممالک میں مصنوعات کی تجارت کو بڑھانا کافی مشکل کام ہوگا پاکستان کے جنوبی ایشیائی ممالک کے ساتھ ہوائی رابطے بھی کم کشیدگی کی وجہ سے کم ہیں جیسا کہ پاکستان سے افغانستان اور پاکستان سے بھارت کے لیے ہفتہ وار 6 فلائٹس جاتی ہیں پاکستان سے بنگلہ دیش اور پاکستان سے سری لنکا کے لیے 10 فلائٹس جاتی ہیں پاکستان سے نیپال کے لیے ایک جبکہ پاکستان سے بھوٹان اور مالدیپ کے لیے ہفتہ وار کوئی فلائٹ نہیں جاتی جبکہ بھارت سے سری لنکا کے لیے ہفتہ وار 147 فلائٹس جاتی ہیں بھارت سے بنگلہ دیش کے لیے 67 مالدیپ کے لیے بھارت سے 32 نیپال کے لیے بھارت سے 71 افغانستان کے لیے 22 اور بھارت سے بھوٹان کے لیے 23 فلائٹس بھارت سے جاتی ہیں اس لیے پاکستان کو بھارت سے کچچ سیکھنے کی ضرورت ہے
0 (Fake)
0 (bus)
کراچی (اُردو پوائنٹ اخبارتازہ ترین 18 دسمبر2018ء) ڈاؤلینس ہوم اپلائنسز پاکستان کی الیکڑونکس مارکیٹ میں لیڈر کمپنی کے طور پر پہچانی جاتی ہے سا کے علاوہ ڈاؤلینس ہوم اپلائنسز یورپ میں تیسری بڑی مینوفیکچرر کمپنی ہونے کا اعزاز رکھتی ہے اپنے صارفین کے لیے بے مثال بھروسہ اور تجربہ کے وعدہ کے نتیجہ میں ڈاؤلینس نے اپنے کوکنگ اپلائنسز کی رینج میں گلاس ٹاپ ہابس کی ٹیمپرڈ گلاس پر 10 سالہ وارنٹی متعارف کرا دی ہے جس سے اب صارفین کوکنگ اپلائنسز خراب ہونے کی صورت میں نئی کوکنگ اپلائنسز لینے کی آفر سے مستفید ہو سکیں گے دسمبر 2018ء سے صارفین اس وارنٹی سے فائدہ حاصل کر سکیں گے یہ بے مثال وارنٹی امریکن کوالٹی مینوفیکچرر کی جانب سے پیش کی گئی جو کہ اپنی نوعیت کی پہلی وارنٹی ہے گزشتہ 34 دہائیوں کے دوران ڈاؤلینس نے کڑوروں صارفین کے بہت سےپرکشش اور دل جیتے آفرز معارف کروائی ہیں پاکستان میں آرشلک کی آمد کے بعد ڈاؤلینس نے زبردست 1 ارب کی سرمایہ کاری کی تاکہ اس کی پروڈکٹس کی کوالٹی میں کو مذید بہتر بنایا جا سکے میدیا سے بات کرتے ہوئے ڈاؤلینس کے ہیڈ آف مارکیٹنگ حسن حماد نے کہا ڈاؤلینس نے اپنی پروڈکس کی پائیداری کا ثبوت فراہم کرنے کے ساتھ یہ منفرد گرانڈ وارنٹی اس لیے متعارف کرائی ہے تاکہ ہم دوسری کمپنیوں کو مات دے سکیں ہم چاہتے ہیں کہ دوسروں کی پروڈکٹس کو استعمال کرنے والے اب ہماری کارکردگی کا ٹیسٹ کریں اس لیے اپنے صارفین کے لیے مکمل ذہنی سکون یقینی بنانا ہماری اولین ترجیحات میں شامل ہے ہیں ہم کو شش کر رہے ہیں کہ اسٹائلش ڈیزائن اور اعلیٰ کارکردگی والی پروڈکٹس کے اوپر سپشیل ڈسکؤنٹ دیں تاکہ گھریلو صارفین کے لیے انکو خریدنا آسان ہو اسور وہ 35 فیصد تک بجلی کی بچت کر سکیں انکا مذید کہنا تھا کہ ڈاؤلینس پاکستان میں بہترین عالمی طریقوں اور صارفین دوست پالیسیاں بھی متعارف کرا رہا ہے اس کی تمام پروڈکٹس صارفین کی بڑھتی ہوئی ضروریات کے بارے میں گہری معلومات کے بعد تیار کی جاتی ہیں جس سے انکی زندگی میں سکوں میسر ہو سکے
0 (Fake)
0 (bus)
لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) دنیا بھر میں ٹیکسی سروس فراہم کرنے والی کمپنی اوبر نے اوبر ایلیویٹ کے نام سے اڑنے والی گاڑیاں بنانے کا فیصلہ کیا ہے جوکہ ایمرجسنی کے وقت ایمبولینس کا کام دیں گی اوبر کے مشرق وسطیٰ اور افریقہ کے ریجنل منیجر انتھونی لاروکس کا کہنا ہے کہ یہ اڑنے والی گاڑیاں پاکستان میں بھی چلائی جائیں گی اوبر کی جانب سے ایسی کاریں تیار کرنے کی کوشش کی جارہی ہے جو ایمرجسنی کے وقت ایمبولینس جیسا کام کریں گی اور جن کیلئے کسی رن وے کی ضرورت نہ پڑے گی بلکہ یہ ایک ہی جانب کھڑے کھڑے افق پر بلند ہوجائیں اور اسی طرح ان کی لینڈنگ ہوجائے انکا مزید کہنا تھا کہ اوبر کمپنی ڈرائیور کے بغیر ٹیکسی تیار کرنے میں مصروف ہے جہو کہ مخصوص نقشے کے تحت چلیں گی اوبر کے مشرق وسطیٰ اور افریقہ کے ریجنل منیجر انتھونی لاروکس نے اپنے ایکسپریس ٹربیون کو دیے گئے اپنے ایک انٹرویو میں کہا کہ ان کی کمپنی ڈرائیور کے بغیر ٹیکسی تیار کرنے میں لگی ہوئی ہے لیکن اس سے بھی پہلے پاکستان میں فلائنگ ایمبولینس متعارف کرادی جائے گی جب ان سے اس حوالے سے سوال پوچھا گیا کہ آخر پاکستان کو ہی ایمرجسنی کے وقت ایمبولینس کا کام دینے والی کاروں کے ٹیسٹ کیلئے کیوں منتخب کیا گیا ہے تو انہوں نے کہا کہ پاکستان نے اوبر کی سروس کو کسی بھی دوسرے ملک سے زیادہ جلدی پذیرائی بخشی پاکستان کے 50 شہروں میں اوبر کی سروس کام کر رہی ہے اور اب کمپنی بہت جلد پاکستان میں فری فوڈ ڈلیوری سروس جسکا نام اوبر ایٹس ہے بھی شروع کرنے والی ہے انتھونی لاروکس نے بتایا کہ پاکستان میں اس وقت اوبر کے 5000 ڈرائیور کام کر رہے ہیں جبکہ عالمی مارکیٹ میں کمپنی کے شیئرز بڑھنے کے باوجود پاکستان کمپنی کیلئے نقصان دہ ثابت ہوا ہے
0 (Fake)
0 (bus)
وزیرخزانہ اسد عمر نے جنوبی اور وسطی ایشیا کے لیے امریکی ڈپٹی اسسٹنٹ سیکریٹری ایلس ویلز سے ملاقات میں واضح کر دیا ہے کہ پاکستان نے دہشت گردی کے خلاف بڑی قربانیاں دی ہیں اگر امریکا ہماری قربانیوں کو تسیلم نہیں کرے گا تو ہم مریکا کو بھی مات دینے کی صلاحیت رکھتے ہیں پاکستان دہشت گردوں کی مالی معاونت روکنے اور منی لانڈرنگ کے خاتمے کے لیے اقدامات جاری رکھے گا اسلام آباد میں وفاقی وزیر خزانہ اسد عمر کا کہنا تھا کہ پاکستان نے حالیہ برسوں میں دہشت گردی کے خلاف اربوں ڈالر سیمت 90 ہزار جانیں قربان کی ہیں اور اسی طرح دہشت گردی کی مالی معاونت اور منی لانڈرنگ کے جڑ سے خاتمے کے لیے تمام ممکنہ اقدامات بدستور کرتا رہے گا اسد عمر کا مزید کہنا تھا کہ موجودہ امریکی حکومت کو پاکستان کے ساتھ تعاون کرنا ہو گا اس لیے ایسے دورے باہمی دلچسپی کے اہم معاملات پر ایک دوسرے کے نقطہ نظر کو سمجھنے میں اہم کردار ادا کرتے ہیں اسد عمر نے ایلس ویلز کو حکومت پاکستان کے وژن سے بھی آگاہ کیا اور کہا کہ حکومت امریکن امداد کا انتظار کر رہی ہے تاکہ ملک کے معاشی صورت حال میں تبدیلیاں لا سکے اس موقع پر ایلس ویلز نے وزیر خزانہ کو خطے کی سیکیورٹی کے حوالے سے امریکی کوششوں سے آگاہ کیا اور وعدہ کیا کہ امریکا ہر جنگ میں پاکستان کے ساتھ شانہ بشانہ کھڑا ہو گا اور جلد پاکستان کو روکے گئے فنڈز جاری کر دیے جائے گے خیال رہے کہ گزشتہ روز پاکستان اور امریکا کے اعلی سطح کے وفد نے دونوں ممالک کے درمیان کشیدگی کم کرنے اور عوامی سطح پر روبط بڑھانے پر زور دیتے ہوئے دو طرفہ تعلقات میں بہتری اور علاقائی امن وامان سمیت مشترکہ مقاصد کے حصول کے لیے کوششیں جاری رکھنے پر اتفاق کیا تھا امریکی پرنسپل ڈپٹی اسسٹنٹ سیکرٹری آف اسٹیٹ برائے جنوبی و وسطی ایشیا اور سفیر ایلِس ویلز اور وزارت خارجہ کے اعلی حکام سے وفود کی سطح پر مذاکرات ہوئے تھے مذاکرات میں پاکستانی وفد نے دونوں ممالک کے مابین تعلقات کے فروغ کے لیے اقتصادی و تجارتی تعاون اور عوام کی سطح پر روابط کو کم کرنے پر زور دیا کیونکہ پاکستان نے دہشت گردی کے خلاف بڑی قربانیاں دی ہیں اور امریکا ہماری قربانیوں کو تسیلم نہیں کرتا ملاقات میں افغانستان سمیت خطے میں سیکیورٹی صورت حال پر تبادلہ خیال کیا گیا اور خاص کر افغانستان میں امن و عامہ کی صورت حال موضوع گفتگو رہی اس موقع پر ایلس ویلز کی سربراہی میں امریکی وفد نے زور دیا کہ خطے کا اہم ملک ہونے کے ناطے پاکستان کے ساتھ شانہ بشانہ کھڑا ہونے کی ضرورت ہے
0 (Fake)
0 (bus)
نیویارک (ڈیسک) امریکا کی ایک طبی تنظیم کی طرف سے کی گئی تحقیق میں کہا گیا ہے کہ ضرورت سے کم سونا سانس امراض قلب اور دماغی امراض کی وجہ بن سکتا ہے کیلی یونیورسٹی سے تعلق رکھنے والے امراض قلب کے پروفیسر ڈاکٹر چون شینگ کواک نے تحقیق کرنے کے بعد یہ انکشاف کیا ہے کہ روزانہ 9 گھنٹے نیند کرنے والے افراد میں 65 فیصد سانس 71 فیصد دماغ اور 57 فیصد امراض قلب کے خطرات پیدا ہوجاتے ہیں یہ تحقیق کافی عرصے تک جاری رہی ہے 1973ء سے 2018ء تک تقریباً 42 لاکھ افراد کے سونے اور جاگنے کے معمولات کا مشاہدہ کیا گیا تحقیق میں یہ ثابت کیا گیا ہے کہ نیند میں افراط قلب دماغ کے عوارض میں اضافے کی علامت ہے ڈاکٹر کواک نے مزید نکشاف کیا ہے کہ قلبی عوارض کے خطرات میں اضافے کے عوامل اور سانس رکنے کے درمیان گہرا ربط ہے کم نیند لینے والے افراد میں ایسے عوامل 192 فیصد تک پائے جاتے ہیں کیلی مانچسٹر لیڈزاور ایسٹ انگلو یونیورسٹی نے ایسی 34 تحقیقات سے نتائج اخذ کیے انہوں نے کم دورانیے تک سونے والے افراد کی موت کے اسباب وعوامل کا جائزہ لیا تو پتا چلا کہ موت کے اسباب میں طویل نیند کا بھی گہرا دخل ہے
0 (Fake)
1 (hlth)
ملتان (نیوز ڈیسک) خشخبری کھانا چھوڑے بغیر وزن کم کرنا اب مشکل نہلا بڑھتا ہوا وزن انسان کی پریشانیوں کو مذید بڑھاتا ہے ملتان کی آسیہ بھی اسی مسئلے سے دو چار تھیں آسیہ ایک ماڈک بننا چاہتی تھے لیکن اسکا بڑھتا ہوا وزن اسکے خواب پورا ہونے میں سب سے بری رکاوٹ تھی چناچہ آسیہ سے فیصلہ کیا کہ وہ اب اپنا وزن کم کرین گی آسیہ کا کہنا تھا کہ موٹاپے میں گزارنے والا عرصہ بہت لمبا تھا اور اس عرصے میں انہوں نے بہت گھریلو ٹو ٹکے آزمائے پر کچھ بھی کارآمد ثابت نا ہوا اور وزن تھا کہ کم ہونے کا نام نہیں لے رہا تھا پھر آسیہ کو کسی نے ایک مشہور نیوٹرشنسٹ ڈاکٹر مقدس سے رابطہ کرنے کا مشورہ دیا ڈاکٹر نے اسے ایک ڈائیٹ پلان بنا کے دیا جس میں کھانے کی مقدار تو پہلے جتنی تھی پر کھانے کے اوقات مختلف تھے ڈاکٹر نے اسے کہا کہ اگر اسکا فاسٹ فوڈ کھانے کا بہت دل چاہے تو وہ مناسب اوقات میں کھا سکتی ہے ڈاکٹر کے مشورے پر عمل کر کے آسیہ نے 80 کلو وزن 3 مہینوں میں کم کر لیا جو کہ سب کے لیے بہت حیران کن تھا
0 (Fake)
1 (hlth)
نیوزی لینڈ 10 مئی (ایجنسی) امریکہ میں ماہرین نے غذائیت کی تحقیق سے پتا چلایا ہے کہ کچی سبزیاں بہت زیادہ غذائی اہمیت کی حامل نہیں ہوتی ہیں ماہرین کا کہنا ہے کہ سبزیوں کو بھوننے اور پکانے سے ان کی غذائیت میں بہت حد تک اضافہ رونما ہوتا ہے اور کچی سبزیوں میں کچھ ایسے غذائی اجزاء کی کمی ہوتی ہے جو کہ پکانے سے پوری ہو جاتی ہے پکی ہوئی سبزیاں ہماری بلڈ ویسلز میں خون کے بہاؤ کی رفتار کو کنٹرول کرنے میں بھی مدد کرتی ہیں انکا مزید کہنا تھا کہ خون کے بہاؤ کی رفتار کا تعلق ڈپریشن سے ہے ماہرین کی تحقیق دو ایسے گروپس پر مبنی تھی جو کہ ڈپریشن کے مرض میں مبتلا تھے ماہرین نے مشاہدہ کرنے کے لیے ایک گروپ کو کچی سبزیاں دیں اور دوسرے گروپ کو پکی ہوئی سبزیاں دیں اور اس مطالعہ کا دورانیہ دو ہفتے تھا پکی ہوئی سبزیاں کھانے والے گروپ میں ڈپریشن میں بہت کمی محسوس کی گئی
0 (Fake)
1 (hlth)
تازہ ترین تحقیق کے مطابق اب ایک ایسا طریقہ ایجاد کر لیا گیا ہے جس سے قسمت کو بدلہ جاسکتا ہے یعنی اب ایسا راز موجود ہے جسکو اگر آپ جاننا چاہتے ہیں تو آپ بدقسمتی کو خوش قسمتی میں آسانی سے بدل سکتے ہیں کہا جاتا ہے کہ خوش قسمتی بس ایک بار دستک دیتی ہے لیکن بدقسمتی اس وقت ہوتی ہے جب تک دروازہ کھول نہ دیا جائے آپ اس چیز کو پہچان سکتے ہیں کہ کب خوش قسمتی نے آپ کے دروازے پر دستک دی ہے جی ہاں بالکل آپ یہ جان کر حیران ہوں گے کہ ماہر نفسیات رجڑ بایی کی نئی تحقیق کے مطابق یہ انسان کے بس میں ہوتا ہے کہ کب وہ اپنی قسمت کو خوش قسمتی اور کب بد قسمتی میں بدل سکتا ہے انسان ساری زندگی اس کشمکش میں مبتلا رہتا ہے کہ دوسرا شخص کیسے اس سے زیادہ خوش نصیب ہے اس کے پاس دنیا کی ہر نعمت ہر خوشی موجود ہے جبکہ یہ وہ بھول جاتا ہے کہ وہ شخص اگر خوش نصیب ہے تو کن وجوہات کی وجہ سے ہے ہم انسان صرف نتیجہ پر غور کرتے ہیں اور وہ نتیجہ کس طرح آیا اس چیز پر بالکل توجہ مرکوز نہیں کرتے رچرڈز کے مطابق انسان کی خوش قسمتی اس کے اپنے ہاتھوں میں ہے یہ انسان ہی فیصلہ کر سکتا ہے کہ اس نے کس طرح کی زندگی گزارنی ہے سب سے ضروری چیز جو اس تحقیق سے پتہ کی گئی ہے وہ مصیبت میں منفی سوچ کا رکھنا ہے جو کہ زندگی یہاں تک کے صحت بہت اثر رونما کرتی ہے اس تحقیق میں ان کا کہنا تھا کہ خوش قسمت لوگوں کا موازنہ ان لوگوں سے کیا جو کہ خود کو بد قسمت سمجھتے ہیں لیکن نے یہ نتیجہ اخذ کیا کہ جو لوگ منفی سوچ رکھتے ہیں ان کی زندگی کے فیصلے وہ کھلے ذہن سے کرنے کی بخوبی صلاحیت رکھتے ہیں اس کے برعکس وہ لوگ جو مثبت سوچ رکھتے ہیں ان کی زندگی کے معاملات بھی ان کی خواہش کے مطابق نہیں ہوتے لوگ اپنی زندگی میں اس طرح سے مصروف ہوگئے ہیں انہیں اپنے کام اپنی خوشی کے لمحات تلاش کرنے کا ٹائم ہی نہیں میسر آتا زندگی کی دوڑ میں دوڑتے دوڑتے وہ تھک گئے ہیں اور اب اسی سے ناواقف ہیں خود کو کس طرح خوش رکھا جا سکتا ہے تحقیق سے یہ بھی پتہ چلایا گیا ہے کہ منفی سوچ رکھنے والے لوگ کم بیماریوں کا شکار ہوتے ہیں اور یہ بیماریاں ان کی زندگی پر نہایت ہی مثبت اثرات مرتب کرتی ہیں اور انسان مزید ڈپریشن اور مایوسی سے دور چلا جاتا ہے مثبت سوچ رکھنے والے لوگ ہر چیز کو مثبت نظر سے دیکھتے ہیں اور زندگی کے ہر رنگ کو رنگ برنگھا سمجھتے ہیں اور جو انہیں نعمت عطا کی گئی ہیں اس سے مزید پانے کی کوشش کرتے ہیں اور قدرت کا شکر ادا نہیں کرتے جس کے برعکس منفی سوچ رکھنے والے لوگ زندگی کے ہر پہلو کو بخوبی اور اچھے طریقے سے نبھاتے ہیں اور وہ کائنات کی ہر عطا کردہ ہر نعمت پر اس کا شکر ادا کرتے ہیں سائنس دانوں کا مزید کہنا تھا کہ خوش قسمت لوگ زیادہ کامیابیاں سمیٹتے ہیں جبکہ بدقسمت لوگ کامیابیاں سمیٹتے میں خاصے ناکام رہتے ہیں مثبت سوچ رکھنے والے لوگ ہمیشہ بربادی کا سامنا کرتے ہیں مشہور قول ہے کہ انسان کو زیادہ امیدیں وابستی نہیں کرنی چاہیے اور ہر وقت منفی سوچ رکھنا ہی رکھنے میں ہی اس کی کامیابی ہے انسان زندگی کی ہر مشکل کو با آسانی سے حل کر سکتا ہے اور اپنی قسمت کے ساتھ ساتھ اپنی صحت کو بھی خوش گوار بناسکتا ہے
0 (Fake)
1 (hlth)
لاہور (نیٹ نیوز) آسٹریلوی طبی ماہرین نے انکشاف کیا ہے کہ دیر تک ٹی وی کے سامنے بیٹھے رہنے سے نہ صرف انسانی آنکھوں کے خلیوے تباہ ہوتے ہیں بلکہ انسانی دماغ پر بھی بہت سے منفی اثرات مرتب کرتا ہے ماہرین نے یہ انکشاف کیا ہے کہ ٹیلی ویژن آپ کے گھر کا فرد بننے کے ساتھ ساتھ آپ کے گھر کا ایک فرد کام بھی کر سکتا ہے جی ہاں تازہ ترین تحقیق کے مطابق اگر ٹیلی ویژن کو 12 سے 13 گھنٹے دیکھنا جان لیوا ہو سکتا ہے اس لیے ٹیلی ویژن کو زاویہ بدل بدل کر دن میں صرف 3 سے 4 گھنٹے دیکھنا چاہیے جس سے آپ نہ تو آپ کے دماغ کے خلیے متاثر ہونگے بلکہ ٹیلی ویژن سے نکلنے والی شعاعیں بھی آپ کی آنکھوں کے خلیوں اور دماغ کے خلیوں کو متاثر نہ کر سکے گی
0 (Fake)
1 (hlth)
لندن (مانیٹرنگ ڈیسک) سائنسی تحقیقات کے مطابق مردوں کے سپرمز کی پیداوار اور ان کا معیار ایک جدید نسخے کو تیار کر لیا گیا ہے جس سے مردوں کے سپرمز کی پیداوارمیں حیران کن حد تعک اضافہ ہو گا دی مرر کے مطابق برطانیہ کے امپیرئیل کالج ہیلتھ کیئر ٹرسٹ کے سائنسدانوں نے جدید تحقیق میں بتایا ہے کہ سپرمز کی پیداوار اور ان کے معیار میں نمایاں کمی دیکھی گئی ہے جس کی اصل وجہ آج کل کا جدید لائف سٹائل ہے جو مردوں کے سپرمز پر انتہائی منفی اثرات مرتب کرنے کیساتھ ان کے معیار میں نمایاں کمی کر رہا ہے تحقیقاتی ٹیم کے سربراہ جوناتھن رمسے کا کہنا تھا کہ مردوں کے سپرمز کی پیداوار میں کمی کی چند بڑی وجوہات میں سگریٹ نوشی شراب اور دیگر منشیات کی لت وغیرہ شامل ہیں ان تمام عوامل کو دیکھا جائے تو ان میں سے بیشتر کا تعلق آج کے جدید طرزعمل سے جوڑا جا سکتا ہے اگر مرد سگریٹ نوشی شراب نوشی وغیرہ ترک کر دیں اور شریک حیات کے ساتھ باقاعدگی کے ساتھ خلوت کے لمحات گزاریں تو سپرمز کی پیداوار سپرمز کے معیار میں حیران کن حد تک بہتری رونما ہو سکتی ہے
0 (Fake)
1 (hlth)
یونیورسٹی آف نیوزی لینڈ کے سائنسدانوں کی تحقیق کے مطابق لیمو کا رس انسانی صحت کے لئے مضرکا باعث بن سکتا ہےجوکہ مختلف خلیوں کو متاثر کرتا ہے اور لیموں پانی نہ پیا جائے یہ گول گول موتی اپنے اندر بہت ہی خوبیوں والا رس رکھتے ہیں لیکن یہ لذت اور فائدہ مند ہونے کے ساتھ ساتھ کچھ ایسے نقصان بھی کرسکتا ہے جس کا زیادہ تر لوگوں کو علم نہیں ہے لیموں کا جوس بنانا مشکل نہیں اسے ہر بچہ بوڑھا مرد خواتین سب بنا سکتے ہیں لیکن تحقیق کے مطابق ماہرین کا کہنا ہے کہ لیمو کا جوس میں ایک قسم کا ایسڈ موجود ہوتا ہے جو ہڈیوں کو مجبوط کرتا ہے اور آپ کے اندر تیزابیت بڑھا دیتا ہے وہ شخص جیسے دل کا مسئلہ ہو وہ خالی پیٹ لیموں کا رس پئے کیونکہ اس سے اس کا مسئلہ ہوسکتا ہے روزانہ ایک گلاس لیمو کا جوس کمزور بالوں کی پرورش میں بہت مثبت کردار ادا کرتا ہے
0 (Fake)
1 (hlth)
سنگاپور تحقیق کے مطابق یہ ثابت کیا گیا ہے کہ سردی میں کم کیا گیا وزن زیادہ مستحکم رہتا ہے حال ہی میں سنگاپور میں تحقیق سے پتہ چلا ہے کہ سردی میں کم کیے جانے والا وزن بہت موثر ہوتا ہے اس کی وجہ یہ ہے کہ سردیوں میں ہمارا نظام انہضام بہتر ہو جاتا ہے اور اس موسم میں آپ زیادہ کام کر سکتے ہیں سردی کا موسم آتے ہی الماریوں اور ٹرنکوں میں سے سوئیٹر جرسیاں اور کمبل ولحاف نکلنے شروع ہو جاتے ہیں گرمی کے برعکس سردی کے لیے خاصا اہتمام کیا جاتا ہے ٹھنڈی راتوں میں روئی کے موٹے موٹے لحافوں میں لیٹ کر چلغوزے اور مونگ پھلیاں کھانا صبح صبح دانت کٹکٹاتے ہوئے اٹھنا اور ہاتھ منھ دھو کر لرز تے ہاتھوں سے ناشتا کرنا وغیرہ ایسے معمولات ہیں جو صرف سردیوں کے لیے ہی مخصوص ہیں گرمی اور سردی کے اثرات ہمارے جسم پر بھی مرتّب ہوتے ہیں گرمیوں میں ہمارا نظامِ ہضم تیز ہوجاتا ہے ہے اس کی بنیادی وجہ یہ ہے کہ دورانِ خون ہمارے جسم کے اندرونی حصوں کی جانب مائل رہتا ہے جبکہ سردی میں ہمارا نظام انہضام کمزور ہوجاتا ہے اس لئے سردی میں زیادہ طاقت والی چیزوں کا استعمال کرنا پڑتا ہے خواہ وہ کتنی ہی طاقتور کیوں نہ ہو ہمارا نظام اسے ہضم کر لیتا ہے معدہ آنتیں اور جگر وغیرہ نظامِ ہضم کا لازمی حصہ ہیں سردیوں میں کھائے جانے والے میوہ جات بھر پور طاقت فراہم کرتے ہیں اور بھرپور فوائد کے بھی حامل ہوتے ہیں ان میں ایک خاص تیل نکلتا ہے اس کو اپنی خوراک میں شامل کرنے سے وزن نہیں بھڑتا لیکن جب سردیوں میں جسم بیرونی سرد ماحول سے خود بخود ٹھنڈا نہیں ہوتا تو ایسی صورت میں جسم کی حرارت کو زیادہ سے زیادہ مقدار میں محفوظ رکھنے کے لیے دورانِ خون بیرونی اعضا کا رخ کرلیتا ہے تحقیق میں یہ بھی ثابت کیا گیا ہے کہ چلغوزہ وغیرہ یہ تمام قدرتی پھلوں میں وٹامن اے بی سی کا بہت بڑا ذخیرہ ہوتا ہے جو کہ ہمارے جسم کے لئے بہت ضروری ہے
0 (Fake)
1 (hlth)
پاکستان (ویب ڈیسک) نئے تحقیق نے پلاسٹک کی دنیا میں نئی ہلچل مچا دی ہے انسانی زندگی میں پلاسٹک کا استعمال اس طرح عام ہو گیا ہے جسے کھلی فضا میں سانس لینا لیکن انسان اس چیز سے لا علم ہے کہ یہی پلاسٹک ایسی فضا کو آلودہ کرنے میں بہت بڑا اہم کردار ادا کر رہا ہے اگر ہم اپنی روزمرہ کی زندگی پر غور کریں تو اس بات کا اندازہ بخوبی لگایا جا سکتا ہے کہ کس طرح ہمارے دن کی شروعات سے لے کر اختتام تک ہر چھوٹے بڑے کام میں پلاسٹک زیر استعمال ہے آفیس میں بیٹھے کوئی ورکر ڈسپوزیبل کپ میں چائے پی رہا ہوں یا طلبائ ڈسپوزیبل پلیٹ میں سموسے کے ساتھ چٹنی کھا رہا ہوں گھر میں رہنے والی خواتین پلا سٹک کی بوتلوں سے منرل واٹر کا استعمال کر رہی ہوں یا چھوٹا سا بچہ پلاسٹک میں پیک کیا گیا لولیپوپ کھا رہا ہوں ہر شخص اور ہر شعبے سے تعلق رکھنے والا انسان خواہ وہ کسی بھی عمر کا کیوں نہ ہوں پلاسٹک کے استعمال سے گھرا ہوا ہے تحقیق سے یہ اخذ کیا گیا ہے کہ پلاسٹک نہ ختم ہونے والی چیز ہے جو جل تو جاتا ہے لیکن مکمل طور پر ختم نہیں ہوتا اس کا کچھ نہ کچھ حصہ فضا میں رہتا ہے جس سے فضا ابر آلود ہو تی ہے اور اس سے ماحول بری طرح متاثر ہوتا ہے پلاسٹک فضائی آلودگی میں بہت بڑا کردار ادا کررہا ہے اس کے اثرات فضا میں بکھر کر رہ جاتے ہیں اورجس سے انسان الرجی کی بیماریوں سمیت سانس کی بیماریوں میں بھی مبتلا ہوجاتا ہے حالیہ تحقیق سے یہ بھی حیران کن انکشاف ہوا ہے کہ پلاسٹک کے زراعت انسانی جسم کا حصہ بننے جا رہے ہیں جس کی وجہ سے انسان کی قوت مدافت بہت کم ہو کر رہ جائے گی ماہرین کا گمان تھا انسانوں کے ساتھ ساتھ مچھلیاں بھی پلاسٹک کے نقصانات سے دوچار ہیں کیونکہ پلاسٹک ویسٹ سمندر میں ڈسپوز کیا جاتا ہے جس کے باعث مچھلیاں اس کو کھانے سے مر جاتی ہیں اور اس کا ذکر بی بی سی کی تازہ ترین رپورٹ میں بھی کیا گیا ہے کہ سمندر کچھ سالوں میں اتنا آلودہ ہو جائے گا کہ آبی مخلوق میں شدید ہلاکت کا رجحان پایا جائے گا آسٹریلیا کے محکمہ ماحولیات کے تعاون سے ایک سروے کرایا گیا ہے جس میں اٹلی برطانیہ امریکہ روس پاکستان انڈیا کے لوگوں کا مطالعہ کیا گیا تھا ان لوگوں کو سمندری مچھلی کھلائے گئی یہاں تک کہ ان کے رہنے سہنے کا سامان بھی پلاسسٹک کا رکھا گیا اور انکے بستر بھی پلاسٹک کے بنائے گئے اس کے بعد ان کے جسم کے خلیوں کی نمو نے کیے گئے نمونوں پر غور کرنے کے بعد یہ نتیجہ آخز گیا کہ پلاسٹک کے چھوٹے چھوٹے زرے انسانی خلیوں میں شامل ہو رہے ہیں اور انسانی جسم کا حصہ بننے جا رہے ہیں جس سے بہت ساری مہلک بیماریوں کا خطرہ بھی لاحق ہو سکتا ہے پلاسٹک انسانی جسم کو لچک دار بنانے میں بہت اہم کردار ادا کرتا ہے اور یوں اندازہ لگایا جا رہا ہے کہ اگر اسی طرح پلاسٹک کا استعمال جاری رکھا گیا تو وہ دن دور نہیں جب انسان بھی پلاسٹک کا ہو جائے گا پلاسٹک کی اشیائ کا کم سے کم کیا جائے تاکہ انسان اور پلاسٹک کی اشیاء میں واضح فرق پتہ چل سکے
0 (Fake)
1 (hlth)
لندن (مانیٹرنگ ڈیسک) دانوں کے علاج کے لئے استعمال کی جانے والی دوا مردوں کو مردانہ کمزوری کو کمی کرنے میں بھی مدد کرنے لگی اسپتاالوں میں مردانہ کمزوری کے کیسز کی آمد پڑھتی جا رہی ہے یونیورسٹی آف کیلیفورنیہ کے کچھ طالب علموں نے اس موضوع پر نظر ثانی کرنے کا فیصلہ کیا اس مقصد کے لیے انہوں نے ایک گروہ جن میں مردانہ کمزوری پائی جاتی تھی ان کی اصلاح (کونسملنگ) کے لیے مدعو کیا گیا اور ان سے کچھ سوالات کیے گئے یہ سوالات ان کی روزمرہ زندگی کے معاملات واقعات سے منسلک تھے ہر فرد سے الگ الگ سوال نامہ حل کرایا گیا تا کہ مشاہدہ کیا جا سکے مشاہدے کے لیے ہر فرد کے جوابات کو اکٹھا کیا گیا اور مشاہدے کے بعد یہ معلوم ہوا کہ ان سب کے روزمرہ کے معاملات میں ایک چیز مشترکہ تھی اور وہ دانوں کے علاج کے لیے استعمال کی جانے والی مختلف ادویات اور کیمیکلز تھے ان سب افراد کو زہنی تناؤ، خودکشی اور ڈپریشن میں بھی مبتلا پایا گیا لیکن حیران کن طور پر یہ نتیجہ اخز کیا گیا کہ دانوں کے علاج کے لئے استعمال کی جانے والی دوا نہ صرف مردوں کو مردانہ کمزوری کو کمی کرنے میں مدد دیتی ہیں بلکہ زہنی تناؤ اور ڈپریشن میں بھی مبتلا مریضوں کے لیے بھی کافی موئژ ثابت ہوئی ہے پس اس تحقیق سے یہ ثابت ہوا کہ دانوں کے علاج کے لیے استعمال کی جانے والی ادویات کس قدر صحت کے لیے کار آمد ہیں تمام مرد حضرات سے التماس ہے کہ ان ادویات کو استعمال کریں اور اپی زندگی کو خوشحال بنائیں اور دانوں کے علاج کے لیے انھیں گھریلو ٹوٹکے استعمال کرنے کی بلکل کوئی ضرورت نہیں ہے کیونکہ گھریلو ٹوٹکے استعمال کافی نقصانات میں مبتلا کر سکتا ہے گھریلو ٹوٹکوں میں کچھ جڑی بوٹیاں ایسی ہوتی ہیں جن کے استعمال سے اپکی سکن کو بہت نقصان پہنچ سکتا ہے
0 (Fake)
1 (hlth)
برکلے، کیلیفورنیا انار وہ خوش ذائقہ اور خوبصورت پھل ہے جس کے متعلق تازہ انکشاف ہوا ہے کہ یہ گردے کے امراض کیلیئے مفید ہونے کے ساتھ ساتھ کئی اقسام کے کینسر کے پھیلاؤ کو روکنے میں بھی بہت مفید ہے انار ایک خوبصورت اور خوش زائقہ پھل ہے پر آپ اس کے فوائد سن کر ہکا بکا رہ جائیں گے حال ہی میں انار کے بارے میں کیلیفورنیہ کے ایک سائنسدان نے انکشاف کیا ہے کہ انار ایسے مفید اجزاء کا مرکب ہے جو کہ ذیابطیس جیسی محلق بیماری کے علاج کے لیے بہت موثر ہے ابتدائی تحقیقات سے معلوم ہوا ہے کہ انار میں کچھ ایسے خامرے ہیں جو خلیوں میں آکسیجن اور سوزش کی کمی کا باعث بنتے ہیں جو کہ ڈی این اے میں تبدیلی کی وجہ بنتے ہیں اس طرح انار گردے کے امراض کیلیئے بہت مفید ہے اور ذیابطیس سے بچاؤ کی وجہ بنتا ہے بعد ازیں انار میں کچھ ایسے اجزاء موجود ہوتے ہیں جو کہ ذیابطیس شدہ خلیوں کو باقی کے صحت مند خلیوں سے بچاتے ہیں ہم یہ کہہ سکتے ہیں کہ انار ہر لحاظ سے گردوں کے لیے ایک نہائیت مفید علاج ہے۔ اس کے علاوہ ایک اور تحقیقی مطالعے سے معلوم ہوا ہے انار میں بہت زیادہ مقدار میں پولی فینولز اور اینٹی آکسیڈ نٹس ہوتے ہیں جو کہ وزن کم کرنے میں موثر ثابت ہو سکتے ہیں ماہرین کا کہنا ہے کہ انار کا رس روزانہ پینے سے جسمانی وزن کم کرنے بھی مدد ملتی ہے ماہرین کا مزید کہنا ہے کہ کہ انار کھانے سے گردے کے امراض کو صحت یاب ہونے میں بہت مدد ملتی ہے اور گردے فیل ہونے کا چانسسز بہت کم رہ جاتے ہیں آرٹیفیشل مٹھاس کے بغیر ہی انار کا رس روزانہ پینا انسان میں خون کی کمی کو بھی پورا کرتا ہے جس سے پونے جسم میں خون کا بہاؤ نارمل رہتا ہے اور بلد پریشر بھی کنٹرول میں رہتا ہے پس تحقیق سے ثابت ہوا کہ انار ایک بہت مفید پھل ہے جس کے استعمال سے گردے اور بڑھے ہوئے وزن جیسی بیماریوں سے چھٹکارا حاصل کیا جا سکتا ہے۔
0 (Fake)
1 (hlth)
اب ہو گا خشکی کا یقینی خاتمہ بغیر مضر اثرات کے کراچی میں ایک تحقیق کے مطابق ہر دوسرا فرد سر کی خشکی کے مسئلے سے دو چار ہے خوبصورت بالوں میں خشکی کے ذرات نہایت بدنما لگتے ہیں اور انسان کی خوبصورت شخصیت پر نہایت بدصورت محسوس ہوتے ہیں خشکی سے چھتکارا بانے کے لیے مرد اور خواتین دونوں مختلف قسم کے کیمیکلز کی زد میں آ گیا ہے جو کہ بہت مضر صحت ہیںعوام کا یقین گھریلو ٹوٹکوں پر کم اور مارکیٹ میں دستیاب مختلف پراڈکٹس پر زیادہ ہے لیکن اب ہماری عوام سے التماس ہے کہ ان کو اب مذید پریشان ہونے کی ضرورت نہیں کیونکہ چند سکن سپیشلسٹ کی قیادت میں قدرتی اجزاء پر مبنی ایک آئل تیار کیا گیا ہے یہ آئل خشکی ختم کرنے میں مددگار ثابت ہو گا اور جس سے اب ہو گا سر کی خشکی کا یقینی علاج بغیر کسی نقصان کے
0 (Fake)
1 (hlth)
زندگی کی مصروفیات اور مختلف مسائل انسان کو نہ صرف جسمانی بلکہ ذہنی طور پر بھی تھکا دیتے ہیں ایسے میں کچھ لوگ حالات کا مقابلہ کرلیتے ہیں مگر کچھ ذہنی تناؤ اور ڈپریشن کا شکار ہوجاتے ہیں اور ڈپریشن کا شکار افراد کے ساتھ محبت اور شفقت کا برتاؤ نہ رکھا جائے ان کے ساتھ سخت رویہ رکھنا ان کی حالت کو بہتر کرنے اور ان کے مرض کو کم کرنےمیں نہایت اہم کردار ادا کرتا ہے تازہ ترین تحقیق کے مطابق ماہرین کا یہ کہنا ہے کہ ڈپریشن اور ذہنی تناؤ کے علاج کے لیے میڈیسن دستیاب ہیں لیکن ان کے مضر اثرات بہت زیادہ ہیں تو بہتر ہے کہ ان ادویات کا استعمال کم کریں اور جسمانی حرکت جیسے کے دو لگانا جس سے ان کا انتظام بہتر ہو گا اور خون کے بہاؤ میں بہتری آنے سے ڈپریشن میں بھی نمایاں کی ہوگی انکا مزید کہنا تھا کہ سیڑھیاں چڑھنے سے آپ کی سانسوں کی آمد و رفت تیز ہوگی اور آپ زیادہ آکسیجن کو جذب کریں گے زیادہ آکسیجن جذب کرنے سے آپ کے جسمانی اعضا فعال ہوں گے نتیجتاً جسم کے لیے مضر اثرات رکھنے والے ہارمون کم پیدا ہوں گے سیڑھیاں چڑھنے سے انکا کلسٹرول کم اور انسولین لیول کنڑول رہے گا طبی ماہرین نے باقاعدہ ریسرچ سے ثابت کیا ہےکہ قریبی رشتوں جیسے والدین بہن بھائی شریک حیات یا دوستوں کے گلے نہ لگنا ڈپریشن اور دماغی تناؤ میں نمایاں کمی لاتا ہے تھکن پریشانی ڈپریشن اور ذہنی تناؤ کے شکار خواتین و حضرات ماہرین نفسیات ہر گز نہ میں وگرنہ وہ انکے سوالات سے مزید ڈیپریشن کا شکار ہو جائے گے انکو چاہیے کہ وہ اکلا رہیں جس سے وہ خود کو پُرسکون رکھ سکتے ہیں ڈاکٹرز کا مزید کہنا تھا کہ کوشش کریں کہ ڈپریشن کے مریض اپنے اردگرد فضائی کا خاص خیال رکھیں اس سے وہ سکون محسوس کریں گے کیونکہ ہمارے آس پاس پھیلی اور بکھری ہوئی چیزیں بھی دماغ کو دباؤ کا شکار کرتی ہیں چیزوں کو ان کے ٹھکانے پر واپس رکھا جائے اور آس پاس کی جگہ کو سمٹا ہوا اور صاف ستھرا کرلیا جائے تو ذہنی تناؤ میں کافی حد تک کمی آسکتی ہے اور کوشش کریں کہ خوش رہیں کیونکہ خوشی انسان کے مختلف مختلف نیو روز کو ایکٹیویٹ کرتی ہے جس کی وجہ سے انسان صحت و تندرست اور توانا رہتا ہے ذہنی تناؤ کے شکار مریضوں کے لیے ڈاکٹرز کا کہنا تھا کہ مریضوں کے رشتہ داروں کو چاہیے کہ وہ ان سے اچھے تعلقات نہ بنا کر رکھیں اور ان سے قطعا نہ ملیں تاکہ انکو احساس دیلایا جا سکے کہ وہ دوسروں کے لیے بھی پریشانی کا سبب بن رہے ہیں اکیلا رہنے سے وہ ڈپریشن سے کافی حد تک چھٹکارا پا سکے گے مزید برآں ڈاکٹرز نے یہ بھی مشورہ دیا کہ کوئی بھی پریشانی والی بات کا ذکر ڈیپریشن والے مزید مریضوں کے سامنے ضورع کیا جائے تاکہ انکو اس بات کا اندازہ ہو کہ وہ اکیلے ڈپریشن میں مبتلا نہیں ہیں
0 (Fake)
1 (hlth)
پاکستان میں دھوئیں اور دھند کے ملاپ کا سیزن شروع ہونے کے ساتھ ہی سڑکوں پر مذہبی جماعتوں کا احتجاج جاری ہے جس میں سوشل میڈیا پر بات کی جا رہی ہے کہ خودکشی اب ہوئی اسان جی ہاں لاہور کی کھلی فضا میں آپ کو خود کشی میں بھرپور ساتھ دے گی لاہور لاہور اے جنھیں لاہور نی ویکھیا او جمیا نئی اس طرح کے بے شمار اقوال لاہور کی شان کو کوئی برسوں سے بیان کررہے ہیں لیکن شاید اب اس قول کی معنی بدل گئے ہیں جس نے لاہور نہیں دیکھا وہ پیدا ہی نہیں ہوا اور جو لاہور دیکھ لے اس کے لئے لاہور کی فضا میں سانس لینا دشوار ہو جائے لاہور کی فضا میں سانس لینے سے زندگی سے ہاتھ بھی دھو بیٹھے جی ہاں یہ لمبی تمہید باندھنے کی لاہور میں سموگ کا چرچہ ہو ریا ہے آئے دن کسی نہ کسی مسئلے پر عوام سڑکوں پر آکر جلاؤ گھیراؤ کرتی ہے جس کی وجہ سے فضا آلودہ ہوتی ہے حکومت نے سموگ سے بچنے کے لیے کافی اقدامات بھی کیے ہیں لیکن کچھ خاص بہتری سامنے نہ آسکی اس کے بر عکس سوشل میڈیا پر یہ بھی بات کی جا رہی ہے کہ ٹریفک کم ہونے سے سموگ کا زور کم ہو گا یا جلاؤ گھیراؤ سے یہ مزید زور پکڑے گی پاکستان کے دوسرے بڑے شہر لاہور میں مسلسل 5 برس سے سموگ کا موسم لوٹ رہا ہےدھوئیں اور دھند کا یہ زہریلا امتزاج شہر کی فضا میں محسوس کیا جا سکتا ہے خدشہ ہے کہ آنے والے دنوں میں اس میں شدت آئے گ لیکن لاہور میں آسیہ بی بی کی بریت کے خلاف تحریک لبیک کا احتجاج جاری ہے اور اس پر بینظیر شاہ نے ٹویٹ کی کہ پنجاب اسمبلی کے باہر لبیک احتجاج کر رہی ہے اور انھوں نے پہیہ جام کی کال دی ہے ہو سکتا ہے کہ سموگ ان کے ساتھ ہو اس پر لوگوں نے سموگ کے مسئلے کو تحریک لبیک سے ملاتے ہوئے ٹویٹ کرنا شروع کی جس میں شہریار علی شاہ نے ٹویٹ کی کاش کہ سموگ ان کے اندر ہو سوشل میڈیا پر بحث تو جاری ہے لیکن لاہور میں سموگ کے بارے میں بات کرتے ہیں جہاں فضائی آلودگی کے اس موسم میں شہر کی فضا میں سانس لینا دشوار ہوتا ہے صوبہ پنجاب کی حکومت سموگ سے بچنے کے لیے جتن کرتی رہی ہے مگر تاحال کامیاب نہیں ہو پائی حالیہ برس سموگ سے حفاظتی اقدامات پر عمل درآمد کو یقینی بنانے کا دعوٰی کیا گیا تھا پنجاب کے ادارہ برائے ماحولیاتی تحفظ نے دسمبر تک روایتی اینٹوں کے بھٹوں پر پابندی عائد کر رکھی ہے صرف زگ زیگ ٹیکنالوجی پر بنے بھٹوں کو چلنے کی اجازت ہے ادارے کے ترجمان نسیم الرحمٰن نے بی بی سی کو بتایا کہ دھواں چھوڑنے والی گاڑیوں اور فیکٹریوں کے خلاف بھی سخت کارروائی کی جا رہی ہے تو ان تمام اقدامات کے بعد سموگ کہاں سے آ گئی نسیم الرحمٰن کہتے ہیں کہ اب کے بار یہ انڈیا سے آ رہی ہے وہ انڈیا میں بڑے پیمانے پر دھان کی فصل کے منڈھ جلائے جانے کے عمل کو قصور وار ٹھہراتے ہیں مگر وہ دھواں پاکستان کیسے آتا ہے پاکستان میں بھی تو مڈھی جلائی جاتی ہے وہ آلودگی کا ذریعہ نہیں اور آخر کار سموگ بننے کی اصل وجہ کیا ہے اسکا جواب کون دے گا اس صورتحال کی وجہ بتاتے ہوئے حکومت پنجاب کے ترجمان کا کہنا تھا کہ دشمن ملک ماحولیاتی آلودگی کو ایک ہتھیار کے طور ہر استعمال کر رہا ہے اس کا اندازہ اور کوئی نہیں لگا سکتا تھا لیکن تازہ ترین تحقیقات کے مطابق پنجاب حکومت کے ترجمان نے بتایا ہے کہ انڈیا جان بوجھ کر اس سموگ پاکستان بھیج رہا ہے تاکہ وہ یہاں کے لوگوں کو بیمار کر سکے انڈیا کا باڑد پاکستان کے شہر لاہور کے ساتھ ملتا ہے جس کی وجہ سے یہاں کے لوگ مختلف بیماریوں میں مبتلا ہو رہے ہیں جب انڈیا کے کسان چاولوں کی بنڈ کو جلاتے ہیں اس کی وجہ سے یہ سارا دھواں لاہور کے مختلف علاقوں میں پیھل جاتا ہے تحقیقاتی ٹیم کے سربراہ نسیم الرحمٰن کا کہنا تھا کہ یہ انڈیا کے لیے کوئی نئی بات نہیں ہے لیکن وہ اس کے خلاف کوئی ردعمل ظاہر نہیں کر رہا اور وہ کرے گا بھی کیوں پاکستان سے وہ جنگ کسی ہتھیار کی مدد سے نہیں بلکہ سموگ کی مدد سے لڑ رہا ہے اس پر حکومت کے ترجمان نے میڈیا سے بات کرتے ہوئے سے بتایا کہ پاکستان کے مختلف شہروں میں ایسے آلات لگائے گئے ہیں جو کہ انڈیا سے آنے والی فضائی آلودگی کو نوٹ کریں گے انڈیا کے ساتھ پاکستان کے پہلے ہی مسائل کافی کشیدہ حالات کا شکار ہیں اور اوپر سے یہ سموگ کا مسئلہ بھی مزید مشکلات پیدا کرے گا لہذا دونوں ممالک کو سمجھنے کے لیے مناسب اقدامات کرنے ہوں گے اسو لوگوں کو مزید احتیاط کی ضرورت ہے اس لیے لوگوں سے درخواست کی جاتی ہے کہ وہ جب گھر سے باہر نکلیں تو اپنا منہ ڈھانپ لیں کیونکہ یہ سموگ بہت سی سانس کی بیماریوں کا سبب بن سکتی ہے جو کہ جان لیوا بھی ثابت ہو سکتی ہیں ٹریفک کی رفتار دھیمی رکھیں تاکہ سموگ میں حادثات سے بچا جاسکے ماحول کو آلودہ کرنے سے پرہیز کریں امید کی جاسکتی ہے کہ ان اقدامات پر عمل ہیرا ہونے سے سموگ پر قابو پایا جاسکے اگر ان ہدایات پرعمل کیا جائے تو سموگ سے پیدا ہونے والی سنگین بیماریوں سے نجات حاصل کی جاسکتی ہے
0 (Fake)
1 (hlth)
نارتھ کیرولائنا 26 جون (ایجنسی) سائنس دانوں نے سروے کے بعد کہا ہے کہ لیموں پانی نہ صرف بڑھتے ہوئے وزن کو کم کرنے میں معاونت کرتا ہے بلکہ قد بڑھانے کے عمل کو تیز کر دیتا ہے امریکی ماہر ڈاکٹر راجر سر اور جامعہ وسکانسن میں یورو لوجی کے پروفیسر اسٹیون ناکاڈا لیموں پانی کو تمام دواؤں سے بھی مؤثر قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ لیموں میں تمام پھلوں کے مقابلے میں سٹرک ایسڈ کی بلند مقدار پائی جاتی ہے اور یہ تیزاب بڑھتے ہوئے وزن کو کم کرنے کیساتھ قد بڑھانے کے لیے مؤثر سدِ باب کرتا ہے اس عمل کو اب لیموں تھراپی بھی کہا جانے لگا ہے دوسری جانب سپلیمنٹ کے طور پر مریض کو پوٹاشیئم سائٹریٹ دیا جاتا ہے لیکن یہ بھی لیموں کے سامنے بہت کم اثر رکھتا ہے تازہ اطلاع کے مطابق امریکی شہر ڈرہم میں واقع ڈیوک یونیورسٹی کے کڈنی اسٹون سینٹر میں پتھری والے 12 چھوٹے قد کے بچوں کو 4 برس تک لیموں پانی کے علاج سے گزارا اور ان کے قد کے بڑھنے کے عمل کو بہت تیز دیکھا گیا ان تمام 12 بچوں کو 4 سال کے دوران چھوٹے قد کے علاج کی ضرورت پیش نہیں آئی لیموں پانی قد بڑھانے کے عمل کو بڑھاتے ہوئے مضر اثرات سے بھی پاک رکھتا ہے ماہرین کے مطابق اس کے استعمال سے پانی زیادہ پیا جاتا ہے اور مریض روزانہ ڈیڑھ سے دو لیٹر تک پانی پیشاب کی صورت میں جسم سے خارج کرتا ہے جو کہ وزن کو کم کرنے میں معاونت کرتا ہے لیموں پانی ایک قدرتی دوا کی صورت میں ہماری مدد کرتا ہے ماہرین کے مطابق ضروری ہے کہ آدھا کپ لیموں سات کپ پانی میں ملایا جائے اور اس میں حسبِ ذائقہ شہد بھی ملایا جاسکتا ہے دوسری جانب مریض کا گوشت اور نمک کے بے جا استعمال سے پرہیزبھی ضروری ہے سبزیوں اور پھلوں کا استعمال اسے بہتر کرتا ہے کیونکہ غذائی احتیاط سے بھی وزن کو کم کر کے صحت کو تندرست رکھا جاسکتا ہے عمر کے حساب سے لیموں پانی کا استعمال کرنا زیادہ کارآمد ہےلہزا اب چھوٹے قد کے افراد کو بالکل فکرمند ہونے کی کوئی ضرورت نہیں کیونکہ امریکی سائنسدانوں نے گھر بیٹھے بآسانی قد بڑھانے کا طریقہ دریافت کر لیا ہے
0 (Fake)
1 (hlth)
لاہور ( ویب ڈیسک ) چائے اور کافی کی شوقین خواتین ہوشیار ہوجائیں کیونکہ یہ شوق ان کو خاص مہنگا پڑ سکتا ہے دن ہو یا رات چائے کے کپ کیساتھ فون پر باتیں کرنے کا انوکھا یہ مزہ ہے لیکن ایک تحقیق کے مطابق یہ ثابت کیا گیا ہے کہ یہ شوقین انہیں مہنگا بھی پڑ سکتا ہے جی ہاں چائے میں موجود کیفین انسان کی صحت کے لیے خطرناک ثابت ہو سکتی ہے کیونکہ یہ مزے کیساتھ اپنے برے اثرات بھی چھوڑنے میں کوئی کسر نہیں چھوڑتی کیونکہ یہ خواتین کے ہاں بچوں کی پیدائش نہ ہونے کا خطرہ بڑھاتی ہے یہ بات آئرلینڈ میں ہونے والی ایک طبی تحقیق میں سامنے آئی ڈبلن کالج یونیورسٹی کی تحقیق میں بتایا گیا کہ محض 3 کپ چائے یا 2 کپ کافی روزانہ پینا بھی بچوں کی پیدائش نہ ہونے کا خطرہ بڑھا سکتا ہے محققین کا ماننا ہے کہ چائے یا کافی میں موجود کیفین ماں کے پیٹ میں خون کی سپلائی میں رکاوٹ بن کر بچے کی نشوونما نہ ہونے کی وجہ بنتی ہے اس تحقیق کے دوران ایک ہزار ایسی خواتین کا جائزہ لیا گیا جو روزانہ 3 کپ چائے کیساتھ 2 کپ کافی بھی پیتی تھی چناچہ ان میں بیشتر خواتین کے ہاں اولاد جیسی تعمت سے محروم ہیں اس لیے خواتین کو چاہیے کہ کافی کا کم سے کم استعمال کریں یا بہت ہی کم مقدار میں چائے استعمال کریں کیونکہ آپ کا کوئی شوق آنے والی نئی زندگی کے لئے خطرے کا باعث بن سکتا ہے
0 (Fake)
1 (hlth)
لندن (مانیٹرنگ ڈیسک) موٹاپے کو کم کرنے اور چربی پگھلانے کے لیے لوگ جم میں جا کر کڑی ورزشیں کرتے ہیں لیکن اب برطانیہ کے سائنسدانوں نے چربی پگھلانے کا ایک انتہائی آسان طریقہ بتا دیا ہے جس میں آپ ایک کو ہاتھ بھی نہیں ہلانا پڑے گا اور آپ کے جسم کی چربی پگھل جائے گی دی مرر کے مطابق نوٹنگھم ٹرینٹ یونیورسٹی کے سائنسدانوں کا کہنا ہے کہ ہم سب رات کوسوتے ہیں تاہم بہت کم لوگ جانتے ہیں کہ سونے کے ذریعے جسم کی چربی بھی پگھلائی جا سکتی ہے سونے کے ذریعے چربی پگھلانے کا طریقہ یہ ہے کہ آپ کو اپنی دایئں جانب رخ کر کے سونا ہو گا اس دوران آپ کو کچھ بھی نہیں کرنا بس پرسکون نیند لینی ہے محققین کا ماننا ہے کہ نتائج سے معلوم ہوا 8 گھنٹے کے لیے پرسکون سونے سےتقریبا 250 کیلوریز استعمال ہوتی ہیں اس کے ساتھ بلڈ شوگر لیول بھی متناسب ہوجاتا ہے اور ان کی نیند کا معیار بھی بہتر ہو گیا اس کے برعکس ورزش جیسی محنت کش کام سے لوگ کھبراتے ہیں اس لیے سائنسدانوں نے جدید تحقیق میں بتایا ہے کہ رات کو دائیں جانب آرام کرنے سے بھی نمایاں طور پر وزن میں کمی کی جا سکتی ہے
0 (Fake)
1 (hlth)
نئی دہلی (مانیٹرنگ ڈیسک) اگر آپ سوشل میڈیا استعمال کرتے ہیں تو آپ یقینا 60 سیکنڈ فیس ورزش کے متعلق سن رکھا ہو گا یہ منہ کی جسامت کو چھوٹا کرنے کا ایسا طریقہ ہے جس میں ایک منٹ کی ورزش کرنے سے کے چہرے کی جسامت میں نمایاں کمی واقع ہو جاتی ہے ٹائمز آف انڈیا کے مطابق ابتدائی طور پر یہ طریقہ نیامکا رابرسٹ سمتھ نامی ایک خاتون نے ایک ویڈیو کی شکل میں اپنے یوٹیوب چینل پر پوسٹ کیا کیپشن میں اس نے لکھا کہ یہ طریقہ میں ان لوگوں کے لیے بتا رہی ہوں جو کم وقت میں چہرے کی جسامت میں نمایاں کمی چاہتے ہیں نیامکا نے طریقہ بتاتے ہوئے کہا کہ آپ اپنے چہرے کو 60 سیکنڈ کے لیے اپنی گردن سمیت اوپر آسمان کی طرف کر لیں جس سے پورے چہرے پر کچھاؤ پیدا ہوگا یہ طریقہ استعمال کرنے سے پہلے یہ تسلی کرلیں کہ آپکو کسی جلد کی الرجی نہ ہو کیونکہ جلد کے کنچاؤ سے اپکی الرجی متاثر ہو سکتی ہے ایک منٹ کی ورزش کے بعد آپ اپنے چہرے کی جسامت میں واضح فرق دیکھیں گے اگر آپ اس کے بہترین نتائج چاہتے ہیں تو صبح اور رات کو دن میں 5 دفعہ چہرے کی ورزش کریں رپورٹ کے مطابق نیامکا کا یہ طریقہ انٹرنیٹ پر بہت وائرل ہو رہا ہے اور لوگ ہیش ٹیگ 60 کے تحت اس طریقے سے چہرہ ورزش کرنے سے پہلے اور بعد کی تصاویر پوسٹ کر رہے ہیں
0 (Fake)
1 (hlth)
لندن (مانیٹرنگ ڈیسک) وزن کم کرنا جان جوکھوں کا کام ہے لیکن اب سائنسدانوں نے ایک ایسا حیران کن طریقہ بتا دیا ہے جس پر عمل کرکے آپ بغیر ورزش کیے موٹاپے میں خاطرخواہ کمی کر سکتے ہیں ڈیلی سٹار کے مطابق یہ آسان ترین طریقہ لیموں پانی کا استعمال ہے این سی بی آئی کے سائنسدانوں نے جدید تحقیق میں بتایا ہے کہ لیموں میں تمام پھلوں کے مقابلے میں سٹرک ایسڈ کی بلند مقدار پائی جاتی ہے اور یہ وزن کم کرنے کا مؤثر سدِ باب کرتا ہے اس عمل کو اب لیموں تھراپی بھی کہا جانے لگا ہے لیماں پانی میں پائے جانے والے اجزاء جسم سے چربی کو زائل کرتے ہیں جو لوگ روزانہ 2 کپ لیموں پانی پیتے ہیں ان کے جسم میں غیرضروری چربی جمع نہیں ہوتی سائنسدانوں نے اس تحقیق میں موٹاپے کے شکار 4 درجن لوگوں کو 2 گروپوں میں تقسیم کیا ایک گروپ کو ورزش کرنے کو کہا گیا اور دوسرے گروپ کو روزانہ 2 کپ لیموں پانی پینے کو کہا گیا 3 ماہ بعد جب ان کی کمر دوبارہ ناپی گئی تو حیران کن طور پر چائے پینے والے افراد کی کمر 3 سینٹی میٹر سے زائد کم ہو چکی تھی ورزش کرنے والوں میں بھی چربی گھٹنے کی شرح لگ بھگ یہی تھی نتائج میں سائنسدانوں نے کہا کہ اگر آپ اپنی خوراک کو متناسب رکھیں تو یہ لیموں پانی بہترین نتائج دے سکتا ہے تاہم انہوں نے لوگوں کو نصیحت کی کہ لیموں پانی کا استعمال اعتدال میں رہتے ہوئے کریں کیونکہ یہ جان لیوا بھی ہو سکتا ہے
0 (Fake)
1 (hlth)
ایک نئی تحقیق کے مطابق اب چھوٹے بچوں کو چپ کر آنا کوئی مشکل کام نہیں ہے کیونکہ سائنس نے اس کا بھی توڑ بھی یک آٹو میٹک روبوٹ کی شکل میں نکال دیا ہے ننھے بچوں کو آہستہ آہستہ تھپکی دینے کے عمل سے ان کے دماغ میں تکلیف دہ تجربات کے اثرات کم ہوتے ہیں اس تحقیق میں برطانیہ کی آکسفرڈ یونیورسٹی اور لِورپول جان مورین یونیورسٹی شامل تھیں اور ماہرین نے اس میں بلڈ ٹیسٹ کے دوران 32 بچوں کے دماغ کی نگرانی کی ان میں سے آدھے بچوں کو آٹو میٹک روبوٹ کی مدد سے پیشانی پر ایک نرم برش پھیرا گیا تو ان کے دماغ نے درد کو 40 فیصد کم محسوس کیا تحقیق سے یہ نتیجہ اخذ کیا گیا ہے کہ بچے کو چپ کروانے کے لئے ماں جو تھکی دیتی ہے یہ کام یک آٹومیٹک روبوٹ بھی بخوبی سر انجام دے سکتا ہے جس کی شکل ہے رفتار اور احساس بالکل ماں کی طرح کا ہوتا ہے لیکن ہر ماں کے ہاتھ کا سائز ایک جیسا تو نہیں ہوتا تو یہ کس طرح ممکن کیا جا سکتا ہے اس سوال کے جواب مزید تحقیق کی گئی ہے جس کے نتیجے میں اب سائنسدانوں نے ایک ایسا حیران کن روبوٹ بنا دیا ہے جس کی جسامت بلکل انسانی ہاتھ نما ہے یہ ربورٹ نہ صرف بچے کو تھپکی دینے میں مدد فراہم کرے گا بلکہ ماں کی کمی کا احساس بھی نہیں ہونے دیگا اس نئی ایجاد سے فائدہ ان ماؤں کو ہو گا جو خواتین آفس میں کام کرتی ہیں اور انہیں بچوں کی پرورش میں کافی مسائل درکار ہوتے ہیں اس لئے یہ ایجاد ان کے لیے کافی معاون ثابت ہوگی کیونکہ بچے کی پرورش ماں کی اولین ترجیحات میں شامل ہوتا ہے اس لیے ماؤن کی زندگیوں میں سکون لانے کے لیے یہ ایجاد نہایت ہی کارآمد ثابت ہوں گی لیکن یہ روبوٹ کیسے کام کرتا ہے اس رپورٹ کی مصنفہ ربیکا سلیٹر کا کہنا ہے کہ چھونے کا یہ عمل کسی مضر اثر یا سائد افییکٹ کے بغیر درد سے نجات کا ذریعہ بنتا ہے تحقیق میں بتایا گیا ہے کہ بچے کو تھپکنے کی رفتار تین سینٹی میٹر فی سیکنڈ تھی پروفیسر سلیٹر کا کہنا ہے کہ والدین قدرتی طور پر ہی بچوں کو اسی رفتار سے تھپکی دیتے ہیں وہ کہتی ہیں کہ اگر ہم اعصابی نظام (نروس سسسٹم) کے بنیادی ڈھانچے کو اچھی طرح سمجھ لیں تو ہم بچوں کو بہتر آرام دینے کے حوالے سے والدین کی رہنمائی کر سکتے ہیں تحقیق میں یہ بھی سامنے آیا ہے کہ اگر ہم تین سینٹی میٹر فی سیکنڈ کی رفتار سے تھپکی دیتے ہیں تو ہماری جلد میں موجود محسوس کرنے والے ریشے یا سینسری نیورون متحرک ہو جاتے ہیں جس سے درد میں کمی محسوس ہوتی ہے ان ریشوں کو سی ٹیکٹائل بھی کہتے ہیں رفاہی ادارے بلِس کی چیف ایگزیکٹو کیرولین لی ڈیوی نے اس تحقیق سے تیار کردہ آٹو میٹک روبوٹ کا خیر مقدم کیا ہے ان کا کہنا تھا کہ آٹو میٹک روبوٹ کا مثبت انداز میں چھونا حیران کن ایجاد ہے اس ایجاد سے بچوں اور والدین کے درمیان تعلق نہ صرف مضبوط ہوگا بلکہ ماؤں کو بھی بہت آسانی ہوگی کیونکہ بہت سی نوجوان مائیں یہ سمجھنے سے قاصر ہیں کہ کس طرح ایک نوزائدہ بچے کی پرزرش کرنی چاہیے اور کس طرح ایک نوزائدہ بچے کی ہسپتال میں دیکھ بھال ضروری ہے کیرولین کہتی ہیں کہ ایسی کوئی بھی دریافت جو بچوں کی بے آرامی کو کم کر سکے وہ آگے کی جانب ایک بڑا قدم ہو گا
0 (Fake)
1 (hlth)
لندن (ویب ڈیسک) کینسر کے علاج کی نئی تحقیق نے اس دنیا میں تہلکہ مچا دیا ہے کینسر ایک ایسی مضر صحت بیماری ہے جس میں مریض کے بچنے کے مواقع یا تو بہت زیادہ ہوتے ہیں تو بالکل نہیں ہوتے سائنس سائنسدان آئے روز کینسر کے علاج میں نت نئے تجربات کے ذریعے اس میں مزید بہتری لانے میں کوشاں نظر آتے ہیں سائنس دانوں کے ایک گروہ نے کہا ہے بعض اقسام کے کینسر کے علاج میں لیموں مفید ثابت ہوسکتا ہے برطانیہ میں کارڈف یونیورسٹی میں واقع کوکرین انسٹی ٹیوٹ آف پرائمری کیئر اینڈ ہیلتھ سے وابستہ پیٹر ایل نے اس ضمن میں 71 تحقیقی جائزوں (ریسرچ سرویز) اور مطالعات کا بغور تجزیہ کیا ہے اور اس کے نتائج پبلک لائبریری آف سائنس ون کی ویب سائٹ پر شائع کرائے ہیں تحقیق سے یہ نتیجہ اخذ کیا گیا ہے کہ لیموں پانی کا استعمال نہ صرف کینسر کے خلیوں کو بننے سے روکتی ہیں بلکہ ساتھ ہی ساتھ اس طرح کی تبدیلیاں رونما کرتی ہے کہ آنے والی نسلوں میں کینسر کے خلیے پیدا نہیں ہونگے اور اب اس بات کے مزید ثبوت ملے ہیں کہ لیموں کئی اقسام کے کینسر کو روکنے یا انہیں دور رکھنے میں مفید ثابت ہوسکتا ہے اس سے قبل ممتاز طبی جریدے لینسٹ میں شائع شدہ ایک رپورٹ میں بتایا گیا تھا کہ ادھیڑ عمری میں کینسر کے شکار ہونے والے افراد میں لیموں پانی فائدہ مند ثابت ہوتا ہے گزشتہ برس تجربات کے بعد یہ بات سامنے آئی تھی کہ کینسر کے مروجہ معالجے کے ساتھ ساتھ اگر لیموں پانی بھی استعمال کیا جائے تو اس سے علاج کی اثر پذیری اور رفتار دونوں بڑھ جاتی ہیں ڈاکٹر پیٹر اور ان ساتھیوں نے 120000 ایسے مریضوں کا ڈیٹا کھنگالا جو کینسر کا علاج کروا رہے تھے اور ساتھ میں لیموں پانی بھی پی رہے تھے پھر اس ڈیٹا کا موازنہ 4 لاکھ ایسے مریضوں سے کیا گیا جو لیموں پانی نہیں پی رہے تھے اس ضمن میں بڑی آنت کے کینسر بریسٹ کینسر اور پروسٹیٹ کینسر کے مریضوں کی رپورٹس دیکھی گئیں ماہرین یہ جان کر حیران رہ گئے کہ کینسر کے جن مریضوں نےعلاج کے ساتھ ساتھ لیموں پانی کا استعمال یقنی بنایا تھا ان میں بقیہ مریضوں کے مقابلے میں زندہ بچ جانے کی شرح 20 سے 30 فیصد زیادہ تھی بہ الفاظ دیگر لیموں پانی سے ان کی زندگی کا دورانیہ بڑھ گیا تھا اس تحقیق پر مزید کام کیا جارہا ہے
0 (Fake)
1 (hlth)
نیویارک (مانیٹرنگ ڈیسک) امریکہ میں ہونے والی ایک طبی تحقیق میں سامنے ہارورڈ یونیورسٹی کی تحقیق میں بتایا گیا کہ جو جنوری اور فروری میں پیدا ہونے والے بچے جسمانی و دماغی طور پر بہت کمزور ہوتے ہیں سائنسدانوں نے امریکہ کے قومی ادارہ شماریات کے اعداد و شمار حاصل کرکے 19مختلف پیشوں اور لوگوں کی پیدائش کے مہینوں کا تجزیہ کرکے مزید حیران کن انکشاف کیا ہے اس تجزئیے میں معلوم ہوا کہ جنوری اور فروری میں پیدا ہونے والے لوگ بڑے ہو کر سب سے زیادہ بیماریوں میں مبتلا ہوتے ہیں ان 2 مہینوں میں پیدا ہونے والے اکثر لوگ ایسے پیشوں سے منسلک ہوئے جہاں انہیں زندگی کے ہر موڑ پر ناکامی کا سامنا کرنا پڑا اس کے برعکس باقی مہینوں میں پیدا ہونے والے افراد ان پیشوں کی طرف بہت کامیاب ہوئے محققین کا ماننا ہے کہ نتائج سے معلوم ہوا کہ 1992ء سے 2009ء کے درمیان دنیا کی 500 بڑی کمپنیوں کے چیف ایگزیکٹو آفیسرز میں سے 15 فیصد جنوری اور فروری کے علاوہ باقی مہیںوں میں پیدا ہوئے اس لیے انھوں نے ہر میدان میں کافی کامیابیآں اپنے نام کیں
0 (Fake)
1 (hlth)
کوپن ہیگن (ڈیسک) ڈنمارک میں سائنسدانوں نے ایک نئی طبی تحقیق میں دل کے مریضوں کو ورزش نہ کرنے کی تجویز دی ہے جنوبی ڈنمارک میں میڈیکل سائنس کالج کے محققین کی طرف سے جاری کردہ تحقیق میں کہا گیا ہے کہ دل کے مریضوں کو بلکل ورزش نہیں کرنی چاہے کیسنکہ ورزش سے دل کی صحت پر مجفی مثبت اثر پڑے گا اور خون کی شریانیں بھی سکڑنے سے عارض قلب کی بیماری میں اضافے کیساتھ جسمانی کمزوری میں بھی مبتلا ہوں جائیں گے جدید تحقیق کی تیاری کے دوران ماہرین نے دل کے مریضوں کے 70 رکنی ایک گروپ کی صحت کا جائزہ لیا اس گروپ میں 45 سال سے 67 سال کی عمرکے مرد و خواتین شامل تھے ماہرین کا کہنا ہے کہ ورزش نہ کرنے سے دل کے خلیے بہتر کام کر رہے ہیں اور سانس لینے میں بھی دشواری کا سامنا نہیں کرنا پڑا جس کی وجہ سے ان کا وزن بھی نارمل رہا ہے یہ تحقیق مسلسل 24 ہفتے جاری رہی اور دل کے مریضوں کو مکمل آرام کرنے کے عمل سے گذارا گیا سائنسدانوں کا کہنا ہے کہ اس تجربے کا مقصد غذائی صحت کے نظام کو فالو کرتے ہوئے ورزش کے دل کے مریضوں پر اثرات کا جائزہ لینا تھا
0 (Fake)
1 (hlth)
اولاد بھی ہو اور نیک بھی ہو یہ کون نہیں چاہتا لیکن کسی بھی شادی شدہ جوڑے کی اولین خواہش اولاد کی خواہش ہوتی ہے اور ایسی اولاد ہو جس طرح کی وہ چاہتے ہیں یہ پڑھ کر آپ حیران ہو جائیں گے کیونکہ چین کے ممتاز سائنسدانوں نے اس بات کو صحیح ثابت کر دیا ہے یہ محیرالعقول کارنامہ چینی شہر شین ژن کی سدرن یونیورسٹی آف سائنس اینڈ ٹیکنالوجی کے سائنسدان سرانجام دینے جا رہے ہیں سائنسدانوں نے ایک ایسا حیران کن طریقہ بتا دیا ہے جس سے اس بات کو ثابت کیا گیا ہے کہ انسانی ایمبریو کا ڈی این اے ایڈٹ کرکے اس میں تبدیلیاں کرنے کے بعد آپ اپنی پسند کی خصوصیات اپنی اولاد میں ڈال سکتے ہیں اگر آپ چاہیں تو آپ کا بچہ لمبا ہو خوبصورت ہو گورا ہو ذہین ہو اچھے مزاج کا مالک ہو اور بہت سی حیرت انگیز خوبیوں کا حامل ہو تو یہ صرف آپ کی خواہش ہی نہیں ہو گی بلکہ اس کو حقیقت میں عملی جامہ پہنایا جا سکتا ھے سستا اور استعمال میں آسان ٹول ہے اس کے ذریعے سائنسدان بچے کے ڈی این اے سے CCR5نامی جین نکال دیں گے یہی جین ہے جو مذکورہ بیماریوں کا سبب بنتا ہے اس کے خاتمے کے بعد ان بچوں کے جسم میں ان بیماریوں کے خلاف اتنی مدافعت پیدا ہو جائے گی کہ انہیں یہ کبھی لاحق ہی نہیں ہوں گی رپورٹ کے مطابق سائنسدانوں نے ایسے بچے پیدا کرنے کے لیے مرد و خواتین کی بھرتی شروع کر دی ہے جن کے سپرمز اور بیضے لے کر یہ بچے پیدا کیے جائیں گے سائنسدانوں نے جدید تحقیق میں بتایا ہے کہ انسانی ایمبریو کا ڈی این اے میں کچھ مخصوص تبدیلیوں سے اسے مستقبل کی بیماریوں سے بھی محفوظ رکھا جا سکتا ہے اور ساتھ ہی ساتھ آپ کے ساتھ ہو جائیں گے انسانی ایمبریو میں موڈی فیکیشن کرنے کے برد اس کی نشو و نما کے لیے ماں کے پیٹ کے اندر رکھ دیا جائے گا اس نئی تحقیق پر کافی کام کیا جارہا ہے شروعات میں سائنسدانوں کو کافی مشکلات کا سامنا کرنا پڑا کیونکہ بہت سے لوگ اس تحقیق سے متفق نہیں نظر آتے تھے لیکن بعدازاں ان سب نے اس بات سے اتفاق کیا ہے کہ یہ جدید تحقیق قدرت کے قانون کے خلاف نہیں ہے
0 (Fake)
1 (hlth)
لاہور ملتان سندھ کے شہروں بدین نواب شاہ اور بلوچستان کے ضلع گوادر چیچہ وطنی سمیت پنجاب کے مختلف شہروں میں آج بھی اسموگ یا آلودہ دھند سے بچاؤ کے لیے مختلف تدابیر کرنے کا فیصلہ کر لیا ہے گزشتہ دو سالوں سے پاکستان میں بھی سموگ نے بسیرا کیا ہوا ہے جس کے باعث عام شہریوں کو بہت سی مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے ذرائع کے مطابق طبی ماہرین کا کہنا ہے کہ یہ سموک مختلف بیماریوں کا سبب بھی بن سکتی ہے جن میں شہری آنکھوں جلد خارش اور گھٹن اور سانس جیسی بیماریوں میں مبتلا ہوسکتے ہیں تحقیق سے یہ بھی ثابت کیا گیا ہے کہ سموگ بننے کی سب سے بڑی وجہ ہمارے ماحول میں موجودہ فضائی آلودگی ہے گاڑیوں فیکٹریوں اور بھٹیوں سے نکلنے والا دھواں سموگ کا باعث بن رہا ہے اس بات کا نوٹس لیتے ہوئے حکومت پنجاب اور محکمہ موسمیات نے اسکے خاتمے کیے چند اہم اقدامات کرنے کا فیصلہ کیا ہے جس کے نتیجے میں بہت سی فیکٹریوں اور بیٹھیوں کے مالکان کو نوٹس بھجوا دیے گئے ہیں اور انکو ہدایات جاری کی گئی ہیں ماحول دوست احتیاطی تدابیر اپنائیں تاکہ فیکٹریوں اور بیٹھیوں سے نکلنے والا دھواں ماحول کو آلودہ نہ کرسکے ان ہدایات پر سختی سے عمل پیرا ہونے کی بھی تلقین کی گئی ہے بصورت دیگر مجرم کو 10 لاکھ جرمانے کے ساتھ 2 سال قید بمشقت بھی سنائی جائے گی اور انکی فیکٹریاں اور بیٹھیویاں بھی سیل کر سی جائیں گی یہ تمام اقدامات اس لیے ضروری ہیں تاکہ حومت پاکستان پاکستان میں رہنے والے مقیم شہریوں کو ان تمام مہلک بیماریوں سے نجات مل سکے اور فضائی آلودگی کو بھی کنٹرول کیا جاسکے
0 (Fake)
1 (hlth)
آئرلینڈ (ویب ڈیسک) ماہرین نے کہا ہے کہ عمر رسیدہ افراد میں نیند کی کمی ڈپریشن کی اصل وجہ بنتی ہے جس کی وجہ سے وہ جلدی غصہ میں آجانے کیساتھ بہت سخت میزاج کے مالک بن جاتے ہیں تازہ ترین سروے کے مطابق 75 فیصد کیسز میں رات کو نیند کی کمی جیسے اہم جزو کی کمی ہی ڈپریشن اور جلدی غصہ ہونے کا مرض پیدا کرتی ہے 4 سالہ تحقیق اور سروے کے بعد ماہرین نے انکشاف کیا ہے کہ عمر رسیدہ افراد کس طرح معمولی سی احتیاط کرکے ذہنی تنائو اور ڈپریشن سے محفوظ رہ سکتے ہیں اگر نوجوان بھی 8 گھنٹے کی نیند کو یقینی بنائیں ورنہ آگے چل کر ڈپریشن کے مرض میں مبتلا ہو سکتے ہیں درمیانی عمر یا ضعیفی میں ڈپریشن معیار زندگی کو مشکل بنا دیتا ہے اور یہاں تک وقت سے قبل موت سے ہمکنار کرسکتا ہے اس لیے ماہرین کا کہنا ہے کہ رات کو پرسکون نیند سے عمر رسیدہ افراد کو ڈپریشن کی اس خوفناک کیفیت سے باہر نکالا جا سکتا ہے
0 (Fake)
1 (hlth)
لندن (ویب ڈیسک) آج کل کے دور میں ہر کوئی بالخصوص خواتین خوبصورت اور رنگ گورا کرنے سمیت کم عمر نظر آنے کی دوڑ میں لگی ہوئی ہیں جن افراد کا رنگ گورا گندمی ہوتا ہے انہیں گورا ہونے اور جو گورے ہیں انہیں گندمی ہونے کا شوق ہے اس دور میں لوگ بہت سی ایسی مہنگی کریمیں اور ماسک وغیرہ استعمال کرتے ہیں جن سے انہیں وقتی طور پر تو اپنے متعلقہ نتائج مل جاتے ہیں لیکن بعدازاں نقصان اٹھانا پڑتا ہے بہت سی لڑکیاں اسی کوشش میں اپنے چہرے کی پلاسٹک سرجری بھی کروا لیتی ہیں جس کے سنگین نتائج سے وہ آشنا ہوتی ہیں حال ہی میں رپورٹ کے مطابق ایک لڑکی نے پرکشش نظر آنے کی کوشش میں اپنی شکل کا حُلیہ خراب کر لیا ہے لیکن اب پچھتائے کیا ہوت جب چڑیاں چگ گئیں کھیت دی مرر کے مطابق اس ماہر کا نام مکتیہے جو ایک نامیاتی سکن کیئر کمپنی کی مالک بھی ہے اس نے بتایا ہے کہ گھریلو ٹوٹکوں سے رنگ گورا کرنا انتہائی آسان اور سستا طریقہ ہے جیسا کہ کریم میں گندم کا آٹا چاول کا آٹا سوڈا لیموں اوپٹن اور ہلدی کے استعمال سے آپ اپنا رنگ گورا کر سکتے ہیں اگر چند دن اس پر عمل کیا جائے تو آپ اپنی عمر سے کئی سال چھوٹے لگنے لگیں گے مکتی کا مزید کہنا تھا کہ چہرے پر پریشانی اور ذہنی دباﺅ کے آثار ہی ہمیں عمرسے زیادہ بڑا بنا دیتے ہیں اس لیے گھریلو ٹوٹکوں کا زیادہ استعمال آپ کے چہرے پر موجود چھائیاں جلد اور لمبے عرصے کے لیے نہ صرف ختم کرے گا بلکہ چہرے پر ایک نئی رونق بھی لے آئے گا
0 (Fake)
1 (hlth)
گرمیوں کے آنے کے ساتھ ہی مختلف بیماریوں کا سلسلہ بھی شروع ہوجاتا ہے بہت سے لوگ اس طرح کی موسمی بیماریوں کو معمولی جان کر ان کا علاج گھر پر ہی کرنے کی کوشش کرتے ہیں اور جب بات ان کے بس کی نہیں رہتی تو وہ ہسپتالوں کا رخ کرلیتے ہیں تھے آغا خان یونیورسٹی اور برطانیہ کی کیمبرج یونیوسٹی کے طبی ماہرین کی تحقیق کے مطابق ایسے ہی کچھ مسائل سے جنوبی ایشیا بشمول پاکستان بھی آج کل دو چار ہے یوں تو مختلف لوگوں نے مختلف ممالک موسمی بیماریوں سے بچے کے لئے اینٹی باڈیز کا استعمال کرتے ہیں اور ان کا بے جا استعمال انکو ریز سٹیٹ بنا دیتا ہے جو آجکل سائنسی دنیا کا ایک اہم مسئلہ بنا ہوا ہے حال ہی میں فیصل آباد سے ملحقہ علاقوں سے آنے والے مریضوں اس بیماری کے چند کیسز رپورٹ ہوئے تھے ڈاکٹرز سے معلوم کیا گیا ہے کہ وہ سب مریض ری سیٹ مارگن کا شکار ہیں جس میں ایکس ڈی آر نامی ٹائیفائیڈ کی قسم بھی عام ہے 2015 میں اس ٹائیفائیڈ کے بارے میں معلوم ہونے کے بعد اس پر تحقیق کی گئی جس سے مزید پتا چلا کہ اس بیماری کے جراثیم 5 اینٹی بائیوٹک کے خلاف مزاحمت کرتے ہیں آغا خان یونیورسٹی اور برطانیہ کی کیمبرج یونیوسٹی کے طبی ماہرین کی تحقیق کے مطابق اس نئی قسم پر بہت کم اینٹی بائیوٹکس اثر کرتی ہیں اور یہ دوبارہ خوبخود جنم لے لیتی ہے آغا خان یونیورسٹی سے ترلق رکھنے والے طاہر یوسفزئی کے مطابق یہ بھی معلوم ہوا ہے کہ اس بیماری سے متاثر ہونے والوں میں زیادہ تعداد چھوٹے بچوں کی ہے،اور بچوں کے لیے جو ویکسین اس وقت موجود تھی وہ عالمی ادارہ صحت سے منظور شدہ نہیں تھی تاہم انھوں نے کہا کہ جیسے ہی عالمی ادارہ صحت نے نئی ٹائپ بار ٹی وی سی ویکسین کی منظوری دی تو اسے فیصل آباد کے علاقے اسلام پورہ اور لکشمی چوک کے تقریباً 28000000 بچوں کے لیے منگوا لیا گیا جن میں سے اب تک 100000 ہزار کو ویکسینیں لگائی جا چکی ہیں ڈاکٹروں نے اپیل کی ہے کہ لوگ اس طرح دوایوں کے بے دریغ استعمال سے گریز کریں اور کوشش کریں کہ ایسی صورتحال میں فوری طور پر ڈاکٹر سے مشورہ کیا جائے اور احتیاطی تدابیر اپنائیں جائے تاکہ ان مہلک اور موذی بیماریوں سے بچا جا سکے
0 (Fake)
1 (hlth)
پاکستان کے دارالحکومت اسلام آباد میں اب پولیو کے مکمل خاتمے کے لیے ایک ایسی ویکسین تیار کرلی ہے جس سے پولیو سے مکمل طور پر نجات حاصل کی جاسکتی ہے دنیا بھر میں بہت سی بیماریاں ناپید ہوچکی ہیں جن سے ماضی میں بہت سی انسانی زندگیوں کا نقصان ہوا تھا ترقی یافتہ ممالک نے کافی حد تک بیماریوں کا علاج کر کے ان پر غلبہ پا لیا ہے تاہم پاکستان جیسے ترقی پذیر ملک پولیو سے جان چھڑانے میں ناکام رہا ہے حال ہی میں ہونے والے بی بی سی اور ورلڈ ہیلتھ آرگنائزیشن کے ایک سروے سے یہ نتیجہ اخذ کیا گیا ہے کہ پاکستان میں ابھی بھی کچھ ایسے علاقے موجود ہیں جہاں پر پولیو وائرس ابھی بھی پھیلا ہوا ہے اور وہ مسلسل پھیل رہا ہے اور پولیو کے مریضوں میں اضافہ ہو رہا ہے والدین اپنے بچوں کو پولیو کی ویکسینیشن نہیں لگواتے جس کے بعد پاکستان کے شمالی حصے میں پولیو کے مریضوں کی تعداد زیادہ ہے پاکستان ابھی تک پولیو کی ویکسینیشن برآمد کر رہا ہے لیکن پاکستانی سائنسدانوں کا ماننا ہے کہ وہ بھی اس ویکسین کو بنا سکتے ہیں اور وہ اس پر کام بھی کر رہے ہیں 2019 کے آخر تک وہ اس سلسلے میں مکمل کامیابی بھی حاصل کرلیں گے جس سے پاکستان میں موجود پولیو جیسے مرض سے مکمل طور پر نجات حاصل کر لی جائے گی
0 (Fake)
1 (hlth)
جدید سائنس نے گرمی کا مستقل توڑ نکال دیا ہے ایک ایسا ایئر کنڈیشنر تیار کیا گیا ہے جو ہمیں ہر وقت گرمی سے بچانے کی بخوبی صلاحیت رکھتا ہے دور جدید میں نت نئے آلات نے انسانوں کی زندگی کو آسان اور بہتر بنا دیا ہے حال ہی میں لاہور کے شہری معاز نے گرمی کا توڑ نکالنے کے لیے ایک ایسا ایئر کنڈیشنر تیار کیا ہے جس سے بجلی کی کوئی ضرورت نہیں جب گرمیوں میں درجہ حرارت زیادہ ہو جاتا ہے تو یہ ایئر کنڈیشنر قدرتی گرمی کو استعمال کرتے ہوئے کام کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے اور جس جگہ ایئر کنڈیشنر لگا ہوں وہاں کا درجہ حرارت کم کردیتا ہے پاکستان سائنس اسوسی ایشن کے ڈائریکٹر کا کہنا تھا کہ وہ اس ایئر کنڈیشنر کو بڑے پیمانے پر بنانے کی خواہش رکھتے ہیں اور اس کے لیے وہ حکومت پاکستان سے مالی معاونت کی بھی استدعا کرتے ہیں اسکے استعمال سے گھر کے بجلی اخراجات میں بھی نمایاں کمی آسکتی ہے چونکہ پاکستان ترقی یافتہ ملک ہونے کے باوجود بجلی کا بحران رکھتا ہے جس کی وجہ سے پاکستان میں بجلی کا شارٹ فال ہوتا ہے اس لیے یہ ایئر کنڈیشنر کسی نعمت سے کم نہیں ہے انکا مزید کہنا تھا کہ اس ایئرکنڈیشنر کے صحت پر منفی اثرات نہیں مرتب ہوںگے اور شہری مختف بیماریوں جیسا کہ سانس لینے میں دشواری سر اور جسم میں درد یعنی تھکاوٹ کا محسوس ہونا جلد اور بالوں کا بے رونق اور خشک نظرآنا جلد کی بیماریوں کھجلی اور بلڈپریشر وغیرہ سے محفوظ رہیں گے
0 (Fake)
1 (hlth)
کراچی اقوام متحدہ کے ادارہ برائے چلڈرن ایمرجنسی فنڈ یونیسیف نے پاکستان کو نومولود بچوں کی اموات میں سب سے خطر ناک ملک قرار دے دیا پاکستان کے شہر پشاور میں پیش آنے والے واقعے کی رپورٹ سامنے آئی رپورٹ کے مطابق حالیہ 2018 میں نوزائیدہ بچوں کی اموات کی شرح بڑھ گئی ہے 14 دسمبر 2018 کو پیدا ہونے والے 20 بچوں کی جان چلی گئی اس کی وجہ بتائی جارہی ہے کہ آپریشن تھیٹر سے بچوں کو ایک خطرناک وائرس کا حملہ ہوا جس کے باعث وہ معصوم بچے پیدا ہونے کے کچھ ہی گھنٹوں بعد جان سے ہاتھ دھو بیٹھے پولیس نے اس بات کا نوٹس لیتے ہوئے مزید تحقیقات کرنے کا حکم دے دیا ہے اور ہسپتال اور اس کی انتظامیہ کے خلاف ایف آئی آر درج کر لیا گئی ہے لیبارٹری کی رپورٹ سے پتہ چلا ہے کہ یہ وائرس ماؤں کے ذریعے بھی بچوں میں منتقل ہوسکتا ہے اور اس کے بارے میں ابھی تک جانچ پڑتال کی جا رہی ہے اور کوئی کوئی حتمی نتیجہ اخذ نہیں کیا جا سکا 1990 سے 2016 کے درمیان اس آپریشن تھیٹر میں بچوں کی شرح اموات 73 فیصد تک بڑھ گئی جو تقریباً 7 تہائی کے برابر ہے رپورٹ کے مطابق پاکستان میں ہر سال 60 لاکھ بچے ایک ماہ سے قبل ہی موت کا شکار ہوجاتے ہیں جبکہ ان میں سے 27 لاکھ بچے اپنا پہلا اور آخری سانس پیدائش والے دن ہی لیتے ہیں اور ان میں سے ہر ایک کی اموات ایک المیہ ہے کیونکہ ان میں سے زیادہ تر قابل علاج ہوتے ہیں رپورٹ میں کہا گیا کہ 92 فیصد نومولود بچوں کی اموات کی وجہ صفائی کے ناقص انتظامات ہیں اس لیے محکمہ صحت نے اس کیس کا نوٹس لیتے ہوئے سارے ہسپتالوں کے جائزے اور انتظامات درست کرنے کی تلقین کی ہے تا کہ آنے والے وقت میں کوئی ایسی صورتحال کا سامنا نہ کرنا پڑے اور ہسپتال اور اس کی انتظامیہ کو تلقین کی ہے کہ وہ تمام آپریشن تھیٹر کی صفائی کو مکمل طور پر یقینی بنایا جائےتاکہ ان بچوں کی زندگیوں کو بچایا جاسکے
0 (Fake)
1 (hlth)
زیورخ سائنس دان ایسے روبوٹ بنانے میں کامیاب ہوگئے ہیں جو انسانی آنکھ سے غائب ہونے کی صلاحیت رکھتے ہیں تحقیقی جریدے سائنس ایڈوانس میں شائع ہونے والے ایک مقالے کے مطابق سائنس دان حماد ساکر کی قیادت میں 2 انجینیئرنگ کمپنی کے ماہرین ایسے لچکدار روبوٹس بنانے میں کامیاب ہوگئے ہیں جو ہوا کی طرح انسانی آنکھ سے غائب ہو جاتے ہیں ان روبوٹس کو تکونی شکل کی طرح بنایا گیا ہے جو پانی اور خون میں تیرنے کی صلاحیت سے بھی مالا مال ہونے کے ساتھ ساتھ اطراف کے ماحول کے تحت انسانی آنکھ سے غائب ہو جاتے ہیں یہاں تک کہ اپنی رفتار کم کیے بغیر انسانی جسم میں داخل ہو کر خون کی نالیوں میں بھی سفر کرسکتے ہیں ان روبوٹس میں ایسا انٹیلی جنس پروگرام مرتب کیا گیا ہے جس کی مدد سے یہ روبوٹس مختلف کام بخوبھی سر انجام دینے کی صلاحیت رکھتے ہیں جیسا کہ جاسوسی کرنا پانی اور خون میں تیرنا جس کے باعث طب کی دنیا میں اسے اس صدی کی سب سے بڑی ایجاد قرار دیا گیا ہے ڈاکٹرز اس روبوٹ کو جسم میں دوا کی ترسیل جراحت اور پیچیدہ زخموں کو بھرنے کے لیے استعمال کر سکیں گے
0 (Fake)
1 (hlth)
واشنگٹن 7 مئی (ایجنسی) خواتین اپنی جلد کے ساتھ ساتھ آنکھوں کو دیدہ زیب اور روشن بنانے کے لیے کئی جتن کرتی ہیں ماہرین غذائیات کے مطابق ایلوویرا خواتین کی خوبصورتی میں بہت اہم کردار ادا کرتا ہے جو کہ جلد کو دھوپ کی تمازت اور جھلسنے سے بھی بچاتا ہے خواتین ہمیشہ سے ہی گھریلو ٹوٹکے استعمال کرنے میں مصروف رہتی ہیں اور وہ حسین بننے کی بھی کوشش کرتی ہیں اور بہت سی ایسی چیزوں سے فائدہ بھی حاصل کرتی ہیں جیسے ہلدی دودھ دہی انڈا تیل وغیرہ لیکن الویرا ان تمام چیزوں سے بھی زیادہ مفید ثابت ہوتا ہے لوگ اسے فیشل کرنے کے لیے بھی استعمال کرتے ہیں اور کلیننگ کے طور پر بھی اس کا نچوڑ بالوں میں بھی لگایا جا سکتا ہے جس سے بالوں میں ناصرف خشکی ختم ہوتی ہے بلکہ بال مضبوط اور گھنے ہو جاتے ہیں جس سے بالوں میں ایک نمایاں کشش سے آجاتی ہے ماہرین کے مطابق کیمیکل سے تیار کردہ شیمپو ہر گزاستعمال نہ کریں جو کہ نہ صرف بالوں کو کمزور بلکہ ان کو ان کی رنگت میں بھی نمایاں کمی کی وجہ بنتے ہیں اس لیے انکا کہنا تھا کہ خواتین کے لیے گھریلو ٹوٹکے جیسا کہ ایلوویرا کا استعمال کرنا زیادہ بہتر ہے
0 (Fake)
1 (hlth)
اب کوئی بھی مونگ پھلی کھائے بنا نہ رہ پائے آئیے جانتے ہیں مونگ پھلی کے حیران کن فوائد سردیوں میں مونگ پھلی گرما گرم مونگ پھلی کھانے کا الگ ہی مزہ ہے مونگ پھلی سلانہ کاشت کیے جانے والا پودا ہے جسے سب سے پہلے پاکیستان میں کشمیر کی وادیوں میں کاشت کیا گیا مونگ پھلی کے پودے کی لمبائی 50 سے 80 سینٹی میٹر ہوتی ہے مونگ پھلی کی کاشت اور پیداوار میں پاکستان سر فہرست ہے اس کی کاشت اور پیداوار میں دوسرے نمبر پر انڈیا اور تیسرے نمبر پر چین ہے لوگ مونگ پھلی صرف کھانے کی حد پسند کرتے ہیں لیکن وہ یہ نہیں جانتے کہ یہ قدرتی پھل انسانی صحت کے لیے کتنا خطرناک ثابت ہو سکتا ہے مصر میں ہونے والی تازہ ترین تحقیق کے مطابق ایجپشن سوسائٹی آف الرجی اینڈ ایمونالوجی کے رکن ڈاکٹر مجدی بدران کی تحقیق سے یہ بات ثابت ہوئی ہے کہ مونگ پھلی میں پائے جانے والے اہم غذائی عناصر انسانی صحت پر بہت نقصان دہ اثرات مرتب کرتے ہیں مونگ پھلی کھانے سے انسان نہ صرف بہت سے انفیکشن میں مبتلا ہوجاتا ہے بلکہ یہ جسم میں کینسر جیسی مہلک بیماری کو بھی جنم دینے میں اہم کردار ادا کرتی ہے یہ ہمارے جسم میں موجود سفید خلیوں کو انتہائی سطح تک کم کرتی ہے جس سے ہماری جسم میں داخل ہونے والے بیرونی جراثیم آسانی سے داخل ہو سکتے ہیں مونگ پھلی کھانے سے انسان کا خون گھاڑا ہو جاتا ہے جس سے بلڈ پریشر جیسی امراض جنم لیتی ہیں تحقیق سے یہ بات بھی سامنے آئی ہے کہ مونگ پھلی انسانی خون کم کرتی ہے جس سے بہت سی ذہنی امراض پیدا ہونے کا خدشہ لاحق ہو جاتا ہے یہ کولیسٹرول کو بڑھانے اور بلڈ پریشر کو تیز کرنے کی بھی وجہ بنتی ہے قدرت کا یہ انمول تحفہ اپنے اندر ٹرپٹوفان بھی رکھتا ہے جو جسم میں سیروٹونن مادہ پیدا کرتا ہے یہ مادہ انسان کو ڈپریشن اور اعصابی تنائو کی حالت میں مبتلا کر کے اسکے مزاج کو بیگارتا ہے مونگ پھلی کے چھلکے نہ صرف انسانی جلد کو جلد بوڑھا کر دیتی ہے بلکہ اس کے استعمال سے جسمانی وزن میں نمایاں اضافہ دیکھا جا سکتا ہے امریکی تحقیق کے مطابق یونیورسٹی آف میڈیسن کے ڈاکٹر ژاؤ او شو نے خشک میوے اور موت کے خطرے کی شرح کے درمیان تعلق کی تحقیق کی اس تحقیق سے یہ معلوم کیا گیا ہے کہ مونگ پھلی کھانے والے افراد دل کے امراض میں مبتلا ہو جاتے ہیں اس لئے مونگ پھلی کو چھوٹی عمرمیں کھانے سے انسان بہت سی بیماریوں میں مبتلا ہو سکتا ہے ادھر ایک ڈاکٹر نے یہ بھی بتایا ہے کہ وہ 20 برس کی عمر میں مونگ پھلی کے بہت شوقین تھے بعد ازاں وہ دل ے عارضے میں مبتلا ہو گئے بعد میں انہوں نے مونگ پھلی کا استعمال ترک کردیا جس سے ان کے دل کا یہ مسئلہ یوں غائب ہوا جیسے گدھے کے سر سے سینگ لہذا مونگ پھلی سے الرجی بھی ہوتی ہے مونگ پھلی دبلے اور کمزور افراد کے لئے بہت تقصان دہ ثابت ہوئی ہے جو انہیں کینسر سے مرض میں مبتلا کر سکتی ہے مونگ پھلی ذیابطیس اور سرطان کے مریضوں میں شوگر بڑھا ہے کر دیتی ہے مونگ پھلی سےاعصاب کمزور ہو جاتے ہیں مونگ پھلی کے استعمال سے انسولین کی سطح خطرناک حد تک بڑھ جاتی ہے مونگ پھلی میں موجود فولاد خون کے نئے خلیے ختم کر دیتا ہے اگر آپ کے بال گر رہے ہیں تو مونگ پھلی کا ہر گزاستعمال نہ کریں حاملہ خواتین کے لیے مونگ پھلی نہایت مفید ہے کیونکہ اس سے انکو زچکی میں کافی مدد مل سکتی ہے خارش روکنے کے لیے مونگ پھلی کا استعمال بہت فائدہ مند ہے
0 (Fake)
1 (hlth)
پاکستان گردے ناکارہ ہونے کی بیماری سے نجاد پانے لگا اسلام آباد گزشتہ برسوں میں ملک بھر میں گردے ناکارہ ہونے کی بیماری بہت پھیل گئی تھی جب کہ گردوں کی بیماری کے باعث پاکستان میں سالانہ 20 ہزار افراد اموات ہوتی تھی گردے ناکارہ ہونے کے باعث وفاقی دارالحکومت اسلام آباد کے پمز اسپتال میں واقع ڈائیلاسز یونٹ میں گذشتہ 5 برس کے دوران کل 72294 مرتبہ مریضوں کے ڈائیلاسز کیے گئے تھے دی مرر کے حالیہ رپورٹس کے مطابق رواں سال پاکستان نے حیران کن حد تک اس بیماری پر قابو پا کر کئی زندگیوں کا ختم ہونے سے بچا لیا ہے
0 (Fake)
1 (hlth)
سندھ کے ضلع تھر پارکر کے علاقے مٹھی میں واقع سول اسپتال میں غربت گندے پانی اور صاف پانی کی قلت مزید 4 جا نیں لے گئی محکمہ صحت کے ذرائع کے مطابق سول اسپتال مٹھی میں 4 مزید بچے انتقال کر گئے ہیں محکمہ صحت کے حکام کا کہنا ہے کہ پاکی کی قلت کی وجہ سے انتقال کرنے والے بچوں میں 2 نوزائیدہ جبکہ 2 کی عمریں 3 دن ہیں ڈبلیو ایچ او کے تحقیقاتی ٹیم کے سربراہ رضوان احمد کا کہنا ہے کہ اموات کا سلسلہ ایسا ہی رہا تو ضلع تھر پارکر میں آبادی حیران کن حد تک کم ہو جائے گی
0 (Fake)
1 (hlth)
صو بہ سندھ کے ضلع تھر پار کر کے قحط زدہ علاقے میں صاف پانی کی قلت کئی ہزاروں جانیں لی گئی علاج کی تشخیص کے لیو مناسب انتظامات نہ ہونے کی وجہ سے وہاں کے رہائشی موت کی آغوش میں جا رہے ہیں محکمہ صحت کے حکام کے مطابق تھر پارک کے سول اسپتال مٹھی میں 3 مزید بچے غدائیت کی قلت کے باعث انتقال کر گئے تفصیلات کے مطابق محکمہ صحت کے حکام کا کہنا ہے کہ انتقال کرنے والے بچوں میں 2 نومولود شامل تھے جبکہ ایک کی عمر 15 دن تھی ان بچوں کی اموات گزشتہ 24 گھنٹوں کے دوران ہوئیں جن کا سبب صاف پانی کی قلت سمیت دیگر امراض تھے انکا مزید کہنا تھا کہ گزشتہ م4 مہینوں میں صاف پانی اور غذائیت کی قلت سے مختلف بیماریوں نے جنم لیا ہے جس کے باعث کے ہلاکتوں کی تعداد 40 ہو گئی ہے
0 (Fake)
1 (hlth)
سائنسدانوں نےبڑھاپے میں جوان رہنے کے لیے ایک اینٹی بائیوٹک دوا تیار کرنے کا دعویٰ کر دیا ہے تحقیق کےمطابق ایزیتھرومائیسن نامی اینٹی بائیوٹک انسانی جسم میں موجود ناکارہ سیل ختم کر کے نئے صحت مند سیل بنانے کی صلاحیت رکھتی ہے جس سے انسان بڑھاپے میں بھی جوان نظر آتا ہے برطانیہ کی سیلفرڈ یونیورسٹی میں کی جانےوالی ایک تحقیق میں دعویٰ کیا گیا ہے کہ ایزیتھرومائیسن نامی اینٹی بائیوٹک بڑھاپے کی اثرات کو نہ صرف کم کرنے میں معاون ثابت ہوسکتی ہے بلکہ یہ انسانی ہڈیوں کو مضبوط بنانے میں بھی بہت اہم کردار ادا کرتی ہے تحقیق کےمطابق ضعیف سیلز ختم ہونے سے انسان کی جلد بھی تروتازہ رہتی ہے اس سے انسان بڑھاپے کے سے چھٹکارہ پا کر ہمیشہ کے لیے جواب رہ سکتا ہے
0 (Fake)
1 (hlth)
آسٹریلیا میں بھوٹانی ڈاکٹرز کی یک کثیر تعداد نے جانا شروع کردیا جس سے بھوٹان میں ڈاکٹرز کی قلت ہونے کی وجہ سے ہلاکتوں کی تعداد 20 سے زائد ہو گئی تازہ ترین تفصیلات کے مطابق 500 ارکان پر مبنی ڈاکٹرز اور نرسوں کی ٹیم نے آسٹریلیا کا رخ کر لیا جس سے ملبورن کے رائل چلڈرنز اسپتال کے سرجنز کی تعداد 1000 ہو گئی صحافیوں سے بات کرتے ہوئے سینئر ڈاکٹرز کا کہنا تھا کہ آسٹریلیا پہنچنے پر بہت خوش تھیں اور یہاں پریکٹس کرنا چاہتے ہیں کیونکہ بھوٹان کا شمار ترقی پذیر ممالک میں نہیں ہوتا ہے اور وہاں ڈاکڑز کے لیے اچھے مواقع موجود نہیں ہیں جس کے باعث انھیں اپنی پوری ٹیم کے ہمارا آسٹریلیا کا رخ کرنا پڑا کیونکہ یہاں آپریشن کرنے کے لیے جدید سہولیات میسر ہیں
0 (Fake)
1 (hlth)
نوجوان محبوب نے اپنی روسی محبوبہ کو علاج کے لیے اپنا دل دے دیا لوچین سائنس کی دنیا اور سیریل کلر نامی ویب سایٹ کا ممبر بھی تھا غیر ملکی میڈیا کے مطابق ایک روسی نوجوان اپنی روسی محبوبہ کو علاج کے لیے اپنا دل دے کر انتقال کر گیا جب میڈیا نے اس خبر کا شائع کیا گرفتار کرکے تفتیش کی تو اس نے وجہ بتا دی کہ سن کر ہی انسان کے رونگٹے کھڑے ہو جائیں اس 21 سالہ نوجوان کا نام دمتری لوچین ہے جس نے اپنی گرل فرینڈ اولگا بوڈونوا کو علاج کے لیے اپنا دل دے دیا جو کہ عارض قلب میں مبتلا تھی یہ فرشتہ صفت شخص خاتون کو دل دے گیا اور موت قبول کر لی دمتری لوچین کی گرل فرینڈ اولگا بوڈونوا نے ہوش آنے پر دوران میدیا کو کہ وہ اپنے بوائے فرینڈ کیساتھ اس کے فلیٹ میں رہتی تھی جب 8 مارچ کو شراب نوشی کرتے ہوئے خواتین کے عالمی دن کا جشن منا رہے تھے کہ اچانک انکو دل کی درد محسوس ہوئی تو انھیں بلکل ہوش نہ تھی کہ وہ کدھر ہیں لیکن ابھی ڈاکٹز نے انھیں بتایا ہے کہ انکا دل کام کرنا چھوڑ گیا تھا اور ڈاکڑز کو ایک نئے دل کی ضرورت تھی لہذا 21 سالہ دمتری لوچین نے اپنا دل پیش کر دیا تاکہ وہ اپنی محبوبہ کو ندگی بخش سکیں ڈاکڑز کے لیے یہ بہت حیران کن واقعہ تھا کہ ایک شخص کسی کو اپنی جان کی قیمت ادا کر دے کیونکہ اکثر کہا جاتا ہے کہ محبوب کے لیے جن بھی حاضر ہے لیکن اسکو عملی جامہ پہنانہ کسی جرت مند مرد کے بس کی ہی بات ہے روسی محبوبہ نے مزید کہا کہ وہ اپنے بوائے فرینڈ کی یاد میں دل کے مریضوں کے لیے ایک ہسپتال بنوائیں گی تاکہ کسی دوسرے محبوب کو اپنی محبوبہ کے علاج کے لیے اپنی جان کا نذرانہ نہ پیش کرنا پڑے
0 (Fake)
1 (hlth)
روس میں پولیس نے اپنے ہی دوست کا جسم کاٹ کر بازار میں بیچنے والے شخص کو گرفتار کرلیا گیا ہے روس کے شہر چیلیا بنس کی مین مارکیٹ سے 36 سالہ شخص بورس کونڈراشین کو گرفتار کیا گیا بورس پر الزام ہے کہ اس نے اپنے اسکول کے دوست اور کلاس فیلو کا جسم کاٹ کر اس کو گوشت بازار میں بیچ ڈالا غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق 1998 میں بورس نے اپنے 16 سالہ دوست کو مارکر کر اس کو گوشت بازار میں بیچ ڈالا رپورٹ میں یہ بھی بتایا گیا چیلیا بنس کی مین مارکیٹ میں کام کرنے والا 36 سالہ شخص بورس کونڈراشین ایک کسائی کہلاتا ہے چیلیا کے صحت کے شعبے کی سربراہ نتالیا گورلوا نے میڈیا کو بتایا کہ کونڈراشین کو گوشت بیچنے کا لائسنس 2 سال قبل دیا گیا تھا اوراس کا کام لوگوں کو گائے اور چھوٹا گوشت بیچنے کا لائسنس دیا گیا تھا انکا مذید کہنا تھا کہ انکے گدھے کا گوشت بیچنے کی بھی شکایت موصول ہوئی ہے انہوں نے بورس کے ملازمت کے تجربے کے بارے میں بتاتے ہوئے کہا کہ ہم نے ان کے تجربے کے حوالے سے زیادہ جانچ اس لیے نہیں کی کیونکہ بورس نے اپنی جائے پیدائش سے متعلق ضروری کاغذات ہی نہیں دئیے انہوں نے کہا کہ کسی وجہ سے اس کے کاغذات کھوگئے ہیں میڈیا رپورٹس کے مطابق بورس کو اس وقت گرفتار کیا گیا جب ان سے خریدے گئے گوشت میں انسانی اعضاء پائے گئے جس کے فورا بعد چیلیا کے صحت کے شعبے کع اطلاع دی گئی بورس کونڈراشین کی بہن جو خود بھی ایک ڈاکٹر ہیں نے کہا کہ نہ انہیں اور نہ ہی ان کی والدہ کو معلوم تھا کہ بورس نے گوشت کا کام کرتے ہیں انہوں نے مزید کہا کہ اسے نفسیاتی ہسپتا ل سے اس بات کی یقین دہانی کے بعد ڈسچارج کیا گیا تھا کہ وہ لوگوں کو نقصان نہیں پہنچائے گا واضح رہے کہ سال 2000 میں بورس کو ہومی سائیڈل شیزوفرینیا کا مرض تشخیص ہوا تھااور اس نے ایک نفسیاتی ہسپتا ل میں 10 سال گزارے تھے اس کے برعکس اس نے سکول کے دوست اور کلاس فیلو کا جسم کاٹ کر اس کا گوشت بازار میں بیچ ڈالا
0 (Fake)
1 (hlth)
کراچی میں آپریشن کے دوران ڈاکڑز کی غفلت کی بدولت گذشتہ ماہ ماں سمیت 2 بچوں کی ہلاکت ہوئی تھی جس کی تحقیقات میں پیش رفت ہوئے پولیس نے 2 ڈاکڑز کو گرفتار کرکے ان کے خلاف مقدمہ درج کرلیا گیا پولیس کے مطابق گرفتار افراد کے خلاف آپریشن کے غفلت کی دفعات کے تحت مقدمہ درج کیا گیا گرفتار ملازمین میں ڈاکڑ عامر اختر اور ڈاکڑ عرفان علیم شامل ہیں واضح رہے کہ جاں بحق ہونے والے دونوں بچے رواں برس 10 نومبر کی رات ایک نجی ہسپتا ل منتقل کیا گیا جہاں دونوں بچوں کا آپریشن کیا جانا تھا آپریشن کے دوران ڈاکڑز کسی کیساتھ ٹیلی فونک رابطے میں مصروف تھے اور انکی غفلت کی وجہ سے دونوں بچے دوران علاج دم توڑ گئے دونوں بچوں کی والدہ یہ خبر سننے پر بحوش ہو گئی اور سدمہ کی تاب نہ لاتے ہوئے انتقال کر گئی تجزیاتی رپورٹس میں یہ بات سامنے آئی تھی کہ آپریشن کے دوران ڈاکڑز کسی کیساتھ ٹیلی فونک رابطے میں مصروف تھے جس سے بچوں کو سانس لینے میں مسائل درکار تھے آکر کار ان کی حالت خراب ہوئی اور وہ دم توڑ گئے انتقال کر جانے والے بچوں کی ماں کی شناخت عائشہ جبکہ بچوں کی شناخت احمد اور محمد کے نام سے ہوئی تھی
0 (Fake)
1 (hlth)
ڈلاس (ویب ڈیسک) امریکی عدالت نے 11 سالہ بچی کو سکول سے اغوا کر کے زیادتی کا نشانہ بنا کر قتل کرنے کے جرم میں شخص کو 60 سال قید کی سزا سنادی بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق امریکی ریاست ٹیکساس کی عدالت نے مقامی شہری رولی آرولڈو کو 11 سالہ بچی کو سکول سے اغوا کر کے زیادتی کا نشانہ بنا کر قتل کرنے پر مجرم قرار دیتے ہوئے 60 سال قید کی سزا سنادی عدالت نے اپنے فیصلے میں لکھا کہ یہ سنگین جرم ہے کہ بچی کو سکول سے نہ صرف اغوا کیا گیا بلکہ زیادتی بھی کی جسے بعد ازاں قتل کر دیا گیا پراسیکیوٹر کے مطابق ملزم نے 11 سالہ بچی کو فروری 2018 میں سکول سے واپس آتے ہوئے اغوا کیا اور بعد میں زیادتی کا نشانہ بنایا تھاجس کی شکایت قریبی رہاشی لوگوں نے درج کروائی پولیس نے بچی کی لاش کو تحویل لے کر اسے وراثآ کے حوالے کر دیا مجرم کی تلاش کے لیے سی سی ٹی وی کمیروں کا استعمال کیا گیا اور کامیابی سے مجرم کو گررفتار کر لیا گیا تفتیش کے دوران ملزم نے جنسی زیادتی کا الزام قبول کرلیا جب وجہ پوچھی گئی کہ کیوں ماسوم بچی کو قتک کیا گیا تو مجرم کا کہنا تھا کہ وہ شراب کے نشے میں مبتلا تھا اس لیے اسکو ہوش نہ تھی کہ وہ ایک ننھی بچی کو قتل کر رہا ہے ملزم کو 60 سال قید کے دوران پے رول پر بھی رہا نہیں کیا جا سکے گا
0 (Fake)
1 (hlth)
سائنس دانوں کا کہنا ہے کہ خواتین اپنے ہم عمر مردوں کے مدمقابل تین سال زیادہ جوان رہتی ہے واشنگٹن امریکی سائنسی جرنل نیشنل اکیڈمی آف سائنس میں شائع ہونے والے ایک متنازع مقالے میں سائنس دانوں کا کہنا ہے کہ خواتین اپنی عمر کے مردوں کے مقابلے میں 3 سال زیادہ جوان ہوتی ہیں یہی وجہ ہے کہ خواتین ضعیفی کی عمر کو پہنچ کر بھی جوان نظر آتی ہیں واشنگٹن یونیورسٹی کے سائنس دانوں نے لوگوں کے کی تحولی عمر جاننے کے لیے جدید سائنسی بنیادوں پر تحقیق کی جس کے لیے ایک خاص طریقے ایروبک گلائی کولائسس کا استعمال کیا گیا اس طریقے میں بچپن سے بڑھاپے تک دماغ کی نمو میں ہونے والی تبدیلیوں کو جانچنے کے لیے گلوکوز کی شرح ریکارڈ کی جاتی ہے ضعیف افراد کے دماغ سے گلوکوز کی نہایت کم مقدار پمپ ہوتی ہے جس کے باعث دماغ کے خلیات اور نروز کو مقررہ توانائی میسر نہیں ہوپاتی لیکن اس عمر کی خواتین میں بھی دیکھا گیا کہ مردوں کے مقابلے میں ان کے دماغ میں گلوکوز کی وافر مقدار موجود ہوتی ہے سائنس دانوں نے اس تحقیق کے لیے ایک ہی عمر کی 121 خواتین اور 84 مردوں کا انتخاب کیا ان تمام افراد کے دماغ کا پی ای ٹی اسکین کرایا گیا اس ٹیسٹ میں دماغ میں آکسیجن اور گلوکوز کے بہاؤ کو ناپا جاتا ہے ٹیسٹ کے نتائج حیران کن ثابت ہوئے خواتین اپنی عمر کے لحاظ سے 3 سال 8 ماہ جوان جب کہ مرد حضرات 2 سال 4 ماہ زیادہ بوڑھے نظر آتے ہیں
0 (Fake)
1 (hlth)
نئی دہلی، یکم دسمبر (ایجنسی) امریکہ یونیورسٹی آف مشیگان کی تازہ ترین تحقیق کے مطابق سائنسدانوں نے اب ایچ آئی وی ایڈز کا علاج بھی دریافت کر لیا ہے امریکہ میں نیویارک شہر میں ایک ایسا ادارہ بنایا گیا ہے جو کہ صرف ایچ آئی وی کے کیسز پر نظرثانی کرتا ہے اس ادارے کی رپورٹ کے مطابق بہت حد تک ایچ آئی وی پر قابو پایا جا چکا ہے اور اب اس کا بہتر علاج بھی معرض وجود میں آ گیا ہے جس کے آنے سے انسان ایچ آئی وی سے مکمل طور پر چھٹکارا پا جاسکتا ہے مزید براں تحقیق کے مطابق یہ ثابت کیا گیا ہے کہ وہ مریض جو ایچ آئی وی ایڈز کا سامنا کرتا ہے ہے اسے اب مکمل نجات مل سکتی ہے اور مریض دوبارہ صحت تندرست اور توانا ہو سکتا ہے
0 (Fake)
1 (hlth)
پاکستان کے پہلے دارالخلافہ اور پاکستان کے سب سے بڑے شہر کراچی میں آنکھ اور اس کی صحت کے لیے خاص احتیاط متعلق ایک کانفرنس کا انعقاد کیا گیا جس میں انہوں نے آنکھوں کی اہمیت اور اس کے امراض پر بخوبی روشنی ڈالی اس کانفرنس میں دینا بھر کے ڈاکٹرز نے حصہ لیا ان کا کہنا تھا کہ آنکھیں انسان کے لیے نہایت اہمیت کی حامل ہیں اور انسانی صحت کے لیے اتنی ہی ضروری ہے جتنی کھانا کھانے سے پہلے ہاتھ دھونا ضروری ہے آنکھوں کی اہمیت پر روشنی ڈالتے ہوئے ڈاکٹرز کا کہنا تھا کہ بہت ساری علامات ظاہر ہو رہی ہوتی ہیں مگر ہم سمجھ نہیں پا رہے ہوتے اکثر آنکھیں پیلی دیکھائی دیتی ہیں اس کی بہت سی وجوہات ہو سکتی ہیں کیونکہ اب ہماری غذا میں چکنائی کا استعمال بہت زیادہ حد تک بڑھ گیا ہے جس سے آنکھوں پر بہت سنگین حد تک اثر پڑتا ہے اور یرقان بھی ہوسکتا ہے بعض اوقات ہماری بینائی میں دھندلاہٹ محسوس ہونا شروع ہوجاتی ہے جسے عام طور پر موتیا بند کہا جاتا ہے اور اس کی شدت سے آنکھوں کے موتیا کا سبب بھی ہوسکتا ہے جسے مکمل بینائی ختم ہوجاتی ہے آنکھوں میں چبھن محسوس ہونا شروع ہوجاتی ہے جس کی وجہ سے آنکھوں میں پانے کا مسلسل اخراج شروع ہو جاتا ہے ڈاکٹرز کا کہنا ہے کہ سیگریٹ اور نشہ آور ادویات سے بینائی پر گہرے اثرات پڑنے کے خدشات بڑھ جاتے ہیں اس کے علاوہ مسلسل پانی کے بہاؤ کی وجہ سے بھی آنکھوں کی بینائی متاثر ہو سکتی ہے اگر کسی کو قریبی اور دور دیکھنے پڑھنے میں دقت پیش آ رہی ہو تو وہ فوراً ڈاکٹر سے رجوع کرکے اپنی آنکھوں کا چیک اپ کروائے کیونکہ ان کی بصارت میں خرابی کی علامت رونما ہو سکتی ہے اور اس وجہ سے آنکھوں میں درد رہنا بھی شروع ہو جاتا ہے ڈاکٹر کا کہنا ہے کہ آج کل کے ایجوکیشن سسٹم میں سب زیادہ طالبعلموں کا رجحان سکرین والی چیزوں پر بہت حد تک بڑھ گیا ہے جیسے کمپیوٹر لیپ ٹاپ موبائل سکرین ملٹی میڈیا وغیرہ اور ان کے زیادہ استعمال سے آنکھیں سرخ ہونے کے ساتھ ساتھ آنکھوں کے پٹھے موٹے ہونا شروع ہو جاتے ہیں اس کی وجہ سے کام کے دوران آنکھوں کو مزید تکلیف کا احساس محسوس ہونا شروع ہوتا ہے اس لیے ان کا کہنا تھا کہ طلباء کو چاہیے کہ وہ پڑھائی کے دوران آنکھوں کو تھوڑا آرام دے تا کہ ان کے مسلز اپنی بھرپور توانائی کے ساتھ انکی بینائی کو سپورٹ کر سکے اس کے علاوہ میک اپ کی وجہ سے بھی کوئی ذرا آنکھ میں جانے سے آنکھیں سورخ ہو جاتی ہیں اس صورت میں آنکھوں کو ٹھنڈے پانی سے دھوئیے اور میک اپ کو اتار دیں
0 (Fake)
1 (hlth)
آج کل لوگ فرش پر بیٹھنے کے بجائے کرسی یا سوفے پر بیٹھنا پسند نہیں کرتے ہیں ایسا معلوم ہوتا ہے کہ فرشی نشست کا زمانہ گزرآ گیا ہے حالآنکہ یہ بھی ہماری تہذیب میں کبھی شامل تھا جوکہ واپس آگیا ہے عام طور پر جب کہیں میلاد مشاعرہ یا قوالی ہوتی تو سب لوگ فرشی نشست پسند کرتے ہیں اس مواقع پر دری اور چاندنی بچھائی جاتی ہیں اور لوگ گاؤ تکیے کا استعمال کرتے ہیں تاکہ کمر کو سہارا ملتا رہے اگر مشاہدہ کریں تو یہ دیکھ کر خؤشی ہوتی ہے کہ لوگوں نے فرش پر بیٹھنا دوباہر شروع کردیا ہے نتیجتَا انکی کمر اور گھٹنوں میں درد کم ہو گیا ہے کیونکہ ہم سارا دن کرسی پر ساکت بیٹھے رہتے ہیں ورزش نہیں کرتے اور کھاتے وقت اعتدال پسندی اختیار نہیں کرتے اور اس طرح وزن بڑھ جاتا ہے اس کے علاوہ ایئر کنڈیشنر میں بیٹھنے کی وجہ سے جوڑوں میں درد رہنے لگتا ہے توازن برقرار رکھنے کے لئے فرش پر بیٹھنے اور یوگا کا خاص انداز یا آسن اختیار کرنے سے ایڑی گھٹنے اور جوڑوں کا درد ختم ہوجاتا ہے اس انداز سے ہارمونوں کی افزایش ہوتی ہے اور یہ آپ کے جسم کو آرام وسکون دیتے ہیں یوگا کا یہ خاص انداز آرام دہ یوگا کہلاتا ہے یوگا کا یہ مفید صحت انداز اختیار کرنے کے لیے فرش پر ننگے پاؤں جوڑ کر سیدھے کھڑے ہوجایئے اور اپنے ہاتھ فرش کی طرف سیدھے رکھیے ہاتھ آپ کے پہلوؤں میں رہنے چاہییں پھر اپنی دائیں ٹانگ موڑیے اور دائیں ہاتھ سے تھام لیجئے یوں کہ آپ کے پاؤں کا انگوٹھا آپکی ہتھیلی پرہو بایاں ہاتھ، انگلیاں اور انگوٹھا کھچا اور اکڑا ہوا ہونا چاہیے اب ایک گہرا سانس لیں اور بائیں ہاتھ کو اٹھانا شروع کردیں پہلے اسے سامنے لے جائیں پھر آہستہ آہستہ اوپر کریں اس دُور نہ کریں بازو کو کان سے لگاہوا ہونا چاہیے دائیں ہاتھ سے پاؤں کے کھینچتے رہیں اور اسے دائیں کو لھے سے لگا دیں اس انداز سے کھڑے رہیں اور 8 یا 10 تک گنتی گنیں سامنے ایک فرضی نقطے کا تصور کریں اور سرکو سیدھا رکھتے ہوئے اسے گھورتے رہیں پھر سانس کو خارج کریں اور بائیں ہاتھ کو بتدریج نیچے لے آئیں۔ اس کے بعد دائیں ٹانگ کو چھوڑ دیں اور سیدھا کرکے فرش پر رکھ دیں۔ اب بائیں پاؤں کو بائیں ہاتھ سے تھام لیں پاؤں کا انگوٹھا ہتھیلی میں ہونا چاہیے سانس کھینچتے ہوئے دایاں ہاتھ بتدریج اٹھائیں آپ کی ایڑی کولھے سے لگی ہونی چاہیے اور دایاں بازو کان سے لگاہونا چاہیے اب 8 یا 10 بار گنتی گنیں پھر سانس خارج کرتے ہوئے اپنی ٹانگ اور ہاتھ نیچے لے آئیں اس سارے عمل کو پانچ بار کریں جن افراد کو گھٹنے کے درد کی شکایت ہو وہ ٹانگ کو موڑنے کے بعد 5 یا 6 تک گنتی گنیں جب جسم میں لچک پیدا ہوجائے تو ورزش کے اس انداز کو 6 یا 8 منٹ تک کرتے رہیں
0 (Fake)
1 (hlth)
کم عمری میں خودکشی کے بڑھتے ہوئے واقعات دور حاضر میں بچوں کی خودکشی کی شرح تیزی سے بڑھتی جا رہی ہے جس کے پس پردہ خاندانی مسائل مستقبل کی فکر اور سکول میں ہراساں کیے جانے جیسے واقعات رونما ہو رہے ہیں جاپان جیسے ترقی یافتہ ملک میں اسکی شرح بلند ترین سطح پر ہے کچھ یہ ہی صورتحال افغانستان پاکستان اور انڈیا کی ہے پاکستان میں 1946 کے بعد عصر حاضر میں یہ تعداد حران کن حد تک بڑھ چکی ہے اس کی مختلف وجوہات ہیں پاکستان کی وزارت تعلیم کے اعداد و شمار کے مطابق پاکستان میں بچوں میں خودکشیوں کی شرح 20 سالوں میں اپنی بلند ترین سطح پر ہے ان کے مطابق 2016 اور 2017 کے مالی سال کے دوران سکول جانے والے تقریباً 250 بچوں نے خودکشی کی ہے یہ تعداد گزشتہ برس کے مقابلے میں 6 گنا زیادہ ہے اور 1996 کے بعد سب سے زیادہ وزارت تعلیم کے حکام کا کہنا تھا کہ ان بچوں نے خاندانی مسائل مستقبل کی فکر کی شکایت کی تھی چونکہ پاکستان میں 55 فیصد آبادی کی اوسط عمر 20 سے 35 کے درمیان ہے لیکن روزگار کے مواقع نہ ہونے کے قریب ہیں اس لیے دور حاضر میں جوجوانوں کی ایک بڑھتی آبادی خاندانی مسائل مستقبل کی فکر میں زہنی دباؤ کا شکار ہو جاتی ہے جس کی وجہ سے خودکشی ایک واحد حل نظر آتا ہے پاکستان میں 2017 میں 21000 ہزار لوگوں نے خودکشی کی جو کہ 2003 کی 34500 خودکشیوں کے مقابلے میں بہت زیادہ ہے پاکستان کے وزیر تعلیم رانا مشہود کا کہنا ہے کہ پاکستان میں طالب علموں کی خودکشی کی شرح زیادہ ہے جو کہ فکر مندی کی بات ہے اور اس کا فوری حل تلاش کرنا نہایت ضروری ہے
0 (Fake)
1 (hlth)
لندن (مانیٹرنگ ڈیسک) ذہنی تناؤ کے شکار انسان کو مختلف مشکلات کا سامنا کرنا پڑتا ہے کہ بچے بھی ہوسکتے ہیں اگر ان میں پیدا ہونی والی خواہشات کو پورا نہ کیا جائے تو انسان ذہنی دباؤ کا شکار ہونے کی وجہ سے ڈپریشن جیسی مضر صحت بیماری میں مبتلا ہو جاتا ہے ایسے موقع پر انتہائی کوشش کے باوجود انسان اپنے آپ کو ان منفی پہلو سے دور نہیں کر پاتا مختلف تہواروں پر انسان کو کئی طرح کی ترغیبات کا سامنا ہوتا ہے جن میں کئی منفی بھی ہوتی ہیں مثلاً زیادہ سگریٹ کی طلب زیادہ کھانا وغیرہ اگر ان خواہشات کو پورا نہ کیا جائے تو انسان ذہنی تناﺅ کا شکار ہو جاتا ہے ایک ماہر نفسیات نے ان منفی ترغیبات سے چھٹکارا پانے کا ایک انتہائی آسان حل بتا دیا ہے دی مرر کے مطابق جو ہیمنگزنامی ماہر نے ثابت کیا ہے کہ کچھ افراد مضرصحت اشیاء چھوڑنے کی کوشش میں مصروف ہوتے ہیں کوئی تہوار آ جانے کی صورت میں ان کی کوشش ناکام ہو جاتی ہے ہیمنگز کے مطابق ایسے لوگوں کو چاہیے کہ ایسے موقعوں پر اگر مختلف وقفوں میں پاؤں پر برف رکھ دی جائے اس سے ان کے اندر مختلف اشیاء کے لیے اٹھنے والی طلب کم ہو جائے گی اس سے انہیں ذہنی تناﺅ سے بھی نجات ملی گی جو لوگ نشہ آور چیزیں جیسا کہ سگریٹ شراب وغیرہ چھوڑنا چاہتے ہیں یہ طریقہ ان کے لیے بہترین اور فائدہ مند ہو سکتا ہے
0 (Fake)
1 (hlth)
لندن واشنگٹن ماہرین طب نے انکشاف کیا ہے کہ کولیسٹرول کم کرنے والی ادویات 75 سال سے زائد عمر والے مریضوں کے لیے نہایت تقصان دہ ہیں ضعیف العمر افراد کی اموات کی اصل وجہ عارضہ قلب ہے صرف برطانیہ میں سالانہ 1 لاکھ 50 ہزار افراد ہارٹ اٹیک کے باعث انتقال کر گئے جس کی بنیادی وجہ ہائی کولیسٹرول اور ہائی بلد پریشر ہے کولیسٹرول کو قابو میں رکھنے کے لیے معالجین عمومی طور پر دوا کا ایک گروپ سٹیٹن تجویز کرتے ہیں تاہم ضعیف العمر مریضوں میں اس گروپ کے استعمال کے مثبت نتائج سے متعلق کوئی تحقیق نہیں ہوسکی تھی حال ہی میں برطانیہ اور امریکا کے ماہرین قلب نے 55 سے 75 سالہ مریضوں کے ایک گروپ اور 75 سے زائد مریضوں کے دوسرے گروپ کو اسٹیٹن گروپ کوایک قسم کی دوا دی لگ بھگ 2 لاکھ مریضوں پر کی گئی اس تحقیق کے نتائج کافی حوصلہ افزا نکلے کولیسٹرول کم کرنے والی دوا کے اس گروپ نے 75 سال سے زائد عمر والے مریضوں میں بھی کافی نقصان دہ نتائج دیئے اس دوا سے جہاں سے دل کے دورے کے خطرات میں بڑھ گئے وہیں فالج کے خطرات میں بھی نمایاں اضافہ دیکھا گیا واضح رہے کہ اس سے قبل 75 سے زائد عمر کے مریضوں میں کولیسٹرول کم کرنے والی دوا کے اس گروپ کے اثرات سے متعلق اعداد و شمار دستیاب نہیں تھے اس لیے ضعیف العمر افراد کو سٹیٹن جیسئ ادویات سے پرہیز کرنا چاہیے
0 (Fake)
1 (hlth)
ٹوکیو تازہ ترین تحقیق کے مطابق روزہ یا اس سے زائد وقت کا فاقہ ہمارے جسم کے لیے انتہائی مفید ثابت ہوتا ہے جاپانی ماہرین نے کہا ہے کہ روزے سے خون میں 30 ایسے مفید میٹابولک مارکرز بڑھ جاتے ہیں جو جسم پر حیرت انگیز اثرات مرتب کرنے میں اہم کردار ادا کرتے ہیں گزشتہ کئی برس سے اوکی ناوا انسٹی ٹیوٹ آف سائنس اینڈ ٹیکنالوجی کے اسکالر پروفسر تاکایوکی ٹیرویا نے تحقیق کے بعد یہ نتیجہ اخد کیا ہے کہ جانوروں کے ماڈل پر فاقے کے حیرت انگیز اثرات سامنے آئے ہیں جنہیں سمجھنے کی کوشش کی جارہی ہے ماہرین نے چار صحتمند رضاکاروں کو بھرتی کیا اور انہیں 10 34 اور 58 گھنٹوں تک کھانے سے بعض حیرت انگیز طور پر ماہرین نے دریافت کیا کہ فاقے کے بایو مارکرز پر گہرے اور اہم اثرات مرتب ہوتے ہیں ماہرین نے دیکھا کہ 58 گھنٹے کے بعد جسم کے اندر 44 ایسے میٹابولائٹس میں اضافہ ہوا جن میں سے 30 پر اس سے قبل غور نہیں کیا گیا تھا یعنی فاقے سے ان کے افراز پر غور نہیں کیا گیا تھا اس کے علاوہ جسم میں توانائی کے متبادل ذخائر پر سگنلنگ بڑھانے والے بایومارکرز میں اضافہ ہوا جن میں بیوٹائریٹس اور برانچ چین امائنو ایسڈ قابلِ ذکر ہیں اس کے علاوہ اینٹی آکسیڈنٹس کا فروغ بھی دیکھا گیا جس سے معلوم ہوا کہ روزہ یا فاقہ عمررسیدگی سے باز رکھتا ہے دوسری طرف یہ بات بھی سامنے آئی ہے کہ کھانے سے دوری کی صورت میں مائٹوکونڈریائی سرگرمی بڑھتی ہے اس سے جسم میں لچک اور صحتمند بڑھاپا فروغ پاتا ہے طویل عمر کی وجہ بننے والے تین اہم اجزا لیئوسین آئسولیئوسین اور آپتھیلمِک ایسڈ کی شرح فاقے کی صورت میں بڑھی ہوئی دیکھی گئی یہ تینوں میٹابولائٹس بڑھاپے میں کم ہوتے جاتے ہیں لیکن جوانی میں زیادہ ہوتے ہیں واضح رہے کہ میٹابولائٹس ان لاتعداد مالیکیول (سالمات) کو کہتے ہیں جو ہمارے جسم میں ڈھیر سارے کام سرانجام دیتے ہیں ماہرین نے کہا ہے کہ فاقے کی تحقیق پر مزید کام کیا جانا چاہیے تاکہ اس کے مزید فوائد پر روشنی ڈالی جاسکے
0 (Fake)
1 (hlth)
ذیابطیس ایک ایسی مہلک بیماری ہے جس سے انسان بہت سی قدرتی پھل چکنے سے محروم ہو جاتا ہے خصوصاً چینی سے بنی اشیاء تو بھول ہی جائیں مثلا پھل وغیرہ بھی اس کی جان کے دشمن ثابت ہونا شروع ہو جاتے ہیں مگر ان سے مکمل طور پر منہ پھیرنا بھی ممکن نہیں ہےایسے میں انسولین کا ٹھیک سے کام کرنا نہایت اہم ہے ہے چونکہ پھلوں میں ایک خاص قسم کی شکر فرکٹوس پائی جاتی ہے اور ماہرین کے مطابق ان کا استعمال ذیابطیس کے مریضوں سمیت موٹاپے کا شکار افراد کی صحت پربھی منفی اثرات مرتب کرتا ہے یہی وجہ ہے کہ ایسے مریضوں کو پھلوں کے استعمال میں خاص احتیاط کی تاکید کی جاتی ہے تو پھر سوال یہ اٹھتا ہے کہ کیا شوگر کے مریض ہر قسم کے پھلوں سے منہ موڑ لیں یا پھر وہ کون سے مخصوص پھل ہیں جن کے استعمال سے ذیابطیس کے مریضوں کی مجموعی صحت پر مثبت اثرات مرتب کرنے کے ساتھ ساتھ خون میں انسولین کا لیول بھی درست رکھنے کا کام سر انجام دیں تو آئیے آج ذکر کرتے ہیں ان خاص پھلوں کا جن کا استعمال ذیابطیس کے مریضوں کے لئے فائدہ مند ثابت ہوسکتا ہے طبی سائنس مالٹے اور سنگترے جیسے ترش پھلوں کو بھی ذیابطیس کے مریضوں کے لئے مفید قرار دیتی ہےان کے نزدیک ذیابطیس کے شکار افراد کے جسموں میں وٹامن سی کی مقدار میں کمی آجاتی ہے جدید تحقیق کے مطابق یہ نتیجہ اخذ کیا گیا ہے کہ تراشا پھل شوگر کے مریضوں میں موٹاپے میں کمی اور جگر کی بیماری سے محفوظ رکھتا ہے مزید یہ بڑی ریڈیکل بننے سے حفاظت کرتا ہے اور شوگر کے لیے بہت مفید ہےاس کے علاوہ شوگر میں کمی کا باعث بنتا ہے اس میں موجود وٹامن سی اور ڈی کی بڑی مقدار ہوتی ہے چکوترے کا روزانہ استعمال شوگر کے مریضوں کو توانا رہتا ہے اس کے علاوہ جامن میں ذیابطیس سمیت کئی بیماریوں کا علاج پوشیدہ ہے جامن سرد اور خشک مزاج رکھنے والا پھل ہے اس کا متواتر استعمال شوگر کی بیماری میں بے حد فائدہ مند ہے اگر ذیابطیس کے مریض جامن کا رس اور آم کا رس ہم وزن ملا کر استعمال کریں شوگر کنٹرول کرنے میں مدد ملے گی علاوہ ازیں آڑو بھی مہت مفید بھل ہے کیونکہ اس میں وٹامن اے اور سی کی وافر مقدار پائی جاتی ہے یہی نہیں آڑو پوٹاشیم اور فائبر کی بھی اچھی خاصی مقدار رکھنے والا پھل ہے ذیابطیس کے مریضوں کو یہ پھل کھانے کا اکثر مشورہ دیا جاتا ہے چونکہ اس کے استعمال سے جسم میں شوگر لیول نیچے رہتا ہے یہ مزیدار پھل جسم کی زائد چربی گھول دیتا ہے ماہرین ذیابطیس کے مرض میں سرخ انگور کھانے کا مشورہ دیتے ہیں امریکی ماہرین کے تحقیقی نتائج کے مطابق سرخ انگوروں میں ایسے کئی اجزا دریافت کئے گئے ہیںجو موٹاپا امراضِ قلب اور ذیابطیس کی ٹائپ ٹو کو نہ صرف روکتے ہیں بلکہ ان امراض کے علاج میں بھی مفید ہیں۔غیر ملکی جریدے ڈائیبٹیس میں شائع شدہ ایک رپورٹ کے تحقیقی نتائج میں ذیابطیس کے مریضوں کے لئے دو مفید پھلوں کا ذکر کیا گیا ان دو پھلوں میں سے ایک سرخ انگور ہیں ماہرین کے مطابق سرخ انگوروں میں ٹرانس ریس وریٹرل اور نارنجیوں میں ہیسپریٹن نامی مرکبات شوگر موٹاپے اور امراضِ قلب کو کنٹرول کرنے میں مفید ثابت ہوسکتے ہیں اس کے علاوہ جام نور اڈوبی بہترین جامع ناصر بلکہ دیگر بھائیوں سے محفوظ رکھنے میں بڑا اہم کردار ادا کرتا ہے
0 (Fake)
1 (hlth)
خوراک میں بے دھیانی کسی بھی صورت جان لیوا ثابت ہو سکتی ہے بہت سی ایسی غذائیں فوڈ پوائزنگ کا باعث بنتی ہیں جس میں چکن سرفہرست ہے کچھ غذائیں ایسی ہوتی ہیں جو دیگر کے مقابلے میں فوڈ پوائزننگ کا باعث بن سکتی ہیں اور بچاوں کے لیے اصل چیز ان کی تیاری ہے خصوصاً چکن کے معاملے میں انڈے کچا دودھ سبز پتوں والی سبزیاں اور چکن ایسی غذائیں ہیں جن میں بیکٹریا کی نشوونما کا خطرہ بہت زیادہ ہوتا ہے اگرچہ یہ کھانے کے لیے محفوظ ہوتی ہیں مگر چکن کے حوالے سے زیادہ احتیاط کی ضرورت ہوتی ہے چکن کے گوشت میں اکثر سالمونیلا نامی بیکٹریا پایا جاتا ہے جو انتڑیوں کی سوزش اور فوڈ پوائزننگ کا باعث بن سکتا ہے خاص طور پر بزرگوں حاملہ خواتین اور بچوں کے لیے خطرناک ثابت ہوسکتا ہے چکن کو فریج سے باہر کافی دیر کے لیے چھوڑ دینا کمرے کے درجہ حرارت میں چکن کے گوشت میں صحت کے لیے نقصان دہ بیکٹریا کی افزائش کا امکان بڑھتا ہے اور فوڈ پوائزننگ کا شکار بناسکتا ہے اس لیے ضروری ہے کہ گھر لاتے ہی گوشت کو فریج میں رکھ دیں اور جب پکانا ہو اسی وقت نکالیں درست طریقے سے محفوظ نہ کرنا کیا آپ کو لگتا ہے کہ چکن فریج کے شیلف میں رکھنا ٹھیک نہیں ہے تو اس سوچ کو بدلیں اس گوشت سے پانی خارج ہوکر فریج کے دیگر حصوں تک پہنچ سکتا ہے لیکن فریج میں موجود ٹھنڈک فریج میں موجود بیکٹریا کو ختم کر دیتی ہیں پکانے سے پہلے چکن کو دھونا یہ بہت عام ہے کہ چکن کے کچے گوشت کو دھو کر پکایا جاتا ہے مگر ایسا کرنے سے چکن میں موجود بیکٹریا مر جاتے ہیں اور گوشت پکانے کے لائق ہو جاتا ہے میری نیٹ کرتے ہوئے خیال نہ رکھنا چکن کو لذیذ بنانے کے لیے میری نیٹ کرنا بہت ضروری ہوتا ہے اسے کچن کانٹر پر چھوڑ دینا اسے مزید لذیذہ بنا تا ہے اور باہر رکھنے سے تیز درجہ حرارت کی وجہ سے بیکٹریا مر جاتے ہیں کچے گوشت کو لگنے والی اشیائ کا استعمال اگر چکن کو بناتے ہوئے اسے کوئی چیز جیسے چمچ یا کچھ بھی چھو گیا ہے تو وہ فوڈ پوائزننگ کا خطرہ نہیں بڑھا سکتا کیونکہ اپ نے اسے اچھی طرح دھو لیا ہے ہاتھ دھونا چکن کے گوشت کو چھونے سے پہلے اور بعد میں اپنے ہاتھوں کو بھی اچھی طرح دھوئیں۔ تیز آنچ میں پکانا چکن میں کیمپائلو بیکٹر نامی بیکٹریا بھی پایا جاتا ہے جبکہ سالمونیلا ایسے جراثیم ہیں دھونے کے دوران بچ سکتے ہیں اس چکن کو ہلکی آنچ میں پکانا چاہیے تاکہ اس کی لذت بھی خراب نہ ہو کیونکہ تیز آنچ پر پکانے سے کیچن میں موجود آفادیت ختم ہو جاتی ہے
0 (Fake)
1 (hlth)
شکاگو ایک نئے مطالعے سے معلوم ہوا ہے کہ کئی امراض سے بچانے والا جادوئی روبوٹ تیار کر لیا گیا ہے جو کہ انسانی جسم سے فاسد مادوں کو باہر نکالنے کی صلاحیت رکھتا ہے اور اس طرح وہ عارض قلب، گردوں الزائیمر اور ڈیمنشیا جیسے مرض کے خطرے کو کم سے کم کرنے میں معاونت کرتا ہے اس کے علاوہ الزائیمر کے مرض کی شدت کو بھی کم کرتا ہے اس روبوٹ کو چیک کرنے کے لیے چوہوں پر تجربات کیے گئے جس سے یہ نتیجہ اخذ کیا گیا ہے کہ یہ روبوٹ دماغ کے ان زہریلے پروٹین کو ختم کرتا ہے جو کہ نہ صرف کینسر کا باعث بنتی ہے بلکہ صحت کے دماغی خلیات کو بھی تباہ کرتے رہتے ہیں شکاگو میں رش یونیورسٹی کے میڈیکل سینٹر میں سائنس دانوں کی ایک ٹیم نے چوہوں پر تجربات میں کیے ہیں جس کے مطابق یہ روبوٹ دماغ سے خلیات کے درمیان فاسد موادں کو صاف کرسکتا ہے اور الزائیمر سمیت کئی امراض کو دور کرنے میں بھی مدد فراہم کرتا ہے کامیاب تجربات کے بعد یہ امید ظاہر کی جا رہی ہے کہ یہ روبوٹ چوہوں کے بعد انسانوں پر بھی استعمال کیا جا سکے گا رش یونیورسٹی کے پروفیسر کالی پاڈا پاہن کا کہنا ہے کہ الزائیمر کو بڑھنے سے روکنے والی کوئی دوا ہمارے پاس نہیں لیکن یہ روبوٹ اس میں اہم کردار ادا کرسکتا ہے انکا کہنا ہے کہ امائی لوئڈ بی ٹا پر مبنی فاسد خلوی مواد دماغ میں جمع ہوتا ہے اور یہ ٹاؤ پروٹین کی وجہ سے بنتا ہے اس سے دماغ کے صحت مند خلیات تباہ ہونے لگتے ہیں اور الزائیمر سمیت کئی امراض جنم لیتے ہیں اس تناظر میں یہ روبوٹ نہایت اہمیت کا حامل ہے اس کے علاوہاس روبوٹ کا مسلسل استعمال دل کینسر اور ڈیمنشیا جیسے امراض کو بھی دور کرنے کی صلاحیت رکھتا ہے علاوہ ازیں روبوٹ جسم کی اندرونی سوزش بھی کم کرسکتا ہے اب معلوم ہوا ہے کہ یہ دماغ میں یادداشت کے اہم مقام ہپوکیمپس میں جمع ہونے والے امائی لوئڈ بی ٹا کو صاف کرسکتا ہے ماہرین کے مطابق یہ پروٹین بڑھتا ہے تو الزائیمر کا مرض جنم لیتا ہے روبوٹ میں موجود الیفراریڈ ریز ایسے کیمیکلز کو بڑھاتی ہے جو نیورونز صاف کرتے اور دماغ سے مضر مواد کو نکال باہر کرتے ہیں اس طرح روبوٹ اس خطرناک مرض کو روکنے میں مددگار ثابت ہوسکتا ہے
0 (Fake)
1 (hlth)
بوسٹن میسا چیوسیٹس انسٹی ٹیوٹ آف ٹیکنالوجی (ایم آئی ٹی) کے ماہرین نے جیلی نما روبوٹ بنایا ہے جسے آسانی سے کھایا جاسکتا ہے یہ گیند نما روبوٹ پیٹ میں جاکر پھول جاتا ہے اور1 ماہ تک وہاں رہتے ہوئے معدے کی اندرونی کیفیت دل کی دھرکن اور امراض سے آگاہ کرتا ہے پھولنے والا یہ گولی نما روبوٹ معدے میں رہتے ہوئے 30 روز تک دل کی دھرکن اندر کے درجہ حرارت اور دیگر افعال کی خبر مہیا کرتا ہے جب اس گولی کو بدن سے خارج کرنا مقصود ہو تو مریض کو کیلشیئم محلول پی لا دیں اس کے بعد گولی نما روبوٹ خود بخود جسم سے پیخانے کے راستے باہر آجائے گا اس روبوٹ میں بہت سے سینسر لگے ہوئے ہیں جو انسان کے اندرونئی اعضائ کے متعلق آگا یہ فراہم کرتے ہیں ایم آئی ٹی ماہرین نے ہائیڈروجل اور پالیمر کے ملاپ سے اس گولی نما روبوٹ کو 2 سال میں تیار کیا گیا ہے جو پٹ میں جاکر پھول جاتا ہے اسکا وزن اتنا کم ہے کہ کھانے کے بعد معدے میں بھاری پن محسوس نہیں ہوتا ماہرین نے اسے بنانے میں پفر فِش سے مدد لی ہے پفر فِش خطرے میں خود کو پھلانے کی صلاحیت رکھتی ہے اسی طرح ہائیڈروجل سے بنا یہ روبوٹ اپنے اندر پانی جمع کرکے موٹا ہو جاتا ہے ماہرین نے سینسر لگا کر اس روبوٹ کو سور پر آزمایا ہے ان تجربات میں سوروں کے معدے کے درجہ حرارت اور دیگر معلومات اکٹھا کی گئی ہے آخر میں کیلشیئم محلول پلا کر اسے جسم سے کامیابی سے خارج کر دیا گیا ماہرین کا خیال ہے کہ جلد ہی یہ ٹیکنالوجی انسانی استعمال کے لیے مارکیٹ میں دستیاب کر دی جائے گی
0 (Fake)
1 (hlth)
پاکستان کے شمالی علاقوں میں چند برس پہلے جب شدید برفباری شہر کو جانے والے راستے بند کر دیتی تھی تو یہاں جنم لیتی نئی زندگیوں کی سانسیں رکتی محسوس ہوتیں اور بچے کی پیدائش کے دوران یہ مسئلہ مزید پیچیدہ ہو جاتا تھا کیونکہ برف کی وجہ سے روڈ پر گاڑیوں کا جلنا کافی مشکل ہو جاتا ہے جس کی وجہ سے آمدورفت کا نظام درہم برہم ہو کر رہ جاتا تھا اور زچکی جیسے پچیدہ معاملات کا حل بھی مشکل ہو جاتا ہے ایسے علاقے میں وہاں کی مقیم شہربانو اور مڈوائف گھر گھر جا کر بچوں کی پیدائش میں خواتین کی مدد کرتی ہیں ان خواتین کو وہاں کی سپر وومن کہا جاتا ہے سکردو کے ایک گاؤں کی تنگ گلیوں سے ہوتے ہم پتھروں سے بنے ایک گھر کے دروازے پر پہنچے اندر دائیں جانب ایک کمرے سے نومولود بچے کے رونے کی آواز آ رہی تھی یہ سکینہ ہے جو ایک ہفتہ پہلے پیدا ہوئی ہیں شہر بانو اس ننھی سی پری کو گود میں لیے سکینہ کی ماں گل کو بتا رہی ہیں کہ انھوں نے کیا کھانا ہے لیکن بچی کو ڈبے، گائے یا بکری کا دودھ نہیں پلانا، اسے ماں کے دودھ کی ضرورت ہے شہر بانو ہیں سکردو میں دریائے سندھ کے کنارے موجود گاؤں 'گول' کی رہائشی شہر بانو نے کبھی حساب تو نہیں رکھا لیکن وہ کہتی ہیں کہ پچھلے دس سالوں میں 100 سے زیاد بچے ان کے ہاتھوں سے پیدا ہوئے ہیں ان کا مزید کہنا تھا کہ کس وہ موسم سرما میں وہاں کے پتھریلے علاقوں سے گزرتے ہوئے گھروں میں جاتی ہیں اور حاملہ عورتوں کی مدد کہتی ہیں میں نے ایک خاص قسم کا لباس پہنا ہوتا ہے جو کہ نشاندہی کرتا ہے کہ وہ کسی گھر میں چیک اپ یا زچگی کے لیے جا رہی ہیں انہوں نے خاص قسم کے جوتے پہنے ہوتے ہیں جو انھیں ان پتھریلی علاقوں میں چلنے میں بھی خاصی مدد فراہم کرتے ہیں ان خواتین میں سے کچھ خواتین سے جب پوچھا گیا تو ان کا کہنا تھا جب میرے ہاں بچے کی پیدائش ہوئی تو پورے گاؤں حتیٰ کہ آس پاس کے گاؤں میں بھی کوئی دائی نہیں تھی میں 15 دن تک تکلیف میں رہی مگر میری مدد کے لیے کوئی دائی نہیں تھی تب میں نے فیصلہ کیا کہ میں خود دائی کی تربیت حاصل کروں گی اور میرے بعد میرے گاؤں کی کوئی اور عورت اس تکلیف سے نہیں گزرے گی ان میں سے ایک خاتون نے بتایا کہ کچھ سال پہلے میں نے اپنا بچہ اپنی طرح کھویا تھا کیونکہ میرے پاس عین وقت پر کوئی مدد نہیں پہنچی تھیں تب میں نے ارادہ کیا تھا کہ میں اب زچگی کے معاملات کے لیے لوگوں کی مدد کروں گی اور بالآخر میں سپر ومین پر مبنی لسٹ میں شامل ہو گی سپر مومن کی ٹریننگ کیلئے وہاں ایک سپیشل سکول بنایا گیا ہے جہاں پر خواتین کو زچگی کے متعلق تمام سہولیات اوزار اور متعلقہ حکام ٹریننگ فراہم کرتے ہیں ان خواتین کو حکومت کی جانب سے امداد بھی فراہم کی جاتی ہے تاکہ یہ اپنا کردار بخوبی سرانجام دے سکیں یہ خواتین عورتوں کو حمل سنبھالنے اور کھانے پینے کی ہدایت بھی فراہم کرتی ہیں جب عورت حمل میں آتی ہے تو اس کے گھر ایک خاص قسم کا آلہ لگا دیا جاتا ہے جس سے بچے کی پیدائش کے قریب اور اس سے ملنے والی سگنل سے سپر ومین کا عملہ وہاں پہنچ جاتا ہے اور بچے کی پیدائش میں مدد فراہم کرتا ہے یہ سب خواتین کن کی تعداد تقریبا 500 ہے پچھلے دس سالوں میں تقریباً 900 سے زیادہ بچوں کی پیدائش سے متعلق کیس کو حل کر چکی ہیں یہ خواتین بغیر تنخواہ کے بچے کی پیدائش کرواتی ہیں یہ مشکل وقت میں ان کے کام آتی ہیں حکومت کی طرف سے انکو سپیشل امداد فراہم کی جاتی ہے تاکہ وہ اپنے روزمرہ کے اخراجات کا بندوبست کرسکیں علاقے میں ایک ڈسپنسری بھی کھولی گئی ہے جہاں فری علاج کی سہولت دستیاب ہے وہاں ایک لیبارٹری کا بھی قیام کیا گیا ہے جہاں سے مفت ایکس ریز کروائے جاسکتے ہیں یہ سب وومن کسی سوپر ہیرو سے کم نہیں ہیں اور ایسی باہمت خواتین ہی پاکستان کے روشن مستقبل کا سرمایہ ہیں
0 (Fake)
1 (hlth)
لاہور( ویب ڈیسک ) معروف یورپی ماہرِ امراض گردہ پروفیسر آسٹِن جی اسٹیک نے کہا ہے کہ لیموں پانی اور پودینے کا استعمال جسم میں یورک ایسڈ بڑھ جانے سے روکتا ہے تازہ ترین تحقیق کے مطابق یورک ایسڈ بڑھ جانے سے میں گردے فیل ہوجانے کا خطرہ 3 گنا بڑھ جاتا ہے کراچی کے مقامی ہوٹل میں 3 عالمی ہائپر یوریسیمیا کانفرنس میں کافی نامور ڈاکڑوں نے شمولیت اختیار کی جس میں معروف ماہر امراض ذیابیطس پروفیسر زمان شیخ جناح ہسپتال کے ماہر امراض گردہ پروفیسر محمد منصور پروفیسر مشہور عالم شاہ پروفیسر کریم قمرالدین اور پروفیسر محمد تصدق نے بھی خطاب کیا کانفرنس میں مہنان خصوصی آئرلینڈ سے تعلق رکھنے والے یورپی ماہرِ امراض گردہ پروفیسر آسٹِن جی اسٹیک کو مدعو کیا گیا جنھوں نے کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے انکا کہنا تھا کہ ہائپر یوریسیمیا یا جسم میں یورک ایسڈ کا بڑھ جانا میٹابولک سینڈروم کا ایک حصہ ہے جس کے نتیجے میں دل اور فالج کے حملے کے امکانات کئی گنا بڑھ جاتے ہیں انہوں اس بات پر افسوس کا اظہار کیا کہ بد قسمتی سے پاکستان یورک ایسڈ کے بڑھنے کے اعتبار سے 2 نمر پر ہے جسکو بلکل بھی نظر انداز نہیں کیا جاسکتا پروفیسر آسٹِن جی اسٹیک کا کہنا تھا کہ لیموں پانی اور پودینے کا استعمال سے جسم میں اس کیمیکل کو کنٹرول کرکے عارضہ قلب فالج اور گردوں کے ناکارہ ہونے سمیت کئی بیماریوں سے بچا جا سکتا ہے جدید تحقیق کے مطابق یورک ایسڈ نہ صرف گردے ناکارہ کرنے بلند فشار خون کا مرض لاحق کرنے بلکہ دل کے دورے اور فالج کے حملے کا بھی اہم سبب بنتا ہے ان کا کہنا تھا کہ وہ تمام مریض جو ڈاکٹروں کے پاس جوڑوں کے درد کی شکایت لے کر آتے ہیں انکو چاہیے کہ وہ لیموں پانی اور پودینے کا استعمال کریں اور ڈاکٹرز کو بھی چاہیے کہ وہ ان کا یورک ایسڈ چیک کرنے کے ساتھ ساتھ ان کے گردوں کے افعال کا ٹیسٹ کریں کیونکہ یورک ایسڈ بڑھ جانا گردوں میں پتھری کا سبب بننے کے ساتھ ساتھ گردوں کو ناکارہ کرنے میں اہم کردار ادا کرتا ہے انہکا مزید کہنا تھا کہ سرخ گوشت کھانے شراب پینے اور کچھ دالوں اور لوبیا کھانے سے جسم میں یورک ایسڈ کا اضافہ ہوجاتا ہے اس لیے لیموں پانی اور پودینے کا استعمال اسے کم کرنے میں مدد کرتا ہے ایک سوال کے جواب میں یورپی ماہرِ امراض گردہ پروفیسر آسٹِن جی اسٹیک نے کہا کہ 40 فیصد تک یورک ایسڈ صحت مندانہ طرز زندگی اپنا کر اور متوازن غذا کھا کر کم کیا جا سکتا ہے جبکہ 60 فیصد مریضوں میں یورک ایسڈ کنٹرول کرنے کے لیموں پانی اور پودینے کا استعمال بہت ضروری ہے خیال رہے
0 (Fake)
1 (hlth)
عالمی ادارۂ صحت کے خواتین کی جبری اور لیٹ شادیوں سے 17 لاکھ سے زائد افغان ذہنی دباؤ کا کشار ہیں جو خود کشیوں کی وجہ ہے بی بی سی کی رپورٹ کے مطابق خودکشی کی شرح میں دن بدن اضافہ ہو رہا ہوتا جا رہا ہے بی بی سی کی رپورٹ میں اس بات کا زکر کیا گیا ہے کہ اس تعداد میں اضافے کی وجہ بڑھتے ہوئے ذہنی مسائل گھریلوں تشدد جبری شادیاں اور عورتوں کو درپیش کئی سماجی دباؤ ہیں جن میں اضافہ ہو رہا ہے کابل بڑے اور روایتی صوبوں میں شامل ہے یہ اعداد و شمار حتمی نہیں ہیں لیکن کابل میں خود کشی کی شرح سب سے زیادہ ہے ہرات میں طبی حکام کے مطابق صرف 2017 میں ہی 3783 افراد نے خودکشی کی کوشش کی جن میں 3100 خواتین تھیں ان میں سے 1251 اپنی جان لینے میں کامیاب رہیں یہ تعداد گذشتہ سال کے مقابلے میں 7 گنا ہے اگرچہ افغانستان میں ذہنی صحت کے حوالے سے اعداد و شمار دستیاب نہیں تاہم عالمی ادارۂ صحت کے اندازے کے مطابق 17 لاکھ افغانی ذہنی دباؤ کے مسائل کا شکار ہیں جبکہ 14 لاکھ افراد کو انزائٹی کے مسائل درپیش ہیں اور ان کی شادی انکی مرضی کے بغیر ہی کر دی جاتی ہے اور ان کو بہترین حل خودکشی لگتا ہے جو کہ سراسر غلط اور ڈپریشن پر مبنی فیصلہ ہوتا ہے رپورٹ سے ظاہر ہوتا ہے کہ وہاں کے لوگ اس جدید دور میں بھی کس قدر کی سوچ رکھتے ہیں اسلامی تعلیمات کے مطابق بھی عورت کی رائے اس کے ساتھی کے چناؤ کے لیے بہت ضروری ہے لیکن خواتین کو یہ بھی جان لینا چاہیے کہ خودکشی حرام ہے اس کے کے علاوہ ایک رپورٹ میں یہ بھی دیکھا گیا ہے کہ زیادہ دیر تک منگنی رکھنے سے بھی شادیاں ٹوٹ جاتی ہیں اور آخرکار لڑکی کو خودکشی آخری حل نظر آتا ہے افغانستان میں مسلح لڑائی کو سنہ 2018 میں 55 واں سال شروع ہو گیا اور ڈبلیو ایچ او کے مطابق ذہنی مسائل کا شکار افراد کی تعداد میں اضافہ ہو رہا ہے اقوامِ متحدہ کے پاپولیشن فنڈ کے اندازوں کے مطابق 93 فیصد افغان عورتوں جسمانی جنسی یا نفسیاتی تشدد میں سے کسی نہ کسی کا شکار ہوتی ہیں جبکہ83 فیصد کو مختلف اقسام سے استحصال کا سامنا رہتا ہے جدید اندازے کے مطابق اب تک عورتوں کی شرح اموات جنگ آزادی میں ہونے والی اموات سے کوچ کرگئی ہے شادی عورت کی زندگی کا بہترین مرحلہ ہوتا ہے اور اس میں مسئلے اس کی زندگی کو نہ پسند بنا دیتے ہیں جسے وہ ذہنی دباؤ میں آکر ڈپریشن کا شکار ہو جاتی ہے ڈبلیو ایچ او کی تازہ ترین رپورٹ کے مطابق عورتیں ذہنی دباؤ ڈپریشن اور دماغی طور پر دماغی طور پر کافی پریشانیوں میں مبتلا رہتی ہیں ڈاکٹرز کا مزید کہنا تھا کہ عورتوں میں ڈپریشن کی اصل وجہ ان کی شادی کے فیصلے ہوتے ہیں افغانستان میں لوگوں سے لڑکیوں کی شادیاں کم عمری میں ہی کر دیتے ہیں وہ میاں بیوی کے رشتے کی پیچیدگی کو سمجھ ہی نہیں پاتی اور طلاق ہو جاتی ہے اور بیوی بچہ دونوں خودکشی کا سہارا لے لیتے ہیں کیونکہ طلاق افغانستان میں ماں باپ کے لئے بےعزتی کا سبب بنتا ہے اس لئے بیٹی کو کوئی اور چارہ نظر نہیں آتا حکومت کو اس لیے اقدامات کرنے چاہیے کہ حکومت اس کا نوٹس لے اور اس کے لیے خاطر خواہ اقدامات کرے جہاں کہیں بھی ایسی زیادتی رونما ہورہی ہوں یا کسی اور کے ساتھ زیادتی سے شادی کرائی جانے کی کوشش کی جارہی ہو تو حکومت کو چاہیے کہ وہاں پر سختی سے نوٹس لے اور اس کے خاتمے کے لئے خاطر خواہ اقدامات کرتے ہوے تاکہ لوگوں میں اویرنس کی جا سکے اور اس سنگین بیماری سے نجات حاصل کی جاسکے
0 (Fake)
1 (hlth)
ٹیکساس 15 جولائی (ایجنسی) ماہرین نے انکشاف کیا ہے کہ آم کو جسمانی موٹاپے میں کمی کرنے والا بہترین پھل قرار دیا گیا ہے ٹیکساس یونیورسٹی کے ماہرین نے اس تحقیق سے اخذ کیا گیا کہ آم سے وزن میں کمی واقع ہو سکتی ہے چونکہ آم میں کئی طرح کے وٹامن اینٹی آکسیڈنٹس پولی فینولز اور فائبر پائے جاتے ہیں اس سے نظامِ ہاضمہ بہتر ہونے کے ساتھ ساتھ غذا کو فوری طور پر جزوِبدن ہو جاتی ہے جو کہ جسمانی موٹاپے میں کمی کا باعث بنتی ہیں ٹیکساس اے اینڈ ایم یونیورسٹی کے ماہرین نے اس کا عملی مظاہرہ کیا ہے انہوں نے 58 خواتین و حضرات کو 2 گروہوں میں تقسیم کیا ان میں سے 1 گروہ کو روزانہ 520 گرام آم کھلایا گیا اور دوسرے گروہ کو فائبر کا پاؤڈر دیا گیا جبکہ اس مطالعہ سے یہ نتیجہ اخذ کیا گیا کہ واقعی آم جسمانی موٹاپے میں کمی کرنے والا بہترین پھل ہے اس لیے جو صارفین جسمانی وزن میں کمی چاہتے ہیں ان کو چاہیے کہ وہ عام کا زیادہ سے زیادہ استعمال کریں
0 (Fake)
1 (hlth)
گائے، بکرے، اونٹ، میمنےاور دودھ دینے والے دیگر جانوروں سے حاصل ہونے والے گوشت کو سرخ گوشت کہا جاتا ہے مسلمان، عیدِ قربان (عیدالاضحی) کے موقع پر ان جانوروں کی قربانی کرتے ہیں اور ان کا گوشت جی بھر کر کھاتے اور انجوائے کرتے ہی سرخ گوشت غذائیت سے بھرپور ایک زبردست غذاہ جس میں وٹامنز، معدنیات، اوراینٹی آکسی ڈنٹس وغیرہ پائے جاتے ہیں اور اس کے انسانی صحت پر بھی اسی لحاظ سےاثرات مرتب ہوتے ہیں انسانی صحت پر سرخ گوشت کے اثرات پر اچھی خاصی تحقیق کی جاچکی ہے تاہم یہ تحقیق زیادہ تر مشاہداتی مطالعے پر مشتمل ہے جن میں سرخ گوشت اور مختلف بیماریوں میں تعلق قائم کرنے کی کوشش تو کی گئی ہے تاہم اس کی وجوہات بیان نہیں کی گئیں اسی طرح کے کئی مشاہداتی مطالعوں میں سرخ گوشت کے زیادہ استعمال کو دل کی بیماریوں کینسر اور اموات سے جوڑا گیا ہے سرخ گوشت سرطان کی ایک بڑی وجہ بن چکا ہے یہ صحت کے لئے ضروری بھی ہے گھاس کھانے والے جانوروں کا گوشت سرخ گوشت کہلاتا ہے جو غذائیت سے بھرپور اور پروٹین جس کا بہترین ذریعہ ہے یہ جسم کی ضروریات پوری کرنے کا بہترین ذریعہ ہے لیکن اس کے زیادہ استعمال سے صحت کو نقصان کا سامنا کرنا پڑسکتا ہے پروٹین کی کمی کو پورا کرنے کے لیے یہ ادویات سے زیادہ مؤثر ہے اس سلسلے میں امریکہ میں ایک اہم تحقیق م کی گئی جسے امریکن پراسپیکٹو انویسٹی گیشن اِن ٹو کینسر اینڈ نیوٹریشن کا نام دیا گیا ہے اس تحقیق میں انسانی غذا اور کینسر کے مابین تعلق پر مطالعہ کیا گیا ہے اس سلسلےمیں 23 لاکھ 51 ہزار 690 افراد پر بڑے پیمانے پر 34 مختلف مطالعے کیے گئے ان مطالعوں میں دل کی بیماریوں اور ذبابیطس کے امراض کا پراسیس شدہ سرخ گوشت کے استعمال سے تعلق بتایا گیا ہے تاہم ان مطالعوں میں یہ بات واضح طور پر کہی گئی ہے کہ تازہ سرخ گوشت کے استعمال کے مختلف سائیڈ اِیفیکٹس دیکھے گئے ایک طبی معائینے کے مطابق سرخ گوشت انسانوں میں کینسرکا باعث بھی بنتا ہے اس حوالے سے مختلف اوقات پر کئی ملکوں میں مشاہداتی مطالعے کیے گئے ہیں ان مطالعوں میں تازہ سرخ گوشت کو صحت کے لیے انتہائی مضر صحت قرار دیا گیا ہے جبکہ پراسیسڈ سرخ گوشت کا بھی براہ راست کینسر کے مرض کے ساتھ تعلق ثابت ہوا ہے محققین اس نتیجے پر پہنچے ہیں کہ سرخ گوشت براہ راست کینسر اور بڑی آنت کا سرطان کی وجہ بنتا ہے ایک رپورٹ کے مطابق سرخ گوشت بہت ساری بیماریوں کی وجہ ہے اس کی وجہ سے اس کا ضرورت سے زیادہ استعمال اور اس کو پکانے کے طریقے شامل ہیں ہمارے ہاں چونکہ کھانے کو بھون کر اس کی غذائیت کو بالکل ختم کر دیا جاتا ہے اور بعض اوقات اس کو مکمل طور پر نہیں پکایا جاتا جس کی وجہ سے مختلف جراثیم ہمارے جسم میں جا کر حملہ آور ہوتے ہیں ایک ہسپتال کے سروے سے یہ بات سامنے آئی ہے جس میں سرطان کی بڑی وجہ سورخ گوشت ہے اس کا زیادہ سے زیادہ استعمال ہمارے جسم سے خیبر ایکٹیو کر دیتا ہے جس میں خون کی گردش بڑھ جاتی ہے اور نتیجے میں سرطان نکلتا ہے اور اس کی روک تھام ضروری ہے اس کے لیے ضروری ہیں کہ گوشت کو اچھے طریقے سے پکایا جائے اس کو دم پر پکانے سے اس کی غذائیت بنی رہتی ہے گوشت کو تیز آنچ پر پکانے سے اس کی غزائیت ختم ہو جاتی ہے گریل پر بنانے سے گوشت بہت ذائقہ دار اور غذائیت سے بھرپور ہو جاتا ہے اور گوشت کے بہت زیادہ استعمال سے بچیں کیونکہ اس کی زیادتی باعث نقصان ہے وہ نقصان ہائی بلڈ پریشر کی شکل میں یا سرطان کی شکل میں ہو سکتا ہے
0 (Fake)
1 (hlth)
وسکانسن (ویب ڈیسک ) قارئین کے لیے یہ بات بہت حیران کن ہوگی کہ ذیابطیس اور کینسر کے مریضوں کے درینہ زخموں کا علاج اب الیکٹریکل پٹی سے ممکن ہے جو کہ خود بخود سانس لیتے ہوئے پسلیوں کے پھیلنے اور سکڑنے کی حرکات سے بجلی پیدا کرتی ہے ماہرین نے یہ باسہولت الیکٹریکل پٹی بنائی ہے جو مریض کے گھومنے پھرنے سے بجلی بناتی ہے جدید ڈریسنگ میں بہت باریک نینو جنریٹرز لگائے گئے ہیں اور ان سے ایک تار نکل کر پہننے والے کے بدن تک جاکر وہاں ایک پیوند سے منسلک ہوتا ہے جیسے جیسے مریض چلتا پھرتا ہے تو نینو جنریٹرز میں بجلی بنتی ہے اور بجلی کی لہروں سے دیرینہ ناسور تیزی سے مندمل ہونا شروع ہوجاتا ہے جو درینہ زخم کے علاج کو تیز کرتی ہے اس پٹی سے مریض کو کسی بھی قسم کی پریشانی کا سامنا درپیش نہیں ہے یہ خاص طور پر ذیابطیس اور کینسر کے مریضوں کے علاج کے لئے بنائی گئی ہے ذیابطیس اور کینسر میں مبتلا مریض کسی بھی زخم کو کم وقت میں ٹھیک نہیں کر پاتے کیونکہ ان کی اہ کم ہوجاتی ہے بعد ازاں یہ نیا علاج اب بہت مہنگا ہے لیکن آنے والے وقتوں میں اس میں نمایاں کمی واقع ہونے کا امکان ہے تحقیقات کے مطابق یہ الیکٹریکل بینڈیج ذیابطیس اور کینسر کے مریضوں کے علاوہ دل اور شوگر کے مریضوں کے لئے بھی استعمال کی جا سکے گی تجربہ گاہ میں بلی پر کیے گئے تجربات سے ثابت ہوا کہ جو زخم عام حالات میں 16 روزمیں درست ہوتے ہیں الیکٹریکل پٹی نے اسے 4 دن میں ٹھیک کردیا
0 (Fake)
1 (hlth)
برطانیہ امریکہ پاکستان سمیت دنیا کے کئی ممالک میں گیمنگ کو عالمی سطح پر پروموٹ کیا جا رہا ہے عالمی ادارۂ صحت میں الیکٹرانک گیمز یا ویڈیو گیمز کھیلنے سے متعلق دائر کیے گئے کیس میں یہ واضح کیا ہے کیہ یہ ایک ذہنی بیماری نہیں ہے ڈبلیو ایچ او کی جانب سے اسکا نام ذہنی بیماری پیدا کرنے والی گیموں کی فہرست سے نکال دیا گیا ہے ویڈیو گیمز بنانے والی صنعت نے عالمی ادارۂ صحت کا شکریہ ادا کرتے ہوئے فیصلہ کا خیر مقدم کیا ہے اور کہا ہے کہ گیمنگ کو عالمی سطح پرپروموٹ کیا جانا خوش آئین فیصلہ ہے کیونکہ آن لائن گیمز آن لائن گیمزسے یوتھ کی دماغی طور پر مظبوط میں مصروف ہوتی ہے تحقیقات کے مطابق میکسیکو کے ریسرچ انسٹی ٹیوٹ نے آن لائن گیمزکو بیسٹ مشغلہ قرار دیا ہے آن لائن گیمز کھیلنے ہوئے صارفین وقت کا اندازہ رکھنے میں کامیاب رہتے ہیں جس سے انکو وقت کی قیمت کا احساس پیدا ہوتا ہے کیونکہ انکو اس بات کا علم رکھنا ہوتا ہے کہ کب گیم کا راؤنڈ اختتام پڈیر ہو گا شروع میں وہ اس بات کو تسلیم نہیں کہ گیمز یا ویڈیو گیمز کھیلنے سے انسانی دماغ زیادہ بہتر طریقے سے کام کر سکتا ہے لیکن آخرکار ان کو تسلیم کرنا پڑتا ہے کہ وہ جس سے اس مشغلے میں مبتلا ہوئے ہیں انکا دماغ زیادہ بہتر طریقے سے کام کر ریا ہے سابق عالمی چیمپیئننز کے مطابق آن لائن گیمزسے ان کی ذاتی زندگی اور تعلیمی یا ملازمتی معاملات پر اثرات مرتب ہوئے ہیں لندن کے نائٹانگیل ہسپتال کے ڈاکٹر رچرڈ گراہم کا کہنا ہے کہ ڈیجیٹل ایڈکشن سے کھلاڑیوں کی روزمرہ زندگی میں بہت سے کامیابیاں متاثرانکا مقدر بنتی ہیں ڈبلیو ایچ او نے بھی اس کو بیماریوں کی فہرست سے نکالتے ہوئے لوگوں کو ترغیب سی ہے کہ وہ گیمنگ کو عالمی سطح پر پروموٹ ترقی یافتہ ممالک نے اس کے لیے مختلف اقدامات شروع کردیئے ہیں جیسا کہ امریکہ میں ایک عالمہ چمپین شپ میعقد کروائی جائے گی جس میں 50 ممالک کے ارکان شریک ہوں گے حکومت جاپان نے 16 سال سے کم عمر بچوں کو فری ویڈیو گیمز دینے کا اعلان کیا ہے کوریا میں کھلاڑی اگر مقررہ وقت سے زیادہ ویڈیو گیمز کھیلیں تو انھیں بطور انعام 50 امریکن ڈالرز دہے جائیں گے کی دوسری طرف ایشیائ میں چین میں انٹرنیٹ کمپنی ٹینسینٹ نے بچوں کے لیے مقبول گیمز کو فری کر دیا ہے جس سے بچے بغیرکسی ٹائم لمٹس کے آن لائن گیمز کھیل سکیں گے برطانیہ نے بچوں کے لئے آن لائن گیمز کھیلنے کے اوقات متعین کر دیے ہیں تاکہ بچوں میں وقت کی اہمیت کا احساس پیدا ہو اور بچے گیمز کے وقت سے زیادہ دیر ویڈیو گیمز کھیلیں
0 (Fake)
1 (hlth)
ہمارے جسم کے اندر ہر وقت متعدد اہم عمل جاری رہتے ہیں جو ہارمونز کنٹرول کرتے ہیں مگر مردوں کے مقابلے میں خواتین میں ہارمونز کا نظام زیادہ پیچیدہ ہوتا ہے اور اس میں انتشار کا امکان بھی زیادہ ہوتا ہے ہارمونز کا نظام متاثر ہو تو مزاج رویہ اچھی شخصیت اور ظاہری روپ بھی متاثر ہوتے میک اپ کا زیادہ استعمال خواتین کے لئے خطرے کا باعث بن سکتا ہے قارئین کے لئے یہ بات کوئی نئی نہیں ہوگی کہ مرد حضرات کے مقابل میں خواتین کے اندر ہارمونز کا نظام پیچیدہ ہوتا ہے اور خواتین کے مختلف کیمیکلز کے استعمال سے جسم پر بہت برے اثرات مرتب کرتا ہے مختلف کیمیکلز سے بنے میک اپ کے استعمال سے خواتین کا ہارمونیل سسٹم بری طرح متاثر ہوتا ہے میک اپ میں میک اپ چونکہ مختلف قسم کے کیمیکل سے تیار کیا جاتا ہے جو کہ بظاہر تو ان کو خوبصورت اور پرکشش بنانے میں بڑا اہم کردار ادا کرتا ہے مگر اندر سے ہارمونز کے نظام میں بھی کوئی کمی نہیں چھوڑتا مثال کے طور پر اینڈروجن کی سطح میں اضافہ پورے جسم پر کیل مہاسوں کا باعث بنتی ہے ایسا نوجوانی کے دور میں خواتین کے ساتھ اکثر ہوتا ہے تاہم درمیانی عمر میں بھی اس کا امکان ہوتا ہے اگر کسی خاتون کو اکثر سردرد کی شکایت رہتی ہے ذہنی تناﺅ یا تھکاوٹ سے ہٹ کر تو یہ ایسٹروجن کی سطح میں اضافہ کا نتیجہ ہوسکتا ہے ایسٹروجن ایسا ہارمون جو خواتین میں دماغ اور ریڑھ کی ہڈی کے میٹابولک پراسیس کو کنٹرول کرتا ہے اگر اس کی سطح میں اضافہ ہوجائے تو آدھے سرکا درد یا چڑچڑے پن کی شکایت ہونے لگتی ہے بے خوابی ایک خطرناک علامت ہے کیونکہ یہ پروجسٹرون کی انتہائی کم سطح سے جڑی ہوتی ہے طبی ماہرین کے مطابق یہ ہارمون قدرتی طور پر پرسکون رکھتا ہے اور نیند کو معمول پر لاتا ہے اس کی سطح میں تبدیلی اکثر بے خوابی کا باعث بنتی ہے عام طور پر خواتین جب بچوں کو جنم دیتی ہیں تو ایسٹروجن اور پروجسٹرون کی سطح میں اضافہ دیکھنے میں آتا ہے مگر اس سے ہٹ کر ایسا نہیں ہوتا تو اگر ایسا ہو تو یہ ڈاکٹر سے رجوع کرنے کا اشارہ ہے مختلف کیمیکز سے بنے میک اپ کے استعمال سے مختلف ہارمونز میں اضافہ اور کمی واقع ہوتی ہے اس کے علاوہ اور بھی بہت سے منفی اثرات بھی ان کے ہارمونز پر مرتب ہوتے ہیں جیسا کہ وزن میں کمی چہرے میں بالوں کا اگنا بالوں کا گرنا جسمانی وزن میں اضافہ سر میں مسلسل درد کا رہنا نیند نہ آنا بہت زیادہ تھکاوٹ رہنا زیادہ پسینہ آنا ذہنی کمزوری چہرے پر چمبل چہرے پر چھائیوں کا نمودار ہونا وغیرہ شامل ہیں ان علامات کی مزید تحقیق سے معلوم ہوا ہے کہ ایک ہارمونوں اینڈروجن ہے جس کی کمی چہرے پر کیل مہاسوں کا سبب بنتی ہے اور یہ خواتین میں پائے جانے والوں میں شامل ہے اگر ان میں سے کسی بھی علامت رع نما ہو تو ان کو فوری طور پر ڈاکٹر سے رجوع کرنا چاہیے اور مزید نقصان سے بچنے کے لیے ادویات کا استعمال فوری شروع کر دینا چاہئے اس لئے خواتین میک اپ کے استعمال میں کمی لائیں اور اپنی زندگی کو صحتمند اور محفوظ بنایئں
0 (Fake)
1 (hlth)
کراچی (ویب ڈیسک) وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کے سامنے اس بات کا انکشاف ہوا ہے کہ کراچی کے مختلف علاقوں میں میں خسرے اور پولیو جیسی بیمان پر مکمل طور پر قابو پالیا گیا ہے وزیر اعلیٰ سندھ مراد علی شاہ کی زیر صدارت انسداد پولیو اور خسرے سے متعلق اجلاس ہوا جس میں وزیر صحت وفاقی وزیر صحت چیف سیکریٹری پرنسپل سیکریٹری کمشنر کراچی اور دیگر حکام نے شرکت کی اجلاس کے دوران انسداد پولیو پروگرام انچارج فیاض جتوئی نے بریفنگ دیتے ہوئے بتایا کہ ماہ ستمبر میں کراچی کے 15 مقامات سے پولیو کے نمونے لیے گئے انہوں نے بتایا کہ گلشن اقبال سہراب گوٹھ چکورہ نالہ محمد خان کالونی بلدیہ اور اورنگی نالہ سے لیے گئے نمونوں کے منفی نتائج آئے ہیں بریفنگ کے دوران انہوں نے بتایا کہ ستمبر میں سندھ کے شہر سکھر میں بھی پولیو وائرس کے خاتمے کی تصدیق ہوئی وزیر اعلیٰ کو بریفنگ دیتے ہوئے بتایا گیا کہ مارچ سے دسمبر 2018 کے درمیان کراچی میں 3 لاکھ 68 ہزار 9 سو37 بچوں کے والدین نے اپنے بچوں کو پولیو ویکسین کروائی ہے اس طرح ان 6 ماہ میں 1 لاکھ 62 ہزار 4 سو8 بچے گھروں میں ہونے کے باعث ویکسین حاصل کرسکے بریفنگ کے دوران بتایا گیا کہ دیہی سندھ کے علاقوں میں 62 ہزار 9 سو14 بچے گھروں پر ہونے کے باعث خسرہ اور پولیو ویکسین کروا سکے اس موقع پر وزیر اعلیٰ سندھ نے کہا کہ اللہ کا کرم ہے کہ مشترکہ کاوشوں کی بدولت اس سال سندھ میں پولیو کا کوئی کیس سامنے نہیں آیا وفاقی وزیر صحت بھی اجلاس میں موجود تھے وزیر اعلیٰ سندھ نے کیا کہ ہم اپنی کاوشوں کو مزید تیز اور بہتر کرکے پورے پاکستان میں خسرہ اور پولیو پر قابو پا نے میں کامیاب ہو گئے ہیں اس مہم کا مقصد یہ ہے کہ پاکستان میں مقیم ہر بچے کو پولیو اور خسرہ کی ویکسین فراہم کی جائیں وفاقی وزیر صحت نے اس بات کی یقین دہانی کرائی کہ پاکستان کا ہر بچہ خسرہ اور پولیو کی ویکسینیشن کرائے گا انکا مزید کہنا تھا کہ اسکولوں میں پولیو ٹیمیں بھیجیں اور بچوں کو ویکسین فراہم کریں تاکہ پاکستان کے مستقبل کو بہتر اور مضبوط بنایا جا سکے کیونکہ پاکستان کا مستقبل ہمارے آج کل کے بچوں پر منحصر ہے ہمارے بچے آج محفوظ اور مضبوط ہوں گے تو مستقبل کو سنواریں گے بریفنگ کے دوران وفاقی وزیر صحت کو بتایا گیا کہ سندھ میں 2015 سے خسرہ میں کمی آرہی ہے اور اسی سال 1149 کیسز ہوئے جس میں 371 کی موت واقع ہوئی جبکہ 2016 میں 722 کیسز ہوئے اور 199 اموات ہوئی جبکہ 2017 میں 400 کیسز میں سے 3 لوگ زندگی کی بازی ہار گئے ڈبلیو ایچ او کی رپورٹ سے بھی ثابت کر لیا گیا ہے کہ پاکستان نے اب مکمل طور پر پولیو اور خسرہ پر قابو پالیا گیا ہے
0 (Fake)
1 (hlth)
End of preview (truncated to 100 rows)

Dataset Card for Bend the Truth (Urdu Fake News)

Dataset Summary

[More Information Needed]

Supported Tasks and Leaderboards

[More Information Needed]

Languages

[More Information Needed]

Dataset Structure

Data Instances

[More Information Needed]

Data Fields

  • news: a string in urdu
  • label: the label indicating whethere the provided news is real or fake.
  • category: The intent of the news being presented. The available 5 classes are Sports, Health, Technology, Entertainment, and Business.

Data Splits

[More Information Needed]

Dataset Creation

Curation Rationale

[More Information Needed]

Source Data

Initial Data Collection and Normalization

[More Information Needed]

Who are the source language producers?

[More Information Needed]

Annotations

Annotation process

[More Information Needed]

Who are the annotators?

[More Information Needed]

Personal and Sensitive Information

[More Information Needed]

Considerations for Using the Data

Social Impact of Dataset

[More Information Needed]

Discussion of Biases

[More Information Needed]

Other Known Limitations

[More Information Needed]

Additional Information

Dataset Curators

[More Information Needed]

Licensing Information

[More Information Needed]

Citation Information

[More Information Needed]

Contributions

Thanks to @chaitnayabasava for adding this dataset.

Update on GitHub